اسکندرون

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

اسکندرون (سابق:Alexandretta، ترکی:İskenderun) ترکی کے جنوب مشرقی صوبہ حطائے کا ایک شہر ہے جو بحیرۂ روم کے کنارے خلیج اسکندرون پر واقع ہے۔ 2000ء کی مردم شماری کے مطابق اس کی آبادی 159،149 ہے۔

اسکندرون ایک مصروف تجارتی مرکز اور بحیرۂ روم کے ساحلی علاقوں پر ترکی کی ایک اہم بندرگاہ ہے۔ اس کے علاوہ یہ سیاحت کے حوالے سے بھی معروف مقام رکھتا ہے۔ یہاں کے معروف سیاحتی مقامات میں دورتیول، جہاں 330 قبل مسیح میں سکندر اعظم نے دارا سوم کو شکست دی تھی، اور عثمانیہ، جہاں صلیبیوں کا قائم کردہ قلعہ آج بھی موجود ہے، شامل ہیں۔ یہ شہر 333 قبل مسیح میں سکندر اعظم نے قائم کیا تھا۔

پہلی جنگ عظیم کے بعد اسکندرون کی سنجق فرانس کے زیر انتظام شام میں شامل ہوئی لیکن ترکوں کا دعویٰ تھا کہ یہ ترکی علاقہ ہے۔ یہاں کی آبادی ترکوں، عربوں اور ارمنی باشندوں پر مشتمل تھی۔ لیکن ترکوں کی تعداد سب سے زیادہ تھی۔ شام بھی ان اضلاع کا دعویدار تھا۔ اس اختلاف کی وجہ سے انطاکیہ اور اسکندرون کے علاقوں میں مئی 1937ء میں ایک نیم خود مختار حکومت قائم کردی گئی تھی۔ اس حکومت کی منتخبہ مجلس کے 40 میں سے 22 ارکان ترک تھے۔ اس مجلس نے اتفاق رائے سے ترکی سے الحاق کا فیصلہ کیا اور 23 جولائی 1939ء کو یہ دونوں اضلاع ترکی میں شامل ہو گئے۔