یونانی زبان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
Greek
واطن مکلمین Expression error: Missing operand for -.[1]
خاندانہائے زبان
ہند-یورپی زبانیں
لہجے (بولیاں)
خطات یونانی الفبی
یونانی بریلی
سرکاری حیثیت
دفتری زبان Flag of Greece.svg یونان
Flag of Cyprus.svg قبرص
Flag of Europe.svg یورپی اتحاد
Recognised minority language in
نظمیت از No official regulation
رموزِ زبان
آئیسو 639-3 Variously:
grc – قدیم یونانی
cpg – قبدوسی یونانی
ell – جدید یونانی
gmy – مائسنی یونانی
pnt – پانٹی یونانی
tsd – Tsakonian
yej – Yevanic
Linguasphere 56-AAA-a (varieties: 56-AAA-aa to -am)

یونانی زبان (ελληνικά IPA [eliniˈka] یا ελληνική γλώσσα، IPA [eliniˈci ˈɣlosa]) یونان کی زبان ہے جو دنیا کی قدیم زبانوں میں سے ہے۔ اس کا تعلق ہند یورپی زبانوں سے ہے۔سائنس اور مغربی ثقافت پر بہت زیادہ اثر اندازہوئی زبان ہے اس کے علاوہ انگریزی زبان پر بھی اس کا گہرا اثر پڑچکاہے۔چونکہ سائنسی علوم میں یونانی لوگوں نے بہت اہم کردار ادا کیا ہے اسلئے آج کل کے جدید طب میں زیادہ تر یونانی الفاظ ہی مستعمل ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ Nationalencyklopedin "Världens 100 största språk 2007" The World's 100 Largest Languages in 2007
  2. ^ خطا در حوالہ: غلط <ref> ٹیگ؛ حوالہ بنام HumanRights کے لیے کوئی متن فراہم نہیں کیا گیا
  3. ^ Jeffries, Ian. Eastern Europe at the end of the 20th century. Books.google.com. p. 69. http://books.google.com/books?id=kqCnCOgGc5AC&pg=PA68&dq=greek+minority+albania&lr=&as_drrb_is=q&as_minm_is=0&as_miny_is=&as_maxm_is=0&as_maxy_is=&as_brr=0۔ اخذ کردہ بتاریخ 2013-09-09. 
  4. ^ خطا در حوالہ: غلط <ref> ٹیگ؛ حوالہ بنام CouncilofEurope کے لیے کوئی متن فراہم نہیں کیا گیا
  5. ^ "Greek in Hungary". Public Foundation for European Comparative Minority Research. http://languagecharter.eokik.hu/sites/languages/L-Greek_in_Hungary.htm۔ اخذ کردہ بتاریخ 31 May 2013. 
  6. ^ Hellenic Republic: Ministry of Foreign Affairs: Italy: The Greek Community[مردہ ربط]
  7. ^ Tsitselikis, Konstantinos (2013). "A surviving treaty: the lausanne minority protection in Greece and Turkey". in Kristin Henrard. The interrelation between the right to identity of minorities and their socio-economic participation. Leiden: Martinus Nijhoff. pp. 294–295. 


بیرونی روابط[ترمیم]