الجامعۃ الاشرفیہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

الجامعہ الاشرفیہ ہندوستان کی قدیم اور دینی تعلیم کی معیاری درسگاہ جس کا پرانا نام دارالعلوم اشرفیہ مصباح العلوم تھا۔
بحرالعلوم جامعہ اشرفیہ مبارک پور، بھارت میں اہل سنت و جماعت حنفی بریلوی مسلک کے مسلمانوں کی سب سے بڑی اسلامی درس گاہ ہے۔ یہ ادارہ ہندوستان کے صوبہ یو پی (اتر پردیش) کے ضلع اعظم گڑھ کے اندر قصبہ مبارک پور میں واقع ہے۔ یہ اسلامیان ہند کا معتبر دینی تعلیمی ادارہ ہے۔ اس کے مختلف شعبے اور بہت سی عمارتیں ہیں۔ اس ادارہ کے فارغ التحصیل علماء ہندوستان میں اور اس کے باہر امریکہ، افریقہ، یورپ وغیرہ کے مختلف ملکوں اور شہروں میں تدریسی، تنظیمی، دعوتی خدمات انجام دے رہے ہیں۔ ۔ پہلے یہ مدرسہ محلہ پرانی بستی میں مبارکپور کے بہت بڑے زمیندار گھرانے کی عمارت میں قائم کیا گیا تھا بعد ازاں اس جگہ کے مالکان عبدالوہاب انصاری ،حاجی عبدالرحمن ،اور حافظ عبدالواحد نے اسے 20 مارچ1922ء کو قوم کے نام وقف کردیا اور پھر جب جگہ تنگ محسوس کی گی تو اسی خاندان کے لوگوں نے یعنی شیخ محمّد امین انصاری وغیرہ نے قصبہ کے قلب میں حسب ضرورت اپنا احاطہ27 ستمبر1934ء کو قوم کے نام وقف کیا جو صدر بازار میں واقع ہے۔ بعد میں جگہ کی قلت کو دیکھتے ہوئے مبارکپور قصبہ کے باہر ایک وسیع قطعہ اراضی پر جامعہ اشرفیہ کی عمارتیں تعمیر کی گئیں جہاں فی الحال اس کے دفاتر اور تمام شعبہ جات ہیں۔ اس ادارہ کے فاضلین مصباحی نسبت رکھتے ہیں۔ مزید تفصیل کے لیے جامعہ کی ویب سائٹ پر جائیں۔

جامعہ کے فضلاء[ترمیم]

ان ارباب علم وفضل میں معروف ترین شخصیات یہ ہیں:

  • 1۔ مفتی محمد شریف الحق امجدی ۔
  • 2۔مفتی محمد وقار الدین۔ (سابقہ مفتی دار العلوم امجدیہ کراچی )
  • 3۔ مفتی ظفر علی نعمانی ( بانی دار العلوم امجدیہ کراچی )
  • 4۔ علامہ ضیاء المصطفی الاعظمی (معروف محدث کبیر انڈیا )
  • 5۔قاری رضاء المصطفی الاعظمی
  • 6۔ علامہ عبد الرؤوف ( مرتب فتاوی رضویہ )
  • 7۔ مفتی عبد المنان الاعظمی ( مرتب فتاوی رضویہ )
  • 8- علامہ محمد احمد مصباحی
  • 9-علامہ یس اختر مصباحی
  • 10-مفتی محمد نظام الدین رضوی
  • 11۔خاندان اشرفیہ کچھوچھہ شریف کے زیادہ تر عظیم ہستیاں بھی فاضلین میں شمار ہیں۔

بیرونی حوالہ جات[ترمیم]

* جامعہ اشرفیہ کی دفتری ویب سائٹ