جنرل سونتی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
جنرل سونتی

پیدائش: اکتوبر 1946ء

تھائی لینڈ کے پہلے مسلمان فوجی سربراہ۔ جس نے 19 ستمبر میں فوجی بغاوت کرکے مارشل لاء نافذ کیا۔ پورا نام سونتی بونیا راتگالِن ان کی اعلی فوجی عہدے پر تعیناتی کو جنوبی مسلمان علاقوں میں مزاحمت پر قابوپانے کی کوشش سے جوڑا گیا۔جنوبی تھائی لینڈ میں جاری اس مزاحمت میں ڈھائی سال کے اندر تقریباً ڈیرھ ہزار لوگ ہلاک ہوئے ۔فوجی سربراہ کی وزیر اعظم تھاکسن شیناواترا کی حکومت سے اختلاف اس وقت شروع ہوا جب حکومت نے جنرل سونتی کے مزاحمتکاروں سے مذاکرات کرنے کی پیشکش کو رد کرد یا۔

جس کے بعد شاہ تھائی لینڈ کی سرپرستی میں امریکہ کے دورے پر گئے ہوئے وزیراعظم شیناواترا کی حکومت کو ختم کرکے ۔ ملک میں مارشل لاء کا اعلان کردیا۔ وہ تھائی فوج میں کئی اعلی عہدوں پر فائض رہ چکےرہے جن میں ’الیٹ سپیشل وارفئر کمانڈ‘ بھی شامل ہے۔ انہیں بہادری کے کئی تمغے بھی ملے۔