آئزک ایسیموو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
آئزک ایسیموو

ایسیموو 1965 میں
پیدائش ایساک یودوویچ آوزموو
4 اکتوبر 1919 اور 2 جنوری 1920 کے دوران کسی ایک دن؛
پیتروویچی، روسی سوویت یونین
وفات 6 اپریل 1992 (عمر 72 سال)
نیو یارک، امریکا
قومیت امریکی
تعلیم کولمبیا یونیورسٹی سے حیاتی کیمیاء میں پی ایچ ڈی
پیشہ مصنف
مذہب ناستک
دستخط
موقع جال
http://www.asimovonline.com/


آئزک ایسیموو (انگریزی: Isaac Asimov؛ روسی: Исаак Юдович Озимов) ایک امریکی مصنف اور بوسٹن یونیورسٹی میں حیاتی کیمیاء کے پروفیسر تھے۔ اِن کی گنتی دنیا کے نامور سائنسی قصصدانوں میں ہوتی ہے۔ اِن کا شمار انگریزی زبان کے کامیاب ترین مصنفوں میں بھی ہوتا ہے اور اِن کی تحریروں میں 500 سے زاید کتابیں اور تقریباً 90،000 خطوط شامل ہیں۔

رابرٹ ہاینلین اور آرتھر سی کلارک کے ہمراہ، اِن کا شمار دنیا کے تین بڑے سائنسی قصصدانوں میں ہوتا ہے۔ ایسیموو کو شہرت اِن کے لکھے دو سائنسی سلسلوں سے مِلی، جن میں سلسلہِ سلطنتِ کہکشاںی اور سلسلہِ روبالہ کے ناول شامل ہیں؛ یہ کُل مِلا کر بعد میں ایک سلسلہ میں سمیٹ لئے گئے جس کا نام ایسیموو نے بنیادی سلسلہ رکھ ڈالا۔ سائنسی قصص کے علاوہ بھی ایسیموو نے بیشمار غیر افسانی ادب میں تحریریں لکھیں جن میں تاریخ سے لے کر علم المقبول کے موضوعات بھی شامل ہیں۔

سوانح حیات[ترمیم]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

ایسیموو، سابقہ روسی سوویت یونین میں پیتروویچی نامی ایک گاؤں میں 4 اکتوبر 1919 اور 2 جنوری 1920 کے دوران کسی ایک دن پیدا ہوۓ۔ پیدائش کے وقت اِن کا نام ایساک یودوویچ آوزموو رکھا گیا تھا۔ اِن کے والد کا نام یہودا ایسیموو، اور والدہ کا نام آنا ریچل برمن تھا۔ یہ دونوں یہودی تھے اور ان کا خاندان ایک مقامی چکی پر پُشتوں سے کام کرتا آیا تھا۔