آتھیا شیٹی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
آتھیا شیٹی
آتھیا شیٹی

معلومات شخصیت
پیدائش 5 نومبر 1992 (26 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
ممبئی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
قومیت بھارتی
والدین سنیل شیٹی (باپ)
مانا شیٹی (ماں)
عملی زندگی
تعليم کیتھڈرل اینڈ جان کینون اسکول
امریکن اسکول آف بومبے
پیشہ اداکارہ
ویب سائٹ
ویب سائٹ باضابطہ ویب سائٹ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں باضابطہ ویب سائٹ (P856) ویکی ڈیٹا پر
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں آئی ایم ڈی  بی - آئی ڈی (P345) ویکی ڈیٹا پر

آتھیا شیٹی (پیدائش 5 نومبر 1992)[1] ایک بھارتی فلم اداکار ہے جس نے بالی وڈ میں اپنی پہچان بنائی۔ اس نے اپنے فلمی کیریئر کی شروعات رومانٹک ایکشن فلم ہیرو  سے کی جس کے لیے اس نے دادا صاحب پھالکے ایکسیلینس ایوارڈ  جیتا اور بیسٹ فیمیل ڈیبیو کے لیے فلم فیئر انعام کے لیے نامزد کیا گیا تھا۔[2]

ابتدائی زندگی اور کیریئر[ترمیم]

آتھیا کا جنم 5 نومبر 1992ء کو ممبئی میں اداکار سنیل شیٹی اور ڈائریکٹر مانا شیٹی کے گھر ہوا۔[3] اس کا باپ تلووا ہے[4] اور اس کی ماں نیم مسلم اور نیم پنجابی کپور ہے۔[5]

آتھیا نے مشہور کیتھڈرل اینڈ جان کینون اسکول میں پڑھائی کی اور بعد میں امریکن اسکول آف بومبے میں داخلہ لیا۔[6] وہاں ہی، اس نے شردھا کپور اور ٹائیگر شروف کے ساتھ اسکول کے ڈراموں میں حصہ لیا۔[7] 18 سال کی عمر میں، وہ فلم اکادمی میں داخلہ لینے کے لیے اکیلی نیویارک شہر میں بس گئی کیونکہ وہ فلموں میں کام کرنا چاہتی تھی۔

فلموگرافی[ترمیم]

سال فلم کردار ملاحظات
2015 ہیرو رادھا ماتھر اہم کردار
2017 مبارکاں بنکل سندھو دوسرا اہم کردار

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Upala (8 نومبر 2010) KBR۔ "Sunil Shetty had a swell Diwali"۔ Mid-Day۔ اخذ کردہ بتاریخ 21 نومبر 2015۔ 
  2. "Sooraj Pancholi, Athiya Shetty bag best debut at Dada Saheb Phalke awards"۔ mid-day۔ 29 اپریل 2016۔ اخذ کردہ بتاریخ 2016-08-20۔ 
  3. "Acting with dad will be weird: Athiya Shetty"۔ indianexpress.com۔ اخذ کردہ بتاریخ 12 اکتوبر 2015۔ 
  4. "Tuluvas hardworking: Sunil Shetty"۔ deccanherald.com۔ اخذ کردہ بتاریخ 2 جولائی 2016۔ 
  5. Priya (7 مئی 2014) Gupta۔ "Mumbai girls were safe when Balasaheb was alive: Suniel Shetty"۔ Times of India۔ اخذ کردہ بتاریخ 19 اگست 2015۔ 
  6. "Athiya Shetty: Lesser known facts"۔ The Times of India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2 جولائی 2016۔ 
  7. "Athiya Shetty: My grandfather is larger than life for me as he has never discriminated between a boy and a girl"۔ timesofindia.com۔ اخذ کردہ بتاریخ 12 اکتوبر 2015۔ 

بیرونی روابط[ترمیم]