مجلس معلومات وسلامتی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
خدمت معلوماتی اور سلامتی
Bezpečnostní informační služba
BIS
BIS HQ Prague-Stodulky CZ 028.jpg
ایڈریس:BIS, Nárožní 1111/2, Praha 5, Stodůlky
جائزۂ وکالہ
تشکیل شدہ از 1993
زیرِ اختیار حکومت چیک جمہوریہ
سردفاتر پراگ، چیک جمہوریہ
ایجنسی ایگزیکٹو Jiří Lang
موقع حبالہ
www.bis.cz

خدمت معلوماتی اور سلامتی (چیکی زبان میں:Bezpečnostní informační služba) جسے عام طور پر BIS کہا جاتا ہے حکومت چیک جمہوریہ کی تحفظ کے لیۓ خفیہ ضد جاسوس ایجینسی ہے۔ خدمت معلوماتی اور سلامتی حکومت چیک جمہوریہ کی قومی سلامتی کو غیر ملکی جاسوسی، اور تخریب کاری کے خطروں، غیر ملکی طاقتوں کے ایجنٹوں کی سرگرمیوں اور سیاسی، صنعتی یا پر تشدد ذرائع سے پارلیمانی جمہوریہ کا تختہ الٹنے کے ارادے سے لیۓ جانے والے اقدامات سے محفوظ رکھنے کی ذمّہ دار ہے۔ [1] 2003 سے اس کے رہنمائے عام یرژي لانگ ہے۔ [2] رہنمائے عام حکومت چیک جمہوریہ کو جوابدہ ہے۔ یہ سروس سالانہ آپنی سرگرمیوں کے بارے میں ویب سائٹ میں ایک رپورٹ شائع کرتی ہے۔

تاریخ[ترمیم]

خدمت معلوماتی اور سلامتی 1993 میں چیکوسلوواکیہ کی تقسیم کے بعد وجود میں آئی اور اس تنظیم کے کام ایکٹ نمبر 153/1994 Coll کے ذریعے سے کنٹرول کیا جاتا ہے۔ عملے کی خدمت ایکٹ نمبر 361/2003 Coll کے ذریعے سے کنٹرول کیا جاتا ہے [3] ہر آدمی کو سیکورٹی کلیئرنس کی ضرورت ہے۔ یرژی لانگ خدمت معلوماتی اور سلامتی (بی آئی ایس) کے موجودہ ڈائریکٹر جنرل ہیں۔ جنرل یرژی لانگ 1957 میں پیدا ہوۓ۔ انہوں نے 80 دہائی میں شادی کی۔ آپ نے اعلی تعلیم 1996 میں برنو شھر میں قانون کے اسکول سے حاصل کی۔آپ 80 دہائی سے جاسوسی تنظیم میں کام کرتے تھے۔ آپ 1993 میں نئی جاسوسی تنظیم کا رکن ہو گئے اور 2003 اس تنظیم کے رہنمائے عام انتخاب کیے گیے۔ آپ 2006 سے 2007 تک دفتر خارجہ تعلقات اور معلومات کا رہنمائے عام تھے۔ ان کے بارے میں معلوم ہوتا ہے کہ وہ اسکاؤٹنگ سے دلچسپی رکھتے ہیں۔[4] اس وجہ سے آپ 1977 سے 1987 تک سکاؤٹ تنظیم کے قائد تھے۔ اس وقت ان کی عرفیت شپالیک (Špalík) وجود میں آئی۔[5]

ڈائریکٹرز کی فہرست[ترمیم]

ڈائریکٹرز کی فہرست
ڈائریکٹر کا نام تاریخ تصویر
Stanislav Devátý 1994-1997 [1]
Karel Vulterin 1997-1999
Jiří Růžek 1999-2003 [2]
Jiří Lang Špalík 2003- [3]

حوالہ جات[ترمیم]