بابل کا برج

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

Tower of Babel

بابل کا برج

اسے مینار بابل بھی کہتے ہیں یہ سمیری تہذیب کی قدیم ترین یادگاروں میں سب سے اونچی عمارت تھی۔ توریت کی کتاب پیدائش کے مطابق اسے شینار (موجود عراق) کے میدانی علاقہ میں تعمیر کیا گیا تھا اور پتھر کی بجائے پختہ اینٹیں لگائی گئی تھیں۔ مخروطی شکل کی یہ سات منزلہ عمارت 300 فٹ اونچی تھی۔ بعض روایات کے مطابق یہ برج یا مینار حضرت نوح کے بعد کی نسلوں نے بنایا تھا۔ اور اس زمانے کا بادشاہ اس کے ذریعے آسمان تک پہنچنا چاہتا تھا۔ سب سے پہلے اس مینار کی بنیادیں ایک یورپین نے 1914 میں دریافت کیں۔ لیکن مدت تعمیر کا اندازہ پھر بھی نہ ہو سکا۔ توریت کا زمانہ تقریباً 2200 ق م کا ہے۔ سمیری تہذیب تقریبا پانچ ہزار سال ق م پرانی ہے۔ مینار بابل دراصل رصدگاہ کی قدیم ترین عمارت تھی جس پر آنے والی نسلوں نے افسانوی رنگ چڑھا دیا۔