مندرجات کا رخ کریں

آئی سی سی ٹی/20 عالمی کپ 2024ء

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
آئی سی سی ٹی/20 عالمی کپ 2024ء
  • Out of This World
تاریخ1 – 29 جون 2024
منتظمبین الاقوامی کرکٹ کونسل
کرکٹ طرزٹی/20
ٹورنامنٹ طرزگروپ مرحلہ، سپر ایٹ اور ناک آؤٹ مرحلہ
میزبان ویسٹ انڈیز کرکٹ بورڈ
 ریاستہائے متحدہ
فاتح بھارت (2 بار)
رنر اپ جنوبی افریقا
شریک ٹیمیں20
کل مقابلے55
بہترین کھلاڑیبھارت جسپریت بمراہ
کثیر رنزافغانستان رحمن اللہ گرباز (281)
کثیر وکٹیںافغانستان فضل حق فاروقی (17)
بھارت ارشدیپ سنگھ (17)
باضابطہ ویب سائٹt20worldcup.com
2022

آئی سی سی ٹی/20 عالمی کپ 2024ء آئی سی سی ٹوئنٹی20 عالمی کپ کا نواں مقابلہ تھا جو یکم سے 29 جون 2024ء تک ویسٹ انڈیز اور امریکا میں کھیلا گیا۔ اس عالمی کپ میں بیس ٹیمیں شریک ہوئیں۔ [1] یہ پہلا آئی سی سی عالمی کپ ٹورنامنٹ تھا جس کی میزبانی امریکا نے کی۔ [2] ویسٹ انڈیز اس سے قبل 2010ء کے ایڈیشن کی میزبانی کے بعد دوسری بار ٹی ٹوئنٹی عالمی کپ کی میزبانی کی۔ اس ٹورنامنٹ میں انگلستان دفاعی چیمپئن تھا جس نے گزشتہ ایڈیشن کے فائنل میں پاکستان کو شکست دی تھی۔

ٹورنامنٹ میں ریکارڈ 20 ٹیموں نے حصہ لیا، 2022ء کے ٹورنامنٹ میں 16 ٹیموں تھیں۔ اس میں دو میزبان، 2022ء ایڈیشن کی سرفہرست آٹھ ٹیمیں، آئی سی سی مردوں کی ٹی/20 بین الاقوامی ٹیم درجہ بندی میں اگلی دو ٹیمیں اور علاقائی کوالیفائرز کے ذریعے طے شدہ آٹھ ٹیمیں شامل تھیں۔ کینیڈا اور یوگنڈا نے پہلی بار مردوں کے ٹی ٹوئنٹی عالمی کپ کے لیے کوالیفائی کیا ، جب کہ امریکا نے شریک میزبان ہونے کی وجہ سے پہلی بار شرکتکی۔

ٹیمیں اور اہلیت[ترمیم]

کرکٹ ورلڈ کپ میں کون سے ممالک حصہ لیں گے اس پر روشنی ڈالی گئی۔
  میزبان کے طور پر اہل
  ٹوئنٹی20عالمی کپ 2022ء میں ٹاپ 8 میں جگہ بنا کر کوالیفائی کیا
  آئی سی سی مردانہ بین الاقوامی ٹی/20 درجہ بندی ٹیم رینکنگ کے ذریعے کوالیفائی کیا۔
  علاقائی کوالیفائر کے ذریعے اہل
  علاقائی کوالیفائر میں حصہ لیا لیکن کوالیفائی کرنے میں ناکام رہا۔

ٹوئنٹی20عالمی کپ 2022ء کی ٹاپ آٹھ ٹیمیں اور دو میزبان خود بخود ٹورنامنٹ کے لیے کوالیفائی کر گئے۔ بقیہ دو خودکار کوالیفکیشن مقامات آئی سی سی مردانہ بین الاقوامی ٹی/20 درجہ بندی میں بہترین رینک والی ٹیموں نے حاصل کیے جنھوں نے 14 نومبر 2022 تک، فائنل میں جگہ حاصل نہیں کی تھی۔[3][4]

باقی آٹھ جگہیں آئی سی سی کے علاقائی کوالیفائرز کے ذریعے پُر کی گئیں، جن میں افریقہ، ایشیا اور یورپ کی دو ٹیمیں شامل ہیں، ساتھ ہی امریکا اور مشرقی ایشیا پیسیفک گروپس کی ایک ایک ٹیم شامل ہے.[5] مئی 2022 میں، آئی سی سی نے یورپ، مشرقی ایشیا پیسفک اور افریقہ کے لیے ذیلی علاقائی اہلیت کے راستوں کی تصدیق کی۔[6]

جولائی 2023ء میں، آئرلینڈ اور اسکاٹ لینڈ یورپ کوالیفائر سے پہلی دو ٹیمیں بن گئیں۔ کوالیفائی کریں، اس کے بعد ایسٹ ایشیا پیسیفک کوالیفائر سے پاپوا نیو گنی۔[7][8] کینیڈا نے اکتوبر 2023 میں برمودا کو امریکہ کوالیفائر میں اپنے فائنل میچ میں شکست دینے کے بعد اپنی اہلیت حاصل کی۔[9] اگلے مہینے، نیپال اور عمان نے ایشیا کوالیفائر کے فائنل میں پہنچنے کے بعد کوالیفائی کیا۔[10] اس کے بعد نمیبیا اور یوگنڈا جنھوں نے افریقہ کوالیفائر میں ٹاپ دو میں کامیابی حاصل کرنے کے بعد کوالیفائی کیا۔ .[11][12]

قابلیت تاریخ مقامات ٹیموں کی تعداد کوالیفائیڈ
میزبان 16 نومبر 2021ء 2  ریاستہائے متحدہ
 ویسٹ انڈیز
ٹوئنٹی20عالمی کپ 2022ء
(پچھلے ٹورنامنٹ کی ٹاپ 8 ٹیمیں)
13 نومبر 2022ء آسٹریلیا 8
آئی سی سی مردانہ بین الاقوامی ٹی/20 درجہ بندی
(درجہ بندی سے اگلی 2 ٹیمیں)
14 نومبر 2022ء 2
یورپ کوالیفائی 20-28 جولائی 2023ء اسکاٹ لینڈ 2
ایسٹ ایشیا پیسیفک کوالیفائر 22–29 جولائی 2023ء پاپوا نیو گنی 1  پاپوا نیو گنی
امریکہ کوالیفائی 30 ستمبر تا 7 اکتوبر 2023ء برمودا 1  کینیڈا
ایشیا کوالیفائی 30 اکتوبر تا 5 نومبر 2023ء نیپال 2
افریقہ کوالیفائی 22–30 نومبر 2023ء نمیبیا 2
کل 20

میچ دفتری[ترمیم]

3 مئی 2024ء کو آئی سی سی نے ٹورنامنٹ کے پہلے مرحلے کے لیے میچ ریفریوں اور امپائروں کی فہرست جاری کی۔[13]

ریفری

امپائر

مقامات[ترمیم]

اپریل 2023ء میں کرکٹ ویسٹ انڈیز نے میچوں کی میزبانی کے خواہش مند خطے کے ممالک کے لیے بولی لگانے کا عمل شروع کیا۔[14] جولائی 2023 میں، آئی سی سی نے ریاستہائے متحدہ میں چار مقامات کو شارٹ لسٹ کیا: سینٹرل بروورڈ پارک فورٹ لاوڈرڈیل، فلوریڈا میں؛ چرچ اسٹریٹ پارک مورسویل، شمالی کیرولائنا میں؛ ایئرہوگس اسٹیڈیم قریب ڈیلاس، ٹیکساس؛ اور نیو یارک سٹی میں وان کورٹلینڈ پارک۔[15] وین کورٹلینڈ پارک کی تعمیر کے فیصلے کے خلاف مظاہروں کے بعد اسٹیڈیم کی جگہ کو لونگ آئی لینڈ میں آئزن ہاور پارک میں ایک عارضی اسٹیڈیم میں تبدیل کر دیا گیا۔ چرچ اسٹریٹ پارک نے امریکا میں مقامات کی حتمی فہرست نہیں بنائی۔[16][17][18][19][20]

ستمبر 2023ء میں، سات مقامات کیریبین ممالک اینٹیگوا و باربوڈا، بارباڈوس، ڈومینیکا، گیانا، سینٹ لوسیا، سینٹ وینسینٹ و گریناڈائنز اور ٹرینیڈاڈ وٹوباگو کو میچوں کی میزبانی کے لیے منتخب کیا گیا تھا۔[21] جمیکا کرکٹ ویسٹ انڈیز کی واحد رکن ایسوسی ایشن تھی جس نے ورلڈ کپ کی میزبانی کے لیے بولی جمع نہیں کروائی، جمیکا کے وزیر کھیل اولیویا گرینج نے لاگت کی بنیاد پر بولی کو مسترد کر دیا۔[22]

نومبر 2023ء میں یہ اطلاع ملی کہ ٹرینیڈاڈ کا کوئینز پارک اوول جو ملک کا سب سے بڑا کرکٹ گراؤنڈ ہے، ورلڈ کپ کے کسی میچ کی میزبانی نہیں کرے گا اور یہ فکسچر برائن لارا کرکٹ اکیڈمی میں برائن لارا کرکٹ اکیڈمی میں منتقل کر دیا جائے گا۔ سان فرنینڈو۔ کوئینز پارک کرکٹ کلب کے صدر، نائجیل کاماچو نے کہا کہ یہ مقام غالباً مرکزی ٹورنامنٹ کے آغاز سے قبل وارم اپ میچوں کی میزبانی کرے گا۔.[23]


ویسٹ انڈیز میں مقامات
اینٹیگوا و باربوڈا بارباڈوس گیانا
سرویوین رچرڈزاسٹیڈیم کینسنگٹن اوول پروویڈنس اسٹیڈیم
گنجائش: 10,000 گنجائش: 28,000 گنجائش: 20,000
میچ: 8 میچ: 9 (فائنل) میچ: 6 (سیمی فائنل)
سینٹ لوسیا سینٹ وینسینٹ و گریناڈائنز ٹرینیڈاڈ وٹوباگو
ڈیرن سیمی نیشنل کرکٹ اسٹیڈیم آرونس ویل اسٹیڈیم برائن لارا کرکٹ اکیڈمی
گنجائش: 15,000 گنجائش: 18,000 گنجائش: 15,000
میچ: 6 میچ: 5 میچ: 5 (سیمی فائنل)
ریاستہائے متحدہ میں مقامات
فلوریڈا نیو یارک ٹیکساس
سینٹرل بروورڈ پارک نساؤ کاؤنٹی بین الاقوامی کرکٹ اسٹیڈیم ایئرہوگس اسٹیڈیم
گنجائش: 25,000[ا] گنجائش: 34,000 گنجائش: 15,000[ا]
میچ: 4 میچ: 8 میچ: 4
  1. ^ ا ب مقابلے کے دوران عارضی نشستوں کا استعمال کرتے ہوئے اس اسٹیڈیم کی گنجائش کو بڑھایا گیا

گروپ مرحلہ[ترمیم]

گروپ مرحلہ پانچ ٹیموں کے چار گروپس پر مشتمل تھا جو سنگل راؤنڈ رابن فارمیٹ کے طور پر کھیلا گیا جس میں ہر گروپ میں سرفہرست دو ٹیمیں سپر 8 مرحلے میں داخل ہوئیں۔[24]

گروپ
گروپ اے گروپ بی گروپ سی گروپ ڈی

گروپ اے[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  بھارت 4 3 0 1 7 1.137 سپر 8 میں پہنچ
2  ریاستہائے متحدہ (H) 4 2 1 1 5 0.127
3  پاکستان 4 2 2 0 4 0.294
4  کینیڈا 4 1 2 1 3 −0.493
5  آئرلینڈ 4 0 3 1 1 −1.293

گروپ بی[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  آسٹریلیا 4 4 0 0 8 2.791 سپر 8 تک پہنچ
2  انگلستان 4 2 1 1 5 3.611
3  اسکاٹ لینڈ 4 2 1 1 5 1.255
4  نمیبیا 4 1 3 0 2 −2.585
5  سلطنت عمان 4 0 4 0 0 −3.062

گروپ سی[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  ویسٹ انڈیز (H) 4 4 0 0 8 3.257 سپر 8 میں پہنچ
2  افغانستان 4 3 1 0 6 1.835
3  نیوزی لینڈ 4 2 2 0 4 0.415
4  یوگنڈا 4 1 3 0 2 −4.510
5  پاپوا نیو گنی 4 0 4 0 0 −1.268

گروپ ڈی[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  جنوبی افریقا 4 4 0 0 8 0.470 سپر 8 میں پہنچ
2  بنگلادیش 4 3 1 0 6 0.616
3  سری لنکا 4 1 2 1 3 0.863 باہر ہو گئے
4  نیدرلینڈز 4 1 3 0 2 −1.358
5    نیپال 4 0 3 1 1 −0.542

سپر 8[ترمیم]

گروپ مرحلے کے بعد، ہر گروپ میں سرفہرست دو ٹیموں کو سپر 8 مرحلے میں چار کے دو گروپوں میں رکھا گیا جو سنگل راؤنڈ رابن کے طور پر کھیلا گیا، ہر گروپ میں سرفہرست دو ٹیمیں ناک آؤٹ مرحلے میں داخل ہوئیں۔[24]

اہلیت سپر 8 مرحلہ
گروپ 1 گروپ 2
گروپ مرحلے سے پہنچے
(ہر گروپ سے سر فہرست 2 ٹیمیں)
 بھارت[ا]  ریاستہائے متحدہ[ب]
 آسٹریلیا[پ]  انگلستان[ت]
 افغانستان[ٹ]  ویسٹ انڈیز[ث]
 بنگلادیش[ج]  جنوبی افریقا[چ]
  1. بھارت پہلے سے الاٹ پوزیشن اے 1 تھا اور اس نے کوالیفائی کر لیا ہے۔[27]
  2. امریکہ نے کوالیفائی کیا اور اے 2 پوزیشن حاصل کی، جو اصل میں پاکستان کو پہلے سے الاٹ کی گئی تھی، جو کوالیفائی کرنے میں ناکام رہا[28]
  3. آسٹریلیا کو پہلے سے الاٹ پوزیشن بی 2 تھی اور اس نے کوالیفائی کر لیا ہے۔[29]
  4. انگلینڈ کو پہلے سے الاٹ پوزیشن بی 1 دی گئی تھی اور اس نے کوالیفائی کر لیا ہے۔[30]
  5. افغانستان نے کوالیفائی کیا اور سی 1 پوزیشن حاصل کی، جو اصل میں نیوزی لینڈ کو پہلے سے الاٹ کی گئی تھی، جو کوالیفائی کرنے میں ناکام رہی[31]
  6. ویسٹ انڈیز کو پہلے سے سی 2 پوزیشن الاٹ کی گئی تھی اور وہ کوالیفائی کر چکا ہے۔[32]
  7. بنگلہ دیش نے کوالیفائی کیا اور ڈی 2 پوزیشن حاصل کی، جو اصل میں سری لنکا کو پہلے سے الاٹ کی گئی تھی، جو کوالیفائی کرنے میں ناکام رہی[33][34]
  8. جنوبی افریقہ کو پہلے سے ڈی 1 پوزیشن الاٹ کی گئی تھی اور اس نے کوالیفائی کر لیا ہے۔[29]

گروپ 1[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  بھارت 3 3 0 0 6 2.017 ناک آؤٹ مرحلے میں پہنچ
2  افغانستان 3 2 1 0 4 −0.305
3  آسٹریلیا 3 1 2 0 2 −0.331 باہر ہو گئے
4  بنگلادیش 3 0 3 0 0 −1.709

20 جون 2024 (2024-06-20)
اسکور کارڈ
بھارت 
181/8 (20 اوور)
ب
 افغانستان
134 (20 اوور)

گروپ 2[ترمیم]

پوزیشن ٹیم کھیلے جیتے ہارے بلانتیجہ پوائنٹس نیٹ رن ریٹ اہلیت
1  جنوبی افریقا 3 3 0 0 6 0.599 ناک آؤٹ مرحلے میں پہنچ
2  انگلستان 3 2 1 0 4 1.992
3  ویسٹ انڈیز (H) 3 1 2 0 2 0.963 باہر ہوگئے
4  ریاستہائے متحدہ (H) 3 0 3 0 0 −3.906
ماخذ: ای ایس پی این کرک انفو[35]
Rules for classification: 1) پوائنٹس؛ 2) جیت؛ 3) نیٹ رن ریٹ؛ 4) ٹائی ٹیموں کے درمیان کھیلوں کے نتائج
(H) میزبان

ناک آؤٹ مرحلہ[ترمیم]

بریکٹ[ترمیم]

ناک آؤٹ مرحلے کا خط وحدانی نیچے دکھایا گیا ہے، جس میں ہر میچ جیتنے والوں کو بولڈ دیکھایا گیا ہے۔

سیمی فائنل فائنل
      
2اے  جنوبی افریقا 60/1 (8.5 اوور)
1بی  افغانستان 56 (11.5 اوور)
سیمی1فاتح  جنوبی افریقا 169/8 (20 اوور)
سیمی2فاتح  بھارت 176/7 (20 اوور)
1اے  بھارت 171/7 (20 اوور)
2بی  انگلستان 103 (16.4 اوور)

سیمی فائنل[ترمیم]


27 جون 2024 (2024-06-27)
سکور کارڈ
بھارت 
171/7 (20 اوورز)
ب
 انگلستان
103 (16.4 اوورز)

فائنل[ترمیم]

اعدادوشمار[ترمیم]

Most runs[ترمیم]

2024 ICC Men's T20 World Cup statistics

Most wickets[ترمیم]

2024 ICC Men's T20 World Cup statistics

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "امریکا T20 ورلڈ کپ منعقد کرے گا: 2024-2031 ICC مردوں کے ٹورنامنٹ کے میزبانوں کی تصدیق"۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 اپریل 2022 
  2. "2024 T20 ورلڈ کپ: USA کو خودکار اہلیت دی گئی۔"۔ بی بی سی سپورٹس۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 اپریل 2022 
  3. "بارہ ٹیمیں 2024 مردوں کے T20 ورلڈ کپ میں خودکار طور پر داخل ہوں گی۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 اپریل 2022 
  4. "ڈنمارک، اٹلی ٹی 20 ورلڈ کپ 2024 سے ایک قدم جب یورپ کوالیفکیشن جاری ہے۔"۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل۔ اخذ شدہ بتاریخ 21 جولا‎ئی 2022 
  5. "مارکی آئی سی سی ایونٹس کے لیے اہلیت کے راستے کی تصدیق ہو گئی۔"۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 اپریل 2022 
  6. "آئی سی سی مینز ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ 2024 کے لیے اہلیت کے راستے کا اعلان کر دیا گیا۔"۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مئی 2022 
  7. "آئرلینڈ اور اسکاٹ لینڈ نے 2024 مینز T20 ورلڈ کپ میں اپنی جگہ پر مہر لگا دی۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 06 نومبر 2023 
  8. "پاپوا نیو گنی نے 2024 مینز ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کر لیا۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 06 نومبر 2023 
  9. "دھالیوال، ثنا اسٹار کی حیثیت سے کینیڈا نے اپنی تاریخ میں پہلی بار T20 ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کیا۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 06 نومبر 2023 
  10. "نیپال اور عمان نے 2024 کے مردوں کے T20 ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کر لیا۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 06 نومبر 2023 
  11. "نمیبیا نے 2024 کے T20 ورلڈ کپ میں اپنی جگہ پر مہر لگا دی۔"۔ ای ایس پی این کرک انفو (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 نومبر 2023 
  12. "زمبابوے 2024 T20 ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کرنے میں ناکام؛ یوگنڈا بنا"۔ ESPNcricinfo (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 نومبر 2023 
  13. "آئی سی سی مینز ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ 2024 کے میچ آفیشلز کا انکشاف"۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل۔ 3 May 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 03 مئی 2024 
  14. "ICC Men's T20 World Cup 2024 Caribbean bid process takes centre stage | Windies Cricket news"۔ Windies۔ اخذ شدہ بتاریخ 01 اگست 2023 
  15. "Next Men's T20 World Cup set to be played from June 4 to 30, 2024"۔ ESPNcricinfo (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 01 اگست 2023 
  16. "Dozens of Bronx Groups Object to 34,000-Seat Cricket Stadium in Van Cortlandt Park"۔ The City (بزبان انگریزی)۔ 2023-08-21۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 ستمبر 2023 
  17. Dana Rubinstein (2023-09-20)۔ "New York City Loses Contentious Bid for Cricket Stadium to Long Island"۔ The New York Times (بزبان انگریزی)۔ ISSN 0362-4331۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 ستمبر 2023 
  18. "ICC confirms New York as venue for Men's T20 World Cup 2024"۔ Cricbuzz (بزبان انگریزی)۔ 20 September 2023۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 ستمبر 2023 
  19. "Dallas, Florida and New York confirmed as hosts of ICC Men's T20 World Cup 2024"۔ www.icc-cricket.com (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 21 ستمبر 2023 
  20. "آرکائیو کاپی" (PDF)۔ 02 اکتوبر 2023 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 نومبر 2023 
  21. "Caribbean, USA venues confirmed as ICC Men's T20 World Cup 2024 heads to the west"۔ www.icc-cricket.com (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 22 ستمبر 2023 
  22. "2024 T20 World Cup: 'Cost-benefit analysis' convinced Jamaica to not bid to host games"۔ ESPNcricinfo۔ 25 September 2023۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 نومبر 2023 
  23. "No T20 World Cup games at the Oval, Brian Lara venue to host all fixtures"۔ newsday.co.tt (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 27 نومبر 2023 
  24. ^ ا ب
  25. "Groups, fixtures confirmed for ICC Men's T20 World Cup 2024"۔ International Cricket Council (بزبان انگریزی)۔ 5 January 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 01 جون 2024 
  26. ^ ا ب پ ت "T20 World Cup Points Table | T20 World Cup Standings | T20 World Cup Ranking"۔ ESPNcricinfo (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 جون 2024 
  27. "USA vs IND, T20 World Cup 2024: India qualifies for Super 8 after beating United States"۔ Sportstar۔ 12 June 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 جون 2024 
  28. Rob Smyth (2024-06-14)۔ "USA qualify for Super Eights after washout against Ireland: T20 Cricket World Cup – as it happened"۔ the Guardian (بزبان انگریزی)۔ ISSN 0261-3077۔ اخذ شدہ بتاریخ 15 جون 2024 
  29. ^ ا ب "Australia and South Africa become first teams to qualify for Super 8 stage of T20 World Cup - CNBC TV18"۔ CNBCTV18۔ 12 June 202۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 جون 2024 
  30. "T20 World Cup 2024: England qualify for Super 8 as Australia beat Scotland"۔ Firstpost (بزبان انگریزی)۔ 2024-06-16۔ اخذ شدہ بتاریخ 16 جون 2024 
  31. "Afghanistan qualify for Super 8 stage of ICC T20 World Cup 2024, New Zealand eliminated"۔ Cric Today۔ 14 June 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 جون 2024 
  32. "West Indies Qualify For Super 8s After 13-Run Win Over New Zealand"۔ این ڈی ٹی وی۔ 13 June 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 جون 2024 
  33. "Bangladesh Seal Final Spot In T20 World Cup Super 8s, Fans Question "Where Is Pakistan?" | Cricket News"۔ NDTVSports.com (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 18 جون 2024 
  34. "Sri Lanka Knocked Out Of T20 World Cup 2024"۔ این ڈی ٹی وی۔ 13 June 2024۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 جون 2024 
  35. ^ ا ب پ "T20 World Cup Points Table | T20 World Cup Standings | T20 World Cup Ranking"۔ ESPNcricinfo (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 جون 2024 

بیرونی روابط[ترمیم]