مندرجات کا رخ کریں

آرتھرمیلی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
آرتھر میلی
آرتھر میلی کا اسٹوڈیو پورٹریٹ، 1925ء
ذاتی معلومات
مکمل نامالفریڈ آرتھر میلی
پیدائش3 جنوری 1886(1886-01-03)
زیٹ لینڈ, نیو ساؤتھ ویلز, آسٹریلیا
وفات31 دسمبر 1967(1967-12-31) (عمر  81 سال)
کیراوی, نیو ساؤتھ ویلز, آسٹریلیا
قد174 سینٹی میٹر (5 فٹ 9 انچ)
بلے بازیدائیں ہاتھ کا بلے باز
گیند بازیدائیں ہاتھ کا لیگ بریک اور گوگلی بولر
حیثیتبولر
بین الاقوامی کرکٹ
قومی ٹیم
پہلا ٹیسٹ (کیپ 108)17 دسمبر 1920  بمقابلہ  انگلینڈ
آخری ٹیسٹ14 اگست 1926  بمقابلہ  انگلینڈ
ملکی کرکٹ
عرصہٹیمیں
1912–1930نیو ساؤتھ ویلز کرکٹ ٹیم
کیریئر اعداد و شمار
مقابلہ ٹیسٹ فرسٹ کلاس
میچ 21 158
رنز بنائے 222 1,530
بیٹنگ اوسط 11.10 12.33
100s/50s 0/0 0/3
ٹاپ اسکور 46* 66
گیندیں کرائیں 6,119 36,285
وکٹ 99 779
بولنگ اوسط 33.91 24.09
اننگز میں 5 وکٹ 6 61
میچ میں 10 وکٹ 2 16
بہترین بولنگ 9/121 10/66
کیچ/سٹمپ 14/– 157/–
ماخذ: ای ایس پی این کرک انفو، 23 مارچ 2017

الفریڈ آرتھر میلی (پیدائش:3 جنوری 1886ء زیٹ لینڈ، سڈنی، نیو ساؤتھ ویلز| وفات: 31 دسمبر 1967ء کراوی، سڈنی، نیو ساؤتھ ویلز،) ایک آسٹریلوی کرکٹ کھلاڑی تھا جس نے 1920ء اور 1926ء کے درمیان 21 ٹیسٹ میچ کھیلے[1] میلبورن میں چوتھے ٹیسٹ کی دوسری اننگز میں انھوں نے 121 رنز کے عوض 9 وکٹیں حاصل کیں جو اب بھی آسٹریلیا کے کسی باؤلر کا ٹیسٹ ریکارڈ ہے۔ 1921ء کے دورے کے دوران چیلٹن ہیم میں فرسٹ کلاس کرکٹ میں، اس نے دوسری اننگز میں 66 رنز کے عوض گلوسٹر شائر کی تمام دس وکٹیں حاصل کیں۔ [2]

اول درجہ کی مہنگی باؤلنگ[ترمیم]

ان کے پاس اول درجہ کرکٹ میں سب سے مہنگی بولنگ کا ریکارڈ بھی ہے۔ 1926-27ء میں میلبورن میں نیو ساؤتھ ویلز کے لیے باؤلنگ کرتے ہوئے وکٹوریہ نے ریکارڈ فرسٹ کلاس ٹوٹل 1107 اسکور کیا، میلی نے 8 گیندوں کے 64 اوورز کروائے جس میں کوِئی اوور میڈن نہیں تھا اس طرح اس نے 362 رنز کے عوض 4 وکٹ لیے۔ اس نے 13 سال کی عمر میں ایک ٹراؤزر پریسر کے طور پر اپنی کام کی زندگی کا آغاز کیا، پھر شیشہ بنانے والا اور اس کے بعد واٹر بورڈ کا مزدور، وہ ایک باصلاحیت مصنف اور آرٹسٹ بن گیا۔ 1920ء اور 1953ء کے درمیان انھوں نے اپنے وقت کے کرکٹرز کے کارٹونز کے متعدد کتابچے شائع کیے۔ "کسی نے اسے ایک کروڑ پتی کی طرح باؤلنگ کرنے والا آدمی کہا اور یہ کتنا سچ تھا! آرتھر کا مقصد وکٹیں لینا تھا اور اس عمل میں رنز کے خرچ نے اسے بہت کم پریشان کیا۔ چھونے کے لیے ریشم اور اس نے ایک بار مجھے بتایا کہ وہ نہیں جانتا تھا کہ انگلیاں تھک جانا یا زخم ہونا کیا ہے"۔

ذاتی زندگی[ترمیم]

میلی نے 1912ء میں مس ماڈ ہینچ کلف سے شادی کی۔ ان کے تین بیٹے اور ایک بیٹی تھی۔ اس نے ایک ملا جلا کاروبار بھی چلایا جس میں وولو ویئر روڈ، برنیر پر ایک قصاب بھی شامل تھا۔

وفات[ترمیم]

الفریڈ آرتھر میلی 31 دسمبر 1967ء کراوی، سڈنی، نیو ساؤتھ ویلز میں 81 سال 362 یعنی اپنی 82ویں سالگرہ سے 3 دن پہلے نیو ساؤتھ ویلز کے شہر کراوی میں ہوا۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]