بھاری پانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
Heavy water (at 100% D enrichment): D2O
All types of isotopically substituted water molecules have this structure.
اسم نظامی

Deuterium oxide

دیگر نام Water d2
Heavy water
Dideuterium monoxide
شناختساز
کاس عدد

[7789-20-0]

ریٹکس عدد

ZC0230000

خـواص
سالماتی_صیغہ

D2O

مولرکمیت

20.04 g/mol

صورت transparent, colorless liquid
کثافت

1.1056 g/mL, liquid (20°C)
1.0177 g/cm3, solid (at m.p)

نقطۂ_پگھلاؤ

3.82 °C, 38.88 °F (276.97 K)

نقطۂ ابال

101.4 °C, 214.56 °F (374.55 K)

لزوجیت

0.00125 Pa·s at 20 °C

دوقطبی اثر

1.87 D

خـطرات
ایم ایس ڈی ایس

External MSDS

صدر مخاطرات

Usage as water replacement for 3 days or more may cause death by inhibiting cell division

NFPA 704
NFPA 704.svg
0
1
0
 
وابستہ مرکبات
Related solvents acetone; methanol
وابستہ مرکبات water vapor; ice
ماسواۓ کسی خصوصی بیان کے، تمام مادی معطیات
معیاری درجہ حرات و دباؤ یعنی 25°C, 100 kPa
پر دیۓ گۓ ہیں۔
لاتعلقیتِ معلوماتی خانہ و حوالہ جات

بھاری پانی (Heavy Water) کو ڈیوٹیریم آکسائڈ بھی کہتے ہیں۔ اس پانی میں آکسیجن کے ساتھ ہائیڈروجن کی بجائے ڈیوٹیریم ہوتی ہے۔
اسے Girdler sulfide process سے بنایا جاتا ہے۔ یہ ان جوہری بجلی گھروں میں استعمال ہوتا ہے جن میں قدرتی یورینیم (یعنی غیر افزودہ یورینیم) استعمال کیا جاتا ہے۔ آجکل ایسے جوہری بجلی گھر بہت کم رہ گئے ہیں۔ اب دنیا کے زیادہ تر جوہری بجلی گھر افزودہ یورینیم استعمال کرتے ہیں جس میں بھاری پانی کی بجائے عام سادہ پانی بطور موڈریٹر استعمال کیا جاتا ہے۔
بھاری پانی تابکار نہیں ہوتا مگر پھر بھی زہریلا ہوتا ہے۔

شناخت[ترمیم]

بھاری پانی سے بننے والی برف 3.82 سنٹی گریڈ پر پگھلتی ہے۔ اگر عام پانی کو اس سے بھی زیادہ ٹھنڈا کر کے اس میں بھاری پانی سے بنی ہوئی برف ڈالی جائے تو وہ تیرنے کی بجائے ڈوب جاتی ہے اور دیر تک نہیں پگھلتی۔

قیمت[ترمیم]

بھاری پانی نہایت قیمتی ہوتا ہے اور پورے جوہری بجلی گھر کی قیمت کا چوتھائی حصہ بھاری پانی کی وجہ سے ہوتا ہے۔

طبیعی خصوصیات[ترمیم]

Property D2O (Heavy water) HDO (Semiheavy water) H2O (Light water)
Freezing point (°C) 3.82 0.0
Boiling point (°C) 101.4 100.7 100.0
Density at STP (g/mL) 1.1056 1.054 0.9982
Temp. of maximum density (°C) 11.6 4.0
لزوجت (at 20 °C, mPa·s) 1.2467 1.1248 1.0016
Surface tension (at 25 °C, μJ) 7.187 7.193 7.198
Heat of fusion (cal/mol) 1,515 1,436
Heat of vaporisation (cal/mol) 10,864 10,757 10,515
pH (at 25 °C) 7.43 (sometimes "pD") 7.266 (sometimes "pHD") 6.9996
Refractive index (at 20 °C, 0.5893 μm)[1] 1.32844 1.33335

نیوٹرون موڈریٹر[ترمیم]

جوہری بجلی گھروں میں یورینیئم کے ایٹموں کو توڑ کر بجلی بنائی جاتی ہے اور اس کے لیئے ایک ایسی چیز کی ضرورت ہوتی ہے جو تیز رفتار نیوٹرون کو سست رفتار (یعنی تھرمل) نیوٹرون میں تبدیل کر دے۔ ایسی اشیاء نیوٹرون موڈریٹر کہلاتی ہیں۔ سب سے پہلے اس مقصد کے لیئے گریفائٹ کو استعمال کیا گیا۔ بعد میں بھاری پانی کا استعمال ہوا مگر اب عام سادہ پانی اس کام کے لیئے استعمال ہوتا ہے تاکہ خرچہ کم ہو۔

نیوٹرون موڈریٹر کے لحاظ سے دنیا میں جوہری ری ایکٹروں کی تعداد
موڈریٹر ری ایکٹروں
کی تعداد
ڈیزائین تعداد بلحاظ ملک
کچھ نہیں
(fast neutron reactor)
1 BN-600 روس میں ایک
گریفائٹ 29 AGR, Magnox, RBMK برطانیہمیں 18، روس میں 11
بھاری پانی 29 CANDU کینیڈا میں 17، ساوتھ کوریا میں 4، رومانیہ میں 2، چین

میں 2، ہندوستان میں 2، پاکستان اور ارجنٹینا میں ایک ایک

عام پانی 359 PWR, BWR 27 ممالک میں ایسے 359 ری ایکٹر کام کر رہے ہیں۔



مزید دیکھیئے[ترمیم]


بیرونی روابط[ترمیم]

  1. ^ "RefractiveIndex.INFO". http://refractiveindex.info/?group=LIQUIDS&material=Heavy_water. Retrieved 2010-01-21.