ملک برکت علی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

( 1886ء ۔ 5 اپریل 1946ء )

پنجاب میں مسلم لیگ کے قدیم اور مشہور رہنما، مدرس، صحافی اور وکیل جن کی وفاداری پر قائد اعظم کو یقین کامل تھا۔

ملک برکت علی نے اپنی طرز زندگی کا آغاز سابق کرسچین کالج لاہور سے بطور لیکچرار کیا، بعد ازاں وہ اسلامیہ کالج لاہور میں انگریزی کے پروفیسر ہو گئے۔

عملی زندگی[ترمیم]

1908ء تا 1914ء سرکاری ملازمت کرنے کے بعد انگریزی اخبار آبزرور (Observer) کے مدیر مقرر ہو کر اپنی صحافتی زندگی کا آغاز کیا پھر خود ہی ایک ہفتہ وار انگریزی اخبار جاری کیا۔ اسی دوران انہوں نے LLB میں نمایاں کامیابی حاصل کی اور 1920ء سے وکالت شروع کی۔ جلد ہی وہ ایک کامیاب وکیل کی حیثیت سے مشہور ہو گئے اور کئی سال تک وہ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے نائب صدر رہے۔

سیاسی خدمات[ترمیم]

ملک برکت علی مسلم لیگ کے انتہائی سرگرم رکن تھے۔

الیکشن 1937ء میں مسلم لیگ کے کامیاب امیدوار ٹھرے۔

وفات[ترمیم]

ملک برکت علی نے 1946ء میں وفات پائی۔

بیرونی روابط[ترمیم]

[1] MALIK BARKAT ALl

[2] جالندھر سرگرمیاں اور تحریکہ پاکستان میں حصہ جالندھر الیکشن ۱۹۳۷