ابوالعاص

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

نام لقیط، کنیت ابوالعاص۔ ام المومنین حضرت خدیجہ کے بھانجے تھے۔ زمانہ جاہلیت میں ان کا بہت بڑا کاروبار تھا۔ حضرت خدیجہ کی فرمائش پر حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم نے اپنی بڑی بیٹی حضرت زینب کا نکاح ان سے کردیا۔ آنحضرت کی بعثت پر ابوالعاص ایمان نہ لائے۔ بلکہ غزوہ بدر میں مشرکین کی طرف سے مسلمانوں کے خلاف لڑے اور جب قید ہو کر رسول اللہ کی خدمت میں پیش ہوئے تو آنحضرت نے اس شرط پر رہا کر دیا کہ اپنی زوجہ یعنی رسول اللہ کی بیٹی زینب کو مکہ سے مدینہ بھجوا دیں گے۔ انھوں نے حسب وعدہ حضرت زینب کو نبی اکرم کے پاس مدینہ بھجوا دیا۔ کچھ عرصے کے بعد آپ مسلمان ہوگئے۔ ١٠ ھ میں حضرت علی کی سرکردگی میں یمن جانے والے سریہ میں شریک ہوئے۔ یمن سے واپسی پر حضرت علی نے انھیں اس علاقہ کا عامل بنا دیا ۔١٣ھ میں انتقال کیا۔