مضطاغ اتا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
مضطاغ اتا

مضطاغ اتا (Muztagh Ata) دنیا کی چڑھنے میں آسان بلند ترین چوٹی ہے۔ یہ چین کے علاقے سنکیانگ میں کن لن شان کے پہاڑی سلسلے میں شاہراہ ریشم سے تھوڑے فاصلے پر واقع ہے۔ اسکی بلندی 7546میٹر / 24757 فٹ ہے۔ اسکی آسان ڈھلوان اس پر چڑھنا آسان بنا دیتی ہے۔

نام[ترمیم]

مقامی اویغور زبان میں مضطاغ اتا کا مطلب ہے برفانی پہاڑوں کا باپ۔ اویغور زبان کا تعلق ترک زبانوں سے ہے اور ترک میں باپ کو "اتا" کہتے ہیں جیسے اتاترک یعنی ترکوں کا باپ۔

چڑھائی[ترمیم]

1894 میں اس پر پہلی بار چڑھنے کی کوشش کی گئی جو ناکام ہوئی۔ 1900، 1904 اور 1947 میں بھی ناکام کوششیں ہوئیں۔ 1956 میں چینی اور روسی کوہ پیماؤں کی ایک ٹیم نے اسے سر کیا۔ 1980 میں سکی (Ski) کر کے چڑھا اور اترا گيا۔ ایک گروہ نے اس پر سائیکل کے ذریعے بھی چڑھنے کی کوشش کی۔ یہ پہاڑ شوقین کوہ پیماؤں کاسب سے پسنیدہ پہاڑ ہے لیکن یہ بات بھی یاد رکھنے کی ہے کہ 20000 فٹ سے زیادہ بلندی پر موت کا علاقہ (Death Zone) شروع ہو جاتا ہے۔ برف، طوفان، گڑھے، بلندی اور سرد ہوائیں یہ سب مسئلے پیدا کرتی ہیں۔

بیرونی روابط[ترمیم]

Incomplete-document-purple.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کرکے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔