افریقہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
مصر سوڈان ایریٹریا ایتھوپیا جبوتی صومالیہ کینیا یوگینڈا روانڈا برونڈی تنزانیہ موزمبیق ملاوی مڈغاسکر سوازی لینڈ لیسوتھو جنوبی افریقہ زمبابوے بوٹسوانا نمیبیا انگولا زیمبیا جمہوریہ کانگو جمہوریہ کانگو گیبون ساؤ ٹوم و پرنسپ استوائی گنی کیمرون وسطی افریقی جمہوریہ چاڈ نائجیریا نائجر بینن ٹوگو گھانا آئیوری کوسٹ لائبیریا سیرالیون گنی گنی بساؤ سینیگال گیمبیا ماریطانیہ مالی مغربی صحارا مراکش الجزائر تیونس لیبیا مشرق وسطی بحیرہ روم بحر ہند بحیرہ احمر بحر اوقیانوس آبنائے جبرالٹر
افریقہ کا سیاسی نقشہ (ملک کا نام دیکھنے کے لیے فارہ نقشے کے اوپر لے جائیں، مضمون تک جانے کے لیے نقشے میں متعلقہ ملک پر ٹک کریں)

افریقہ (africa) رقبے کے لحاظ سے کرہ ارض کا دوسرا بڑا بر اعظم، جس کے شمال میں بحیرہ روم، مشرق میں بحر ہند اور مغرب میں بحر اوقیانوس واقع ہے۔

دلکش نظاروں، گھنے جنگلات، وسیع صحراؤں اور گہری وادیوں کی سرزمین جہاں آج 53 ممالک ہیں جن کے باسی کئی زبانیں بولتے ہیں۔

افریقہ کے شمالی اور جنوبی حصے نہایت خشک اور گرم ہیں جن کا بیشتر حصہ صحراؤں پر پھیلا ہوا ہے۔ خط استوا کے ارد گرد گھنے جنگلات ہیں۔ مشرقی افریقہ میں عظیم وادی الشق کے نتیجے میں گہری وادیاں تشکیل پائیں جن میں کئی بڑی جھیلیں بھی واقع ہیں۔

براعظم کے مغرب میں دریائے نائجر بہتا ہے جو وسیع دلدلی ڈیلٹا بناتا ہوا بحر اوقیانوس میں جا گرتا ہے۔اس کے مشرق میں دریائے کانگو افریقہ کے گھنے استوائی جنگلات سے گزرتا ہے۔ براعظم کے مشرقی حصے میں عظیم وادی الشق اور ایتھوپیا کے بالائی میدان ہیں۔ قرن افریقہ براعظم کا مشرق کی جانب آخری مقام ہے۔

افریقہ کی مصنوعی سیارے سے لی گئی تصویر

صحرائے اعظم شمالی افریقہ کے بیشتر حصے پر پھیلا ہوا دنیا کا سب سے بڑا صحرا ہے۔ اس عظیم صحرا کا ایک چوتھائی حصہ ریتیلے ٹیلوں پر مشتمل ہے جبکہ بقیہ پتھریلے خشک میدان ہیں۔ براعظم کے دیگر بڑے صحراؤں میں نمیب اور کالاہاری شامل ہیں۔

صحرائے اعظم کے جنوب میں صحرائی اور جنگلی علاقوں کو چھوڑ کر پورے براعظم میں گھاس کے وسیع میدان ہیں جو سوانا کہلاتے ہیں۔ یہی میدان ہاتھی سمیت افریقہ کے دیگر مشہور جانوروں کے مسکن ہیں۔

مشرق میں عظیم وادی الشق ہے، جو دراصل زمین میں ایک عظیم دراڑ کے نتیجے میں وجود میں آئی۔ یہ عظیم دراڑ جھیل نیاسا سے بحیرہ احمر تک پھیلی ہوئی ہے۔ اگر یہ دراڑ مزید پھیلتی گئی تو ایک دن قرن افریقہ براعظم سے الگ ہو جائے گا۔

خط استوا کے ساتھ ساتھ بارشوں کے باعث گھنے جنگلات واقع ہیں یہاں کا موسم گرم اور نمی سے بھرپور ہے۔

نوآبادیاتی دور میں افریقہ کے مختلف ممالک کا نقشہ، مختلف رنگ مختلف قابض قوتوں کو ظاہر کر رہے ہیں جن کی نشاندہی کی گئی ہے

1960ء کی دہائی تک افریقہ کا بیشتر حصہ یورپی ممالک کے قبضے میں تھا اور طویل غلامی کے بعد 1980ء کی دہائی تک تقریباً تمام ممالک کو آزادی مل گئی لیکن ان کے وسائل نو آبادیاتی دور میں غصب کر لیے گئے تھے اس لیے اقتصادی و معاشی طور پر وہ آج تک نہ سنبھل سکے اور غربت کی دلدل میں پھنسے ہوئے ہیں۔ بڑے پیمانے پر جہالت کے باعث نسلی و قومی تعصب نے بھی افریقی عوام کے دلوں میں جڑیں پکڑیں جس کے نتیجے میں خوفناک جنگیں اور خانہ جنگیاں ہوئیں جن میں لاکھوں انسان اجل کا نشانہ بن گئے۔

افریقہ کے 15 ممالک ایسے ہیں جن کی سرحدیں سمندر سے نہیں ملتیں جس کے باعث تجارت اور مواصلات کے رابطے محدود ہیں۔

افریقہ کی بیشتر آبادی دیہات میں رہتی ہے لیکن چند بڑے شہر بھی ہیں جن میں قاہرہ قابل ذکر ہے، کی آبادی 65 لاکھ ہے اور یہ براعظم کا سب سے بڑا شہر ہے۔ شمالی اور مشرق کے بیشتر ممالک کا مذہب اسلام ہے اور وہ دنیا کے دیگر اسلامی ممالک کے ساتھ عالمی اسلامی اخوت کے گہرے رشتے میں بندھے ہوئے ہیں۔

رقبے کے لحاظ سے دنیا کا دوسرا سب سے بڑا براعظم ہونے کے باوجود افریقہ کی آبادی زیادہ نہیں خصوصاً صحرائی علاقوں میں آبادی نہ ہونے کے برابر ہے۔ زیادہ تر آبادی پانی کے ذخائر اور زرخیز علاقوں میں ہے۔ افریقہ میں شرح پیدائش بہت زیادہ ہے اس لیے آبادی میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

افریقہ کی بیشتر عوام کا طرز زندگی انتہائی سادہ ہے لیکن مغربی اشیاء کے استعمال کے رحجان میں اب اضافہ ہو رہا ہے۔ کئی ممالک میں تعلیم عام کرنے کے منصوبہ جات کے تحت خواندگی اور صحت کو بہتر بنانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

افریقہ معدنیات سے مالا مال ہے اور نو آبادیاتی دور میں اسی دولت نے اسے غلامی کے طویل دور میں دھکیل دیا۔ یہاں پائی جانے والی معدنیات میں تیل، سونا، تانبا اور ہیرا خصوصاً قابل ذکر ہیں جو دنیا میں سب سے زیادہ یہیں سے نکالا جاتا ہے۔ کسی زمانے میں مالی میں دنیا میں پیدا ہونے والے نصف سے زائد سونا نکالا جاتا تھا۔ کئی ممالک میں کان کنی اہم ترین صنعت ہے۔

براعظم کے جنوبی علاقوں خصوصاً جنوبی افریقہ میں سب سے زیادہ کانیں ہیں جہاں سے ہیرے، سونا، یورینیم اور تانبا نکالا جاتا ہے۔ تانبے کے سب سے زیادہ ذخائر جمہوریہ کانگو اور زیمبیا میں پائے جاتے ہیں ۔ تیل الجزائر، انگولا، مصر، لیبیا اور نائجیریا میں نکلتا ہے۔

افریقہ میں مختلف اقسام کے ماحول میں مختلف فصلیں بھی ہوتی ہیں۔ منطقہ حارہ کے علاقوں میں ربڑ اور کیلا اہم کاشت ہے جبکہ مشرقی افریقہ چائے اور کافی کی کاشت کے حوالے سے شہرت رکھتا ہے جن میں کینیا قابل ذکر ہے۔

افریقہ کی بیشتر صنعتیں خام مال پر عمل پر انحصار کرتی ہیں۔ چند افریقی ممالک کی صنعت ایک ہی فصل یا معدنی وسیلے پر منحصر ہے لیکن کئی شہروں میں مختلف صنعتیں قائم کی جا رہی ہیں۔ شمالی افریقہ کے ممالک، نائجیریا اور جنوبی افریقہ میں سب سے زیادہ صنعتیں ہیں۔ براعظم میں سب سے زیادہ تیل شمالی افریقہ کے مسلم ممالک اور مغرب میں بحر اوقیانوس کے ساتھ ساتھ واقع زیریں ممالک میں نکالا جاتا ہے۔

افریقہ دنیا کا گرم ترین براعظم ہے جہاں صحرائے اعظم میں 122 ڈگری فارن ہائٹ تک درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا ہے۔ شمالی ساحلی علاقے انتہائی گرم اور خشک ہیں اور بارش بہت کم ہوتی ہے۔ ساحلی علاقوں سے جنوب کی طرف صحرائے اعظم بیابان اور تیز خشک ہواؤں کا علاقہ ہے۔ اس کے جنوب میں ساحل کا علاقہ واقع ہے جہاں درختوں کی کٹائی صحرائے اعظم کو جنوب کی طرف مزید پھیلنے کا موقع دے رہی ہے۔ خط استوا کے قریب بہت زیادہ بارش ہوتی ہے اور اسی لیے مغربی اور وسطی علاقوں میں گھنے جنگلات ہیں۔ مزید جنوب میں موسم بہت خشک ہے اور قحط سالی سب سے بڑا مسئلہ ہے۔

زمین کے معیار کے مطابق افریقہ میں مختلف اقسام کی زراعت ہوتی ہے۔ پہاڑی علاقوں جیسے روانڈا، یوگینڈا اور کینیا میں چائے کاشت کی جاتی ہے۔ شمالی میں جہاں پانی وافر مقدار میں موجود نہیں غذائی اجناس مقامی آبادی کی غذائی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے کاشت کی جاتی ہے جبکہ نقد فصلیں جیسے پھل، کھجور اور زیتون برآمد کیے جاتے ہیں۔ مغربی افریقہ میں مونگ پھلیاں، کوکوا اور کافی کاشت ہوتی ہے۔ جنوبی حصے میں جنوبی افریقہ میں مختلف اقسام کی کاشت ہوی ہے جن میں پھل برآمد کیے جاتے ہیں اور انگوروں سے شراب کشید کی جاتی ہے۔


خطے اور ملک
کا نام
بمعہ پرچم
رقبہ
(مربع کلو میٹر)
آبادی
(بمطابق یکم جولائی 2002ء)
کثافتِ آبادی
(فی مربع کلو میٹر)
دارالحکومت
مشرقی افریقہ:
Flag of Burundi.svg برونڈی 27,830 6,373,002 229.0 بجمبورا
Flag of the Comoros.svg جزائر قمر 2,170 614,382 283.1 مورونی
Flag of Djibouti.svg جبوتی 23,000 472,810 20.6 جبوتی
Flag of Eritrea.svg اریٹریا 121,320 4,465,651 36.8 اسمارا
Flag of Ethiopia.svg ایتھوپیا 1,127,127 67,673,031 60.0 عدیس ابابا
Flag of Kenya.svg کینیا 582,650 31,138,735 53.4 نیروبی
Flag of Madagascar (bordered).svg مڈغاسکر 587,040 16,473,477 28.1 انتاناناریوو
Flag of Malawi.svg ملاوی 118,480 10,701,824 90.3 لیلونگوے
Flag of Mauritius.svg موریشیس 2,040 1,200,206 588.3 پورٹ لوئس
Flag of France.svg مایوٹ (فرانس) 374 170,879 456.9 ماموزو
Flag of Mozambique.svg موزمبیق 801,590 19,607,519 24.5 ماپوٹو
Flag of France.svg ری یونین (فرانس) 2,512 743,981 296.2 سینٹ ڈینس
Flag of Rwanda.svg روانڈا 26,338 7,398,074 280.9 کیگالی
455 80,098 176.0 وکٹوریا
Flag of Somalia.svg صومالیہ 637,657 7,753,310 12.2 موغادیشو
Flag of Tanzania.svg تنزانیہ 945,087 37,187,939 39.3 ڈوڈوما
Flag of Uganda.svg یوگینڈا 236,040 24,699,073 104.6 کمپالا
Flag of Zambia.svg زیمبیا 752,614 9,959,037 13.2 لوساکا
Flag of Zimbabwe.svg زمبابوے 390,580 11,376,676 29.1 ہرارے
وسطی افریقہ:
Flag of Angola.svg انگولا 1,246,700 10,593,171 8.5 لوانڈا
Flag of Cameroon.svg کیمرون 475,440 16,184,748 34.0 یاؤنڈے
Flag of the Central African Republic.svg وسطی افریقی جمہوریہ 622,984 3,642,739 5.8 بانگوئی
Flag of chad.svg چاڈ 1,284,000 8,997,237 7.0 این جامینا
Flag of the Republic of the Congo.svg جمہوریہ کانگو 342,000 2,958,448 8.7 برازاویل
Flag of the Democratic Republic of the Congo.svg ڈیموکریٹک جمہوریہ کانگو 2,345,410 55,225,478 23.5 کنشاسا
Flag of Equatorial Guinea.svg استوائی گنی 28,051 498,144 17.8 مالابو
Flag of Gabon.svg گیبون 267,667 1,233,353 4.6 لبریول
Flag of Sao Tome and Principe.svg ساؤ ٹوم و پرنسپ 1,001 170,372 170.2 ساؤ ٹوم
شمالی افریقہ:
Flag of Algeria (bordered).svg الجزائر 2,381,740 32,277,942 13.6 الجزیرہ
Flag of Egypt.svg مصر 1,001,450 70,712,345 70.6 قاہرہ
Flag of Libya.svg لیبیا 1,759,540 5,368,585 3.1 طرابلس
Flag of Morocco.svg مراکش 446,550 31,167,783 69.8 رباط
Flag of Sudan.svg سوڈان 2,505,810 37,090,298 14.8 خرطوم
Flag of Tunisia.svg تیونس 163,610 9,815,644 60.0 تیونس
جنوبی افریقہ:
Flag of Botswana.svg بوٹسوانا 600,370 1,591,232 2.7 گیبرون
Flag of Lesotho.svg لیسوتھو 30,355 2,207,954 72.7 ماسیرو
Flag of Namibia.svg نمیبیا 825,418 1,820,916 2.2 ونڈہوئیک
Flag of South Africa.svg جنوبی افریقہ 1,219,912 43,647,658 35.8 بلوم فاؤنٹین, کیپ ٹاؤن, پریٹوریا[1]
Flag of Swaziland.svg سوازی لینڈ 17,363 1,123,605 64.7 ایم بابانے
مغربی افریقہ:
Flag of Benin.svg بینن 112,620 6,787,625 60.3 پورٹو نووو
Flag of Burkina Faso.svg برکینا فاسو 274,200 12,603,185 46.0 اوگادوگو
Flag of Cape Verde.svg کیپ ورڈی 4,033 408,760 101.4 پرائیا
Flag of Côte d'Ivoire.svg آئیوری کوسٹ 322,460 16,804,784 52.1 یاماسوکرو
Flag of The Gambia.svg گیمبیا 11,300 1,455,842 128.8 بانجل
Flag of Ghana.svg گھانا 239,460 20,244,154 84.5 عکرہ
Flag of Guinea.svg گنی 245,857 7,775,065 31.6 کوناکری
Flag of Guinea-Bissau.svg گنی بساؤ 36,120 1,345,479 37.3 بساؤ
Flag of Liberia.svg لائبیریا 111,370 3,288,198 29.5 مونروویا
Flag of Mali.svg مالی 1,240,000 11,340,480 9.1 بماکو
Flag of Mauritania.svg ماریطانیا 1,030,700 2,828,858 2.7 نواکشوت
Flag of Niger.svg نائجر 1,267,000 10,639,744 8.4 نیامی
Flag of Nigeria.svg نائجیریا 923,768 129,934,911 140.7 ابوجا
Flag of Saint Helena.svg سینٹ ہلینا (برطانیہ) 410 7,317 17.8 جیمز ٹاؤن
Flag of Senegal.svg سینی گال 196,190 10,589,571 54.0 ڈاکر
Flag of Sierra Leone.svg سیرالیون 71,740 5,614,743 78.3 فری ٹاؤن
Flag of Togo.svg ٹوگو 56,785 5,285,501 93.1 لوم
کل 30,368,609 843,705,143 27.8


حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ بلوم فاؤنٹین جنوبی افریقہ کا عدالتی دارالحکومت ہے جبکہ کیپ ٹاؤن قانونی اور پریٹوریا انتظامی صدر مقام ہیں