ابو الطیب طبری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو الطیب طبری
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 960  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
آمل  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات سنہ 1058 (97–98 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بغداد  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Black flag.svg دولت عباسیہ  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اسلام
فرقہ اہل سنت
فقہی مسلک شافعی
عملی زندگی
پیشہ فقیہ  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P islam.svg باب اسلام

ابو الطیب طبری مذہب شافعی کے اکابرین میں تھے۔

نام[ترمیم]

ان کا مکمل نام طاہر بن عبد اللہ بن طاہر طبری ابو الطيب، ان کی کنیت ہے۔

ولادت[ترمیم]

ابو الطیب الطبری کی ولادت 348ھ بمطابق 960ھ آمل صوبہ طبرستان میں ہوئی جبکہ زندگی کا اکثر حصہ بغداد میں گزارا۔

علمی اسفار[ترمیم]

ابو الطیب نے حصول علم کی خاطر بہت سے سفر کیے جرجان میں على ابو احمد الغطريفی سے علم حاصل کیا ،نیشا پور میں ابو الحسن الماسرجی سے، على موسى بن جعفر بن عرفہ اورابو الحسن الدارقطنی سے بغداد میں تعلیم حاصل کی ان کے علاوہ الخطيب البغدادی، وابو اسحق الشيرازی، اورابو نصر العكبری سے بھی استفادہ علم حاصل کیا ۔

تصنیفات[ترمیم]

فقہ اصول اور جدل پر کتابیں لکھیں لیکن’’ شرح مختصر المزنی‘‘ ان کی معروف کتاب ہے

قضاۃ[ترمیم]

بغداد میں درس حدیث اورفتویٰ دیتے رہے یہ کرخ کے قاضی تھے اور وفات تک وہاں تعنیات رہے ۔

وفات[ترمیم]

ابو الطیب الطبری کی وفات450ھ مطابق 1058ء میں بغداد میں ہوئی [1][2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. طبقات الشافعيہ 3/ 176،الأعلام،3/ 222
  2. الموسوعة العربية العالمية http://www.mawsoah.net