ڈیرہ دون

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
دہرادون
Dehradun
—  دار الحکومتی شہر  —
ادارہ جنگلی تحقیق (FRI)
[[File:
دہرادون

Location of دہرادون

Point rouge croix frontier vert green.gif
|250px|none|alt=|Location of دہرادون]]
[[file:سانچہ:Location map Uttarakhand locator map.svg|250px|دہرادون is located in سانچہ:Location map Uttarakhand locator map.svg]]<div style="position: absolute; z-index: 2; top: خطاء تعبیری: غیر تسلیم شدہ محرفی تنقیط "["۔%; left: خطاء تعبیری: غیر تسلیم شدہ محرفی تنقیط "["۔%; height: 0; width: 0; margin: 0; padding: 0;">
[[File:سانچہ:Location map Uttarakhand locator map.svg|6x6px|دہرادون|link=|alt=]]
<div style="font-size: %; line-height: 110%; z-index:90; position: relative; top: -1.5em; width: 6em; خطاء تعبیری: غیر تسلیم شدہ محرفی تنقیط "["۔">دہرادون
متناسقات: 30°18′57″N 78°02′01″E / 30.3157°N 78.0336°E / 30.3157; 78.0336متناسقات: 30°18′57″N 78°02′01″E / 30.3157°N 78.0336°E / 30.3157; 78.0336
ملک بھارت
ریاست اتراکھنڈ
ضلع دہرادون
بلندی 440-545 میٹر (-1,348 فٹ)
آبادی (2011)[1]
 - دار الحکومتی شہر 578,420
 بلدیہ[2] 714,223
زبانیں
 - دفتری اردو ، ہندی ، انگریزی ، سنسکرت ، تبتی
منطقۂ وقت بھارتی معیاری وقت (یو ٹی سی+5:30)
ڈاک رمز 248001
رمزِ بعید تکلم 91-135
ویکل رجسٹریشن UK-07
ویب سائٹ dehradun.nic.in

دہرا دون بھارت کی ریاست اتراکھنڈ کا شہر اور پایۂ تخت ہے ، ضلع کا نام بھی ڈیرہ دون ہی ہے۔ یہاں ایک ملٹری اکیڈیمی اور سائنسی تحقیقاتی مرکز ہے۔ آب و ہوا کے لحاظ سے سرد اور صحت افزا مقام ہے۔ اس علاقے میں بہترین چاول پیدا ہوتے ہیں۔ یہیں سے مسوری کو جاتے ہیں جو اس سے بلند تر اور خنک اور صحت افزا مقام ہے۔

نگار خانہ[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ "Provisional Population Totals, Census of India 2011; Cities having population 1 lakh and above" (pdf). Office of the Registrar General & Census Commissioner, India. http://www.censusindia.gov.in/2011-prov-results/paper2/data_files/India2/Table_2_PR_Cities_1Lakh_and_Above.pdf. Retrieved 26 March 2012.
  2. ^ "Provisional Population Totals, Census of India 2011; Urban Agglomerations/Cities having population 1 lakh and above" (pdf). Office of the Registrar General & Census Commissioner, India. http://www.censusindia.gov.in/2011-prov-results/paper2/data_files/India2/Table_3_PR_UA_Citiees_1Lakh_and_Above.pdf. Retrieved 26 March 2012.