اعتراض (فلم)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اعتراض
(ہندی میں: एतराज़ ویکی ڈیٹا پر (P1476) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Aitraaz.jpg
اشاعت پوسٹر

ہدایت کار عباس-مستان
اداکار اکشے کمار
کرینا کپور
پریانکا چوپڑا
امریش پوری
پریش راول  ویکی ڈیٹا پر (P161) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
فلم ساز سبھاش گیی  ویکی ڈیٹا پر (P162) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
صنف ڈراما فلم،  رومانوی فلم  ویکی ڈیٹا پر (P136) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
فلم نویس
شیام گوئل  ویکی ڈیٹا پر (P58) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دورانیہ 159 منٹ[1]
زبان ہندی
ملک بھارت
مقام عکس بندی جنوبی افریقا [2] ویکی ڈیٹا پر (P915) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
سنیما گرافر راوی یادیو  ویکی ڈیٹا پر (P344) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
موسیقی ہمیش ریشمیا
اسٹوڈیو
مکتا آرٹس  ویکی ڈیٹا پر (P272) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تقسیم کنندہ مکتا آرٹس
میزانیہ ₹90 ملین[3]
باکس آفس ₹278 ملین[3]
تاریخ نمائش 2004  ویکی ڈیٹا پر (P577) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مزید معلومات۔۔۔
آل مووی v316191  ویکی ڈیٹا پر (P1562) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
tt0418460  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

اعتراض ( انگریزی: Objection ) سال 2004 کی ایک بھارتی ہندی زبان کی رومانٹک تھرلر فلم ہے جس کی ہدایت کاری عباس – مستان نے کی ہے اور فلم کے پروڈیوسر سبھاش گھئی تھے، فلم کے مرکزی کرداروں میں پریانکا چوپڑا ، اکشے کمار اور کرینہ کپور ، جبکہ امریش پوری ، پریش راول اور انو کپور بھی شامل ہیں۔ اسکرین پلے شیام گوئل اور شیراز احمد نے لکھا تھا اور ہمیش ریشمیا نے آڈیو ٹریک تیار کیا تھا۔ فلم میں ایک ایسے شخص کی کہانی سنائی گئی ہے جس پر اس کی خاتون باس نے جنسی ہراسانی کا الزام لگایا تھا۔ اسے 12 نومبر 2004 کو ریلیز کیا گیا تھا   اور دفلم کو مثبت تاژات ملے۔ پریانکا چوپڑا کو منفی کردار اداکرنے پر وسیع پیمانے پر سراہا گیا۔ اعتراض ایک تجارتی کامیاب فلم تھی ، جس نے ₹   9 کروڑ روپے کے بجٹ کے ساتھ مجموعی طور پر باکس آفس پر 27.8کروڑ کمائے۔ یہ فلم جنسی طور پر ہراساں کرنے کے جر ات مندانہ سلوک کے لیے مشہور کیا گیا ہے۔

اعتراض کو خاص طور پر پریانکا چوپڑا کو اپنے کردار کے لیے کافی پزیرائی ملی۔ 50 ویں فلم فیئر ایوارڈ میں ، انھوں نے دو نامزدگیاں وصول کیں: بہترین معاون اداکارہ اور منفی کردار میں بہترین پرفارمنس اور مؤخر الذکر کو جیتنا اور اس طرح یہ ایوارڈ جیتنے والی دوسری (اور حتمی [ا] ) اداکارہ بن گئیں۔ پریانکا چوپڑا نے بہترین اداکارہ کا بنگال فلم جرنلسٹ ایسوسی ایشن کا ایوارڈ اور منفی کردار میں بہترین اداکار کا اسکرین ایوارڈ بھی جیتا ۔ فلم کو 2005 کے آئیفا ایوارڈز میں دس نامزدگیاں ملی تھیں ، جن میں سے تین میں کامیابی حاصل کی ۔

پلاٹ[ترمیم]

راج ملہوترا (اکشے کمار) ائیر وائس موبائلز نامی ایک موبائل مینوفیکچرنگ کمپنی کا پروڈکٹ انجینئر ہے۔ جونیئر وکیل پریا سکسینا (کرینہ کپور) انٹرویو کے لیے بیرسٹر رام چوتھرانی (انو کپور) کے گھر جاتی ہیں اور غلط فہمی سے وہ بیرسٹر کے دوست اور پڑوسی راج کے گھر پنچ جاتی ہے اور انہیں بیرسٹر سمجھتی ہے۔ اس ملاقات کے بعد وہ محبت میں پڑ جاتے ہیں ، شادی کرلیتے ہیں اور جلد ہی راج کی بطور سی ای او ترقی کے ساتھ ساتھ وہ آنے والے بچے کی توقع کر رہے ہیں۔ کمپنی کے چیئرمین رائے (امریش پوری) اپنی ایک نئی اور کم عمر بیوی سونیا (پریانکا چوپڑا ) کے ساتھ پہنچتے ہیں۔ اس جوڑے کے درمیان میں کچھ بحث و مباحثے کے بعد ، سونیا کو نیا چیئرپرسن ، راج کے دوست راکیش (ویوک شوک) کو نیا سی ای او اور راج کو بورڈ ڈائریکٹرز میں شامل کر لیا جاتا ہے۔ اُسی رات ایک پارٹی میں پرِیا کو راج کی نئی باس سونِیا کے بارے میں پتا چلتا ہے ، وہ ِس بات پر حیرت زدہ رہ جاتی ہے کہ سونِیا اس عمر میں رائے کی پتنی ہے۔ راج اور پریا، سونیا کے بارے میں اور اس کی خوبصورتی اور خوبیوں رائے کے ساتھ اس کی عمر کے فرق کے بارے میں گپ شپ کرتے ہیں۔ راج مزاق مزاق میں کہتا ہے کہ اس کی مقناطیسی شخصیت ان کے پروموشن کا سبب بنی۔ اس وقت تک یہ بھی واضح ہے کہ اس سے پہلے بھی راج سونیا سے مل چکا تھا۔

ایک فلیش بیک میں راج پانچ سال پہلے سونیا کے ساتھ پچھلے تعلقات کی یاد کرتا ہے۔ راج اور سونیا (اس کے بعد ایک ماڈل ) کیپ ٹاؤن کے ایک ساحل پر مل رہے ہیں۔ وہ محبت میں پڑ جاتے ہیں اور ایک ساتھ چلتے ہیں۔ سونیا راج سے حاملہ ہوجاتی ہے ، جس سے وہ خوش ہوتا ہے ، لیکن سونیا نے راج کی شادی کی تجویز سے انکار کر دیا۔ وہ کہتی ہیں کہ وہ حمل کو ضایع کرنے والی ہے کیونکہ یہ بچہ اس کی دولت ، شہرت ، طاقت اور وقار کی راہ پر کھڑا ہوگا۔ نتیجہ کے طور پر ، ان کا رشتہ ختم ہوجاتا ہے۔

پرموشن کی تقریب کے بعد ، راکیش راج کو کمپنی کے نئے موبائل ہینڈسیٹ میں ایک خرابی کے بارے میں بتاتا ہے ، جس کی وجہ سے بیک وقت دو افراد کو فون کیا جاتا ہے۔ مطلوبہ وصول کنندہ اور فون کے رابطے کی فہرست میں سے کسی بھی شخص۔ راج کو اس موبائل کی پروڈکشن روکنے کے لیے سونیا کی اجازت کی ضرورت ہے اور وہ اس معاملے پر تبادلہ خیال کرنے کے لیے اسے اپنے گھر بلاتی ہیں۔ سونیا راج کو اشتعال انگیز اور جنسی طور پر واضح دعوت دیتی ہے ، جسے وہ نظر انداز کردیتا ہے۔ اس کے بعد وہ جارحانہ طور پر راج کا پیچھا کرنے کی کوشش کرتی ہے ، راج مزاحمت کرتا ہے۔ اگرچہ وہ بار بار اس کی پیشرفتوں کو مسترد کرتا ہے ، لیکن سونیا اسے بہکانے کی کوشش کرتی رہتی ہے۔ جب وہ اسے چھوڑ کر جانے لگتا ہے تو ، سونیا دھمکی دیتی ہے کہ وہ جلدی اس پر زیادتی کرنے کی سزا دے گی۔ دوسرے دن ، اسے معلوم ہوا کہ سونیا نے اپنے شوہر کو بتایا ہے کہ اس نے اسے جنسی طور پر ہراساں کیا ہے۔ چونکہ اس نے سونیا کو پارٹی میں خوبصورت اور پرکشش کہا ہے ، لہذا اس کے بے گناہی کے دعوے پر یقین نہیں کیا جاتا ہے اور کمپنی نے ان پر استعفی دینے کے لیے دباؤ ڈالا ہے۔

راج نے چوتھرانی سے اپنا معاملہ لینے کو کہا۔ چوتھرانی نے اس سے کہا ہے کہ وہ استعفی نہ دیں اور کام جاری رکھیں۔ یہ مقدمہ عدالت میں جاتا ہے رام چوتھرانی راج کے حق میں اور ادھوکتا پٹیل (پریش راول) سونا کے وکیل ہوتے ہیں، جس میں راج کے خلاف بڑے پیمانے پر شواہد کے ساتھ میڈیا کی توجہ حاصل ہوتی ہے۔ اس دوران میں راج کا بینک منیجر بنکاک سے ایک ٹیپ لے کر لوٹتا جس میں سونیا کے گھر راج کی ساری باتیں ریکارڈ ہوتی ہیں۔ ٹیپ ساری سچائی ثابت کرسکتا ہے، لیکن جب چوتھرانی اس کو عدالت لے کر جارہا ہوتا ہے تو سونیا کی طرف سے بھیجے گئے ایک بدمعاش کی کار کی زد میں آکر ٹیپ تباہ ہوجاتا ہے اور چوتھرانی زخمی ہوجاتا ہے ۔ جب پریا راج سے پوچھتی ہے کہ اس نے سونیا کے گھر سے ان کے بینک منیجر کو کیوں بلایا تو اس کا جواب ہے کہ اس نے راکیش کو فون کیا تھا اور کمپنی کے ہینڈسیٹ میں خرابی کے سبب یہ کال بینک منیجر کو بھی پہنچی۔ چوتھرانی کی چوٹ کی وجہ سے ، پریا نے کیس جاری رکھتے ہوئے ہیں اور کیپ ٹاؤن میں سونیا کے راج سے اس کے پہلے تعلقات کو بے نقاب کر دیا ہے۔ اس کے بعد وہ عدالت میں راکیش کی وائس میل سنائی گئی ہے ، جس میں یہ واضح ہوجاتا ہے کہ راج اور سونیا کے درمیان میں کیا ہوا ہے۔ یوں انکشاف ہوتا ہے کہ سونیا نے رائے ، پیسہ ، طاقت اور حیثیت کے لیے شادی کی تھی ، لیکن جب وہ اس سے جنسی طور پر مطمئن نہ ہو سکی تو اس نے راج سے اپنا رشتہ دوبارہ شروع کرنے کی کوشش کی۔ پریا نے کیس جیت لیا اور رائے سونیا کو چھوڑ گیا۔ مجرم اور ذلیل و خوار ، سونیا نے ایک عمارت سے کود کر خودکشی کرلی۔ آخر کریڈٹ سین میں راج اور پریا اپنے بچے کو چلتے ہوئے دکھاتے ہیں۔

کردار[ترمیم]

اداکار اداکارہ کریکٹر تفصیلات
پریانکا چوپڑا سونیا رائے (ن Kapoor کپور) ایک سابقہ ماڈل؛ راج کا سابق عاشق؛ رنجیت رائے کی تیسری بیوی
اکشے کمار راج ملہوترا ایک انجینئر؛ سونیا کا سابق عاشق؛ پریا کا شوہر
کرینہ کپور پریا ملہوترا (نیس سکسینا) ایک وکیل؛ راج کی بیوی
امریش پوری رنجیت رائے ایک امیر تاجر؛ راج کا باس؛ سونیا کا شوہر
انو کپور رام چوتھرانی ایک بیرسٹر اور وکیل؛ راج کا دوست
پریش راول اکھلیندر پٹیل ایک وکیل جو روائس کی خدمات حاصل کرتا ہے
ویویک شوق راکیش شرما راج کا دوست
پریتی پوری جینی راج کا سکریٹری
اوسانا سنگھ کنچن مہتا رام چوتھرانی سکریٹری
دنیش لمبا بنٹی رام چوتھرانی کا خادم
انیل ناگراٹھ جج
ایوارڈ قسم وصول کنندگان اور نامزد کردہ افراد نتیجہ Ref.
بنگال فلم جرنلسٹ ایسوسی ایشن ایوارڈ بہترین اداکارہ پریانکا چوپڑا |style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
فلم فیئر ایوارڈ بہترین معاون اداکارہ style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد



</br> [4]
منفی کردار میں بہترین کارکردگی style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
گلوبل انڈین فلم ایوارڈ بہترین ولن خواتین style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح [5]
بین الاقوامی ہندوستانی فلم اکیڈمی ایوارڈ بہترین اداکارہ کرینا کپور |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد [6]



</br> [7]



</br>
بہترین معاون اداکار پریش راول |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین میوزک ڈائریکٹر ہمیش ریشمیا |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین گیت نگار style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین مرد پلے بیک ادت نرائن (گانے کے لیے "آنکھیں بند کرو") |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین خواتین پلے بیک الکا یاگنک (گانا "آنکھیں بندھے") |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین کہانی style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین ترمیم style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
بہترین آواز ریکارڈنگ style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
بہترین آواز کی دوبارہ ریکارڈنگ style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
پروڈیوسر گلڈ فلم ایوارڈ معاون کردار میں بہترین اداکارہ style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد [8]
اسکرین ایوارڈ منفی کردار میں بہترین اداکار style="background: #99FF99; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="yes table-yes2"|فاتح
جوڑ نمبر 1 اکشے کمار ، Kareena Kapoor |style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
زی سین ایوارڈ منفی کردار میں بہترین اداکار style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین میوزک ڈائریکٹر style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد
بہترین گیت نگار style="background: #FDD; color: black; vertical-align: middle; text-align: center; " class="no table-no2"|نامزد

نوٹ[ترمیم]

  1. The award was discontinued in 2008.

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Aitraaz (2004)". British Board of Film Classification. 31 دسمبر 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 31 دسمبر 2016. 
  2.   ویکی ڈیٹا پر (P480) کی خاصیت میں تبدیلی کریں "فلم کا صفحہ FilmAffinity identifier پر"— اخذ شدہ بتاریخ 25 جون 2021ء۔
  3. ^ ا ب "Aitraaz". Box Office India. 22 دسمبر 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 17 جنوری 2017. 
  4. "Priyanka Chopra: Awards & nominations". Bollywood Hungama. 24 اپریل 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 27 دسمبر 2012. 
  5. "Shah Rukh, Rani bag GIFA Awards". Hindustan Times. 28 جنوری 2005. 20 دسمبر 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 12 دسمبر 2016. 
  6. "Winners of 6th IIFA Awards". IIFA Awards. 9 جولائی 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 22 جون 2013. 
  7. "IIFA tech awards: 'Mujhse Shaadi Karogi'، 'Aitraaz' score". Indian Television. 2 مئی 2005. 1 جولائی 2006 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 17 جنوری 2017. 
  8. "2nd Apsara Awards Nominees". Apsara Awards. 5 مارچ 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 16 دسمبر 2012. 

بیرونی روابط[ترمیم]