لنشنگ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

lynching (لینچنگ / لینشنگ) انگریزی میں رائج ایک اصطلاح ہے جو لغات کے مطابق 1782ء (اور بمطابق بعض 1780ء) سے دیکھنے میں آرہی ہے[1] یہ لفظ اصل میں lynch سے ماخوذ ہے جس کو غیرمعینہ طور پر دو ایسے افراد کی جانب منسوب کیا جاتا ہے کہ جن کے نام میں lynch آتا ہے۔ اسمِ ذات سے ماخوذ ہونے کی وجہ سے ظاہر ہے کہ اس لفظ کا کوئی اردو متبادل تو ممکن نہیں لیکن اگر مفہوم کو اردو میں بیان کرنے کی کوشش کی جاۓ تو یہ ---- اعدام بلا محاکمہ ---- کیا جاسکتا ہے؛ یعنی بلا کسی محاکمہ (دعویٰءِ عدالت) کے عدم کے سپرد کردینا یا ہلاک کر دینا؛ یہی اس اصطلاح کا استعمال ہے یعنی بالاۓ عدالت (extrajudicial) یا بالاۓ قانون اور بلا کسی انصاف و منصف کے، کسی گروہ یا جتھے کا کسی شخص کو جان سے مار دینا اور عام طور پر یہ جان سے مارنے کا عمل گلے میں رسی کا پھندا ڈال کر کیا جاتا رہا ہے۔

اصل الکلمہ[ترمیم]

جیسا کہ ابتدائیے میں بیان ہوا کہ یہ لفظ ، اسم ذاتی یا شخصی نام کے ایک حصے lynch سے لیا گیا ہے اور اس کا انتساب دو افراد کی جانب کیا جاتا ہے۔

  1. charles lynch (عہد 1736ء تا 1796ء) -- موصوف کا کاروباری تعلق، تمباکو کی زراعت سے بتایا جاتا ہے اور اس کا شمار امریکی انقلاب پسندوں میں ہوتا ہے جس نے مخالفین اور باغیوں کے بارے میں جلد فیصلہ کرنے کی خاطر اپنی ذاتی عدالت اور قید خانے کا نظام چلا رکھا تھا۔ اسی کے نام پر lynch law کو judge lynch بھی کہا جاتا ہے[2]۔
  2. william lynch (عہد 1742ء تا 1820ء) -- موصوف نے pittsylvania میں نظم و ضبط برقرار رکھنے کے لیۓ، کسی افراتفری یا بغاوت کی جلد (عدالت تک لے جانے کی تاخیر کے بغیر) اور فوری سرکوبی کرنے کی خاطر اپنے پڑوس کے علاقے والوں سے ایک معاہدہ کیا تھا۔ خود موصوف کی اپنی جانب سے 1811ء میں کیۓ جانے والے ایک دعوے کے مطابق lynch law کی اصطلاح اسی معاہدے سے نسبت رکھتی ہے[1]۔

اطلاقات[ترمیم]

لنشنگ یا لنچنگ کو مختلف طبقہ ہائے فکر مختلف مفہوم میں دیکھتے ہیں اور اسی وجہ سے اس طریقۂ کار کے اطلاقات یعنی اس کا شکار ہونے والوں کے بارے میں بھی مختلف نظریات پیش کیۓ جاتے ہیں۔ امریکہ مخالف ممالک مثال کے طور پر روس یا دیگر لوگ اسے سیاہ فام لوگوں کے قتل کا نظام کہتے ہیں۔ کم از کم اس سلسلے کی ابتداء کے بارے میں یہ بات خاصی واضح ہے کہ اسکا آغاز pittsylvania کے گرد و نواح سے ہی ہوا تھا[1] [2] جس کے بارے میں کالمنٹ نے اپنی تاریخی کتاب میں یہ تذکرہ کیا ہے کہ pettsylvania کی معاشیات پر تمباکو (کی کاشت و کاروبار) غالب تھا اور اس کا انحصار غلام افرادی قوت پر تھا[3] اور تاریخی طور پر عیاں ہے کہ جس دور کی بات ہو رہی ہے، تاریخ میں اس مقام پر غلام ، سیاہ فام ہی ہوا کرتے تھے۔

امریکہ میں انصاف کا نرالا نظام رائج ہے جسے لنش کہتے ہیں۔ اس کے معنی یہ ہیں کہ عوام جب عدالت کے فیصلے سے مطمئن نہ ہوں یا قانون کی سست رفتار مشین کو آہستہ چلتا دیکھ کر صبر نہ کرسکیں تو قانون کو خود اپنے ہاتھ میں لے لیں اور جس شخص کو وہ مجرم سمجھتے ہوں اسے اپنے نزدیک جو منصفانہ سزا چاہیں دے دیں۔ اس طریقہ انصاف کا وار عموما حبشیوں پر ہی ہوتا ہے۔ چنانچہ "چنانچہ نیویارک ورلڈ" نے 1885 سے 1926 تک کے جو اعداد و شمار شامل کئے ہیں۔ ان سے معلوم ہوتا ہے کہ 41 سال کی مدت 3205 حبشی لنش کئے گئے۔ لنشنگ عموما اس صورت میں ہوتا ہے کہ کسی گوری عورت سے کسی حبشی کا تعلق پایا جائے یا ایسے تعلق کا شائبہ کیا جائے[4]۔

سرد جنگ کے دوران روس نے بھی امریکہ میں لنشنگ جرائم پر تنقید کی تھی۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ 1.0 1.1 1.2 روۓ خط لغت american heritage میں lynch کی اصل الکلمہ
  2. ^ 2.0 2.1 جریدہ Atlantic Monthly تاریخ اشاعت (1901) روۓ خط موقع
  3. ^ History of Pittsylvania County, Virginia by Maud Clement روۓ خط ، موقع دستیابی
  4. ^ تحریک آزادی ہند اور مسلمان- حصہ اول- صفحہ نمبر 299- از سید ابو الاعلیٰ مودودی


Incomplete-document-purple.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کرکے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔