جمعیت علمائے اسلام (نظریاتی)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
پاکستان

مقالہ بسلسلہ مضامین:
پاکستان کی حکومت اور سیاست



جمعیت طلباء اسلام (نظریاتی) بلوچستان تک محودود سنی, دیوبندی سیاسی جماعت ہے جو جمعیت علماۓاسلام(فضل الرحمان) سے بعض اختلافات کے سبب علیحدہ ہوا۔ جو افغان طالبان کی بھر پور حمایت اور پاکستان کے علاقے سوات ، وزیرستان اور دیگر علاقوں میں طالبان کے خلاف آپریشن کی مخالفت کرتا ہے۔ یہ جماعت بلوچستان کے بعض علاقوں‌ میں فعال ہے۔

یہ جماعت 2008ء میں اس وقت وجود میں‌آئی جب عام انتخابات ہو رہے تھے۔ اس دوران جمعیت نظریاتی نے صوبے بھر میں جمعیت فضل الرحمن گروپ کے مقابلے میں اپنے امیدوار کھڑے کئے۔ ژوب سے قومی اسمبلی کی نشست پر جمعیت فضل الرحمن گروپ کے صوبائی امیر مولانا محمد خان شیرانی کو جمعیت نظریاتی کی قیادت کرنے والے عصمت اللہ نے شکست دی جبکہ ژوب ہی سے نظریاتی کے امیدوار عبد الخالق بشر دوست نے مخالف گروپ کے امیدوار کو شکست دی اور صوبائی اسمبلی کے رکن بنے اور اس وقت بلوچستان کابینہ میں وزیر بلدیات کی حیثیت سے شامل ہیں۔

جمعیت علماء اسلام نظریاتی کے اہم رہنماؤں میں فضل محمد بڑیچ ، عبدالقادر لونی، عبدالستار چشتی اور دیگر شامل ہیں۔


متعلقہ مضامین[ترمیم]