جیمز کک

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
کپتان جیمز کک

جیمز کک (انگریزی: James Cook) (پیدائش: 27 اکتوبر 1728ء – وفات: 14 فروری 1779ء) ایک انگریز مہم جو، جستجو گر، جہاز راں اور نقشہ نگار تھے۔ شاہی بحریہ میں کپتان کے عہدے پر رہتے ہوئے انہوں نے بحر الکاہل کے تین بحری سفر کیے اور آسٹریلیا کے مشرقی ساحلوں اور جزائر ہوائی پر پہنچنے والے پہلے یورپی شہری بنے۔ آپ نے دنیا کے گرد پہلا مکمل طور پر اندراج شدہ چکر لگایا اور نیوفاؤنڈلینڈ اور نیو زیلینڈ کا نقشہ بنایا۔

آپ نے 1755ء میں شاہی بحریہ میں شمولیت اختیار کی اور سات سالہ جنگ میں حصہ لیا اور بعد ازاں محاصرۂ کیوبک کے دوران دریائے سینٹ لارنس کے داخلے کے بیشتر علاقے کا معائنہ کیا اور نقشے بنائے۔

آپ نے یورپ کے نقشوں پر پہلی بار متعدد نئے علاقوں اور جزائر اور ساحلی علاقوں کو شامل کیا۔ بہترین جہاز رانی، تحقیق و نقشہ نگاری کی اعلیٰ صلاحیتوں، حقائق کی تصدیق کے لیے خطرناک ترین مقامات کی تلاش (مثال کے طور پر بار ہا مدار قطب جنوبی (Antarctic Circle) اور گریٹ بیریئر ریف کے سفر)، خطرناک صورتحال میں قیادت کی بہترین صلاحیت اور توقعات سے کہیں بڑھ کر کام کرنے کے باعث انہیں مہمات میں بھرپور کامیابی ملی۔

پہلی مہم میں آسٹریلیا کے مشرقی ساحلوں اور نیو زیلینڈ کو دریافت کرنے بعد آپ دوسری مہم میں 17 جنوری 1773ء کو مدار قطب جنوبی میں پہنچنے والے اولین افراد میں سے ایک بن گئے۔ اس مہم میں آپ نے جنوبی جارجیا و جنوبی سینڈوچ جزائر بھی دریافت کیے۔ انٹارکٹیکا کو دریافت کرنے کے بعد آپ جہاز کے لیے تازہ رسد حاصل کرنے کے لیے تاہیتی پہنچے۔ 1774ء میں آپ فرینڈلی جزائر، جزیرہ ایسٹر، جزیرہ نورفوک، نیو کیلیڈونیا اور وانواتو پہنچے۔

تیسرے سفر میں آپ جزائر ہوائی پہنچنے والے پہلے یورپی بنے۔ جہاں 1779ء میں مقامی افراد کے ساتھ جھڑپ میں مارے گئے۔

امریکہ کی خلائی شٹل اینڈیور (Endeavour) جیمز کک کے پہلی مہم کے جہاز ہی سے موسوم ہے۔

کپتان جیمز کک کے تین بحری سفر۔ سرخرنگ پہلے سفر، سبزدوسرے اور نیلاتیسرے سفر کو ظاہر کرتا ہے۔ آپ کے مارے جانے کے بعد آپ کے گروہ کے اراکین کا سفر دندانے دار نیلے رنگ میں نمایاں کیا گیا ہے۔