سینے کا درد

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

طب و حکمت میں سینے کا درد ایک علامت ہے نا کہ ایک مرض۔ یعنی اسکا مطلب یہ ہوا کہ یہ سینے کے درد کی کیفیت مختلف امراض میں پیدا ہوسکتی ہے۔ سینے کا درد مرکزی (central) بھی ہوسکتا ہے اور جانبی (peripheral) بھی۔ جانبی ، طب میں ایسی وجوہات یا مقامات یا اعضاء کو کہا جاتا ہے کہ جو اس مقام پر موجود نا ہوں کہ جس کا ذکر کیا جارہا ہے بلکہ اسکے جانبین میں پائے جاتے ہوں۔

قلبی وعائی وجوہات[ترمیم]

قلبی وعائی نظام (cardiovascular system) کی وجہ سے ہونے والا سینے کا درد فوری طور پر توجہ اور طبی امداد چاہتا ہے۔ اس قسم کے امراض جنکو قلبی وعائی نظام میں شمار کیا جاتا ہے اور جن میں سینے کا درد ایک علامت کے طور پر نمودار ہوتا ہے انکی چیدہ چیدہ فہرست یہ ہے۔

قلبی پھیپڑی وجوہات[ترمیم]

یہ وہ امراض یہ اسباب ہوتے ہیں کہ جن کا تعلق خاص طور پر قلب و پھیپڑوں سے ہوتا ہے، ایسے امراض کو قلبی پھیپڑی (cardiopulmonary) کہا جاتا ہے۔

ڈھانچی و اعصابی وجوہات[ترمیم]

یہ سینے میں درد پیدا کرنے والی ایسی بیماریاں یا امراض ہیں کہ جنکا تعلق ریڑھ کی ہڈی ، ڈھانچے اور اعصاب سے ہوتا ہے۔

میانہ و پھیپڑی وجوہات[ترمیم]

میانہ (mediastinum) اصل میں دونوں پھیپڑوں کے درمیانی جگہ کا نام ہے۔

نفسیاتی وجوہات[ترمیم]

نفسیاتی وجوہات ایسی وجوہات ہوتی ہیں کہ جن میں فی الحقیقت تو کوئی مرض موجود نہیں ہو مگر اسکے باوجود ماحولی پریشانیوں یا مریض کی نفسیاتی کیفیات کی وجہ سے اس شخص کو مرض کی علامات محسوس ہوتی ہوں۔