باب:یورپ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
باب:اسلام
باب:قرآن
باب:جغرافیہ
باب:تاریخ
باب:ریاضیات
باب:سائنس
باب:معاشرہ
باب:طرزیات
باب:فلسفہ
باب:مذہب
باب:فہرست ابواب
اسلام قرآن جغرافیہ تاریخ ریاضیات سائنس معاشرہ طرزیات فلسفہ مذہب فہرست ابواب
Satellite image of Europe

یورپ دنیا کے سات روایتی براعظموں میں سے ایک ہے تاہم جغرافیہ دان اسے حقیقی براعظم نہیں سمجھتے اور اسے یوریشیا کا مغربی جزیرہ نما قرار دیتے ہیں۔ اصطلاحی طور پر کوہ یورال کے مغرب میں واقع یوریشیا کا تمام علاقہ یورپ کہلاتا ہے۔
یورپ کے شمال میں بحر منجمد شمالی، مغرب میں بحر اوقیانوس، جنوب میں بحیرہ روم اور جنوب مشرق میں بحیرہ روم اور بحیرہ اسود کو ملانے والے آبی راستے اور کوہ قفقاز ہیں۔ مشرق میں کوہ یورال اور بحیرہ قزوین یورپ اور ایشیا کو تقسیم کرتے ہیں۔
یورپ رقبے کے لحاظ سے آسٹریلیا کو چھوڑ کر دنیا کا سب سے چھوٹا براعظم ہے جس کا رقبہ ایک کروڑ چالیس لاکھ مربع کلومیٹر ہے جو زمین کے کل رقبے کا صرف دو فیصد بنتا ہے۔ یورپ سے بھی چھوٹا واحد براعظم آسٹریلیا ہے۔ آبادی کے لحاظ سے یہ تیسرا سب سے بڑا براعظم ہے جس کی آبادی 71 کروڑ ہے جو دنیا کی کل آبادی کا 11 فیصد بنتا ہے۔

ترمیم  

منتخب سیربین

ترمیم  

منتخب مضمون

قومی شعار
اسٹونیا جسے سرکاری طور پر جمہوریہ اسٹونیا بھی کہتے ہیں، شمالی یورپ کے بالٹک ریجن میں واقع ہے۔ شمال میں خلیج فن لینڈ، مغرب میں بحیرہ بالٹک، جنوب میں لٹویا اور مشرق میں روس واقع ہے۔ بحیرہ بالٹک کے پار سوئیڈن واقع ہے۔ اسٹونیا کا کل رقبہ 45٫227 مربع کلومیٹر ہے۔ استونین قوم فِننک قوم سے تعلق رکھتے ہیں اور ان کی واحد سرکاری زبان اسٹونین ہے جو فِننش زبان سے مماثل ہے۔

اسٹونیا پارلیمانی جمہوریہ ہے اور اس میں کل 15 کاؤنٹیاں ہیں۔ سب سے بڑا شہر اور دارلحکومت ٹالِن ہے۔ اس کی کل آبادی 13٫40٫000 ہے۔ یورپی یونین، یورو زون اور ناٹو کے رکن ممالک میں کم گنجان آباد ممالک میں سے ایک ہے۔ سابقہ روسی ریاستوں میں اسٹونیا فی کس آمدنی کے اعتبار سے سب سے آگے ہے۔ عالمی بینک کے مطابق اسٹونیا کی معیشت امیر ممالک میں شمار ہوتی ہے۔ اقوامِ متحدہ اسٹونیا کو ترقی یافتہ ملک قرار دیتی ہے اور انسانی ترقی کے اعشاریے میں اسٹونیا کا درجہ انتہائی بلند ہے۔ آزادئ صحافت، معاشی آزادی، جمہوریت اور سیاسی آزادی اور تعلیم کے حوالے سے بھی اسٹونیا کا درجہ بہت بلند ہے۔


ترمیم  

کیا آپ جانتے ہیں۔۔۔

  • ۔۔۔کہ یورپی اتحاد میں براعظم یورپ کے ستائیس ممالک شریک ہیں؟
  • ۔۔۔کہ یورپی اتحاد کے اہم ترین مقاصد براعظم یورپ کو پہلی اور دوسری جنگ عظیم کے بعد تیسری جنگ سے بچانا اور عالمی پیمانے پر زبردست اقتصادی قوت کی تخلیق کے لیے مشترکہ منڈی قائم کرنا ہے؟
  • ۔۔۔کہ فرانس دنیا کی پانچویں سب سے بڑی معاشی قوت ہے؟
ترمیم  

منتخب تصویر

ترمیم  

ذیلی ابواب

البانیا کا پرچم البانیا
بیلاروس کا پرچم بیلاروس
بوسنیا و ہرزیگووینا کا پرچم بوسنیا و ہرزیگووینا
کروشیا کا پرچم کروشیا
جارجیا کا پرچم جارجیا
آئس لینڈ کا پرچم آئس لینڈ
ایران کا پرچم ایران
کوسووہ کا پرچم کوسووہ
مقدونیہ کا پرچم جمہوریہ مقدونیہ
مالدووا کا پرچم مالدووا
مونٹینیگرو کا پرچم مونٹینیگرو
ناروے کا پرچم ناروے
روس کا پرچم روس
سربیا کا پرچم سربیا
سویٹزر لینڈ کا پرچم سویٹزر لینڈ
یوکرین کا پرچم یوکرین

ترمیم  

زمرہ جات

اختیار کریں [+] ذیلی زمرہ جات کے لیے
یورپ زمرہ جات
ترمیم  

ویکیمیڈیا ساتھی منصوبے

یورپ یورپ یورپ یورپ یورپ یورپ یورپ
ویکی اخبار
آزاد متن خبریں
ویکی اقتباسات
مجموعہ اقتباسات متنوع
ویکی کتب
آزاد نصابی ودستی کتب
ویکی منبع
آزاد دارالکتب
وکشنری
لغت ومخزن
ویکیورسٹی
آزاد تعلیمی مواد ومصروفیات
العام
انبار مشترکہ ذرائع
Wikinews-logo.svg
Wikiquote-logo.svg
Wikibooks-logo.svg
Wikisource-logo.svg
Wiktionary-logo-en.svg
Wikiversity-logo.svg
Commons-logo.svg
ابواب کیا ہیں؟ | فہرست ابواب | منتخب ابواب