اسماعیل دربار

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اسماعیل دربار
Ismail Darbar at Vestoria fashion show (19).jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 1 جون 1964 (57 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
سورت (شہر)  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg بھارت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ نغمہ ساز،  موسیقی ہدایت کار  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

اسماعیل دربار (پیدائش جون یکم 1964ء) بھارتی موسیقی کے دھنوں کے، وائلن نواز اور بالی وڈ کی فلمی صنعت کے ایک جانے پہچانے نام ہیں۔

پیشہ ورانہ زندگی[ترمیم]

اسماعیل دربار کا تعلق بھارت کے صوبہ گجرات کے سورت شہر سے ہے۔ وہ کئی سال لکشمی کانت پیارے لال، کلیان جی آنندجی، بپی لہری، آنند ملند، ندیم شراون، جتن للت اور اے آر رحمان کے یہاں سیشن وائلنسٹ کے طور پر کام کر چکے ہیں۔[1] بالآخر کئی سالوں کے بعد سنجے لیلا بھنسالی کے پاس انہیں اپنی صلاحیتیں ہم دل دے چکے صنم فلم میں دکھانے کا موقع ملا۔ اس سے پہلے وہ جتن للت کے لیے خاموشی: دی میوزیکل میں وائلن بجاچکے تھے۔[2]

بعد میں بھنسالی کی فلم دیوداس میں ان کی موسیقی کو کافی سراہا گیا تھا۔ اس کے بعد انہوں نے سنجے لیلا بھنسالی کے ساتھ ذاتی اختلاف رائے کی وجہ سے کام نہیں کیا۔[3][4] دیوداس کے بعد اسماعیل دربار نے کچھ اور فلمیں کی مگر کچھ خاص کامیابی ہاتھ نہیں لگی۔[حوالہ درکار] 2005 میں انہوں نے سبھاش گھئی کی کِسْنا دی وارِیَر پوئیٹ کی دھنوں کو اے آر رحمان کے ساتھ تیار کیا۔[5] تاہم گھئی کو بعد میں کہنا پڑا کہ موسیقی اتنی اچھی بنی تھی کہ آپ اسماعیل کے نغمے کو اے آر رحمان کے نغموں سے الگ نہیں کرسکتے۔[6]

اسماعیل زی ٹی وی کے موسیقی پروگرام سا رے گا ما پا چیالنج 2005ء کے چار ججوں میں سے ایک تھے۔ دیگر جج جتن للت، آدیش شریواستو اور ہمیش ریشمیا تھے۔[7] اسی طرح سے وہ اس شو کے 2007 میں بھی جج تھے۔ وہ امول اسٹار وائس آف انڈیا سیزن 2 اور ڈی ڈی نیشنل پر بھارت کی شان:سنگنگ اسٹار سیزن 2 کے تین ججوں میں سے ایک تھے۔[حوالہ درکار]

2007ء میں اسماعیل دربار موسیقی کے البم رسیا ساجن لے کر آئے جسے ایس راماچندرن کی ہدایت میں تیار کیا گیا تھا۔ اسماعیل کلرز ٹی وی پر بگ باس (سیزن 2) میں بھی شامل ہوئے۔[8]

وہ 2011ء میں بھارتیہ جنتا پارٹی میں شامل ہوتے ہوئے ریاستی سیاست میں کود پڑے۔

اعزازات[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ""Ismail Darbar Biography"". 30 مارچ 2012 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 29 دسمبر 2020. 
  2. "Profile of Ismail Darbar". 05 نومبر 2005 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 10 اکتوبر 2015. 
  3. "Yeh Kaisa Devdas"
  4. "Devdas music review"
  5. "Kisna music review". 
  6. "Back with a big budget dream"
  7. "Zee TV Press Release on Sa Re Ga Ma Pa Challenge 2005". 21 دسمبر 2005 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 11 اکتوبر 2015. 
  8. "Rakhi's mom on Bigg Boss". ٹائمز آف انڈیا. 6 اکتوبر 2009. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 11 اکتوبر 2015.