ہائنرک لبکے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
ہائنرک لبکے

ہائنرک لبکے 1959 میں

صدر جرمنی
در منصب
13 ستمبر 1959 – 30 جون 1969
چانسلر کونارڈ ایڈنار ،
لڈ وگ ارہارڈ،
کرٹ جارج کیسنگر
پیشرو تھیوڈور ہیوس
جانشین گستاو ہائنمین

پیدائش 14 اکتوبر 1894 (1894-10-14) ‏(119)
اینکہاس, سلطنت جرمنی
وفات 6 اپریل 1972 (عمر 77 سال)
بون، وفاقی جمہوریہ جرمنی
سیاسی جماعت سینٹر پارٹی (1933-1930)،
کرسچن ڈیموکریٹک اتحاد (1972-1945)
ازواج ولہیمین لبکے (1981-1885)
مذہب رومن کیتھولک
دستخط

کارل پائنرک لبکے (14 اکتوبر 1894، انکہاسن، ویسٹفالیہ - 6 اپریل 1972) وفاقی جمہرریہ جرمنی (مغربی جرمنی) کے 1959 سے 1969 تک صدر تھے۔ صدارت کا عہدہ ملنے سے پہلے آپ وفاقی وزیر برائے زراعت رہ چکے تھے۔ آپ قدامت پسند اور اعتدال پسند شخصیت کے حامل تھے مگر اپنی بگڑتی طبیعت کیوجہ سے شرمندانہ باتیں اور حرکتیں کر جاتے تھے۔ اپنے دوسری بار صدارتی دورانیہ کے اختتام کے تین مہینے پہلے آپ نے استعفٰی دے دیا۔

سوانح عمری[ترمیم]

لبکے کی پیدائش ایک عام سے گھر میں ہوئی۔ ان کے والد سائرلینڈ میں جوتے بناتے اور کھیتی باڑی کرتے تھے اور سرویئر کی تربیت رکھتے تھے۔[1] آپ نے پہلی جنگ عظیم کیلیئے رضاکارانہ خدمات پیش کیں اور لیفٹیننٹ کے عہدہ تک پہنچے۔

1923 سے برلن چھوٹی سطح کے کسانوں کے حقوق کیلیئے کام کرنے والی تنظیم میں افسر کا کام کرنے کے بعد آپ 1930 میں رومن کیتھولک سینٹر جماعت (Zentrumspartei) کی رکنیت اختیار کی اور اپریل 1932 میں پرشین پارلیمنٹ کے رکن منتخب ہوئے۔

1933 میں نیشنل سوشلسٹ کے طاقت میں آنے اور (Zentrumspartei) کے تحلیل ہونے کے بعد لبکے پر عوامی سرمائے میں غبن کے الزام میں جیل بھیج دیا گیا۔ بیس (20) مہینے بعد جرم ثابت نا ہونے پر آپ کو رہا کردیا گیا۔

1937 میں آپ تعمیراتی مجلس (جرمن : Wohnungsbaugesellschaft) میں اونچہ درجہ پر فائز ہوئے اور 1939 میں دوسری جنگ عظیم شروع ہونے سے قبل ماہر تعمیرات والٹر اشکلیمپ کی تعمیراتی انجینیئروں پر مبنی کمپنی کا حصہ بنے۔ یہاں آپ البرٹ اسپیئر توجہ کا مرکز بنے اور آپ کو بڑے تعمیراتی منصوبوں پر فائز کر دیا گیا۔ ان مے سے ایک منصوبہ “آرمی ریسرچ سنٹر پینے منڈے (جرمن : Heeresversuchsanstalt Peenemünde) کی توسیع اور ایئر فورس آزمائشی مرکز (جرمن : Erprobungsstelle der Luftwaffe) تھے۔[1]

جنگ کے اختتام پزیر ہونے کے بعد آپ نے سیاست میں واپسی اختیار کی اور مغربی جرمن سی ڈی یو جماعت میں شمولیت اختیار کی۔ آپ 1947 میں شمالی رہائن ویسٹ فالیہ کی اسٹیٹ پارلیمنٹ میں وزیر زراعت مقرر ہوئے۔ 1953 میں کونارڈ ایڈنائر نے آپ کو اپنی کابینہ میں وفاقی وزیر برائے زراعت فائز کیا۔ [1]

لبکے، ایڈینار کی کابینہ کے ہمراہ

ایڈنائر نے آپ کو صدر کی رسمی

انداز گفتگو[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ 1.0 1.1 1.2 Die Zeit: "Der Fall Lübke" (The Lübke Case) (2007, in German)