اکبر حیدری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اکبر حیدری
معلومات شخصیت
پیدائش 8 نومبر 1869ء
ممبئی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
تاریخ وفات نومبر 1941ء
قومیت ہندوستانی
عملی زندگی
پیشہ ریاست حیدرآباد کے صدر المہام (وزیر اعظم)

سر محمد اکبر نذر علی حیدری صدر المہام[1] (8 نومبر 1869ء – نومبر 1941ء)[2] ایک ہندوستانی سیاست دان تھے۔ سر اکبر حیدری 18 مارچ سنہ 1937ء سے ستمبر 1941ء تک ریاست حیدرآباد کے صدر المہام (وزیر اعظم) رہے۔[3]

نجی زندگی[ترمیم]

اکبر حیدری 8 نومبر 1869ء کو ممبئی شہر کے ایک مسلم خاندان میں پیدا ہوئے۔ ریاست حیدرآباد جانے سے قبل وہ انڈین آڈٹ اینڈ اکاؤنٹینسی سروس (Indian Audit and Accountancy Service) میں کام کرتے تھے، حیدرآباد پہنچ کر وہ ریاست کے محکمہ عدالت، کوتوالی وامور عامہ کے معتمد اور پھر صدر المہام مقرر ہوئے۔ جامعہ عثمانیہ کے قیام میں سرگرم کردار ادا کیا اور اجنتا غاروں کو بحال کرنے کا کارنامہ انجام دیا۔[4] نیز انھوں نے نومبر 1930 – جنوری 1931ء کے درمیان پہلی گول میز کانفرنس میں ریاست حیدرآباد کی نمائندگی کی۔

جنوری 1936ء میں پریوی کونسل مملکت متحدہ کے رکن مقرر ہوئے۔[5] بعد ازاں 1941ء میں وہ وائسرائے کی مجلس عاملہ (Viceroy's Executive Council) کے رکن بنے۔ محمد صالح اکبر حیدری ان کے فرزند تھے۔[6]

اعزازات[ترمیم]

اکبر حیدری کو برطانوی حکومت نے نائٹ کے خطاب سے نوازا تھا۔[1][4]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب Edinburgh Gazette, 8 June 1928
  2. "Mohammed Akbar Nazar Ali Hydari (1869 - c.1941)"۔ Geni.com۔ 2011-09-30۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2013-07-05۔
  3. Hyderabad, Princely States of India, WorldStatesmen.org
  4. ^ ا ب Gunther, John. Inside Asia - 1942 War Edition. READ BOOKS, 2007, pp. 471-472
  5. Edinburgh Gazette, 7 January 1936
  6. Sulaymani Bohra: South Asia, accessed July 5, 2010

بیرونی روابط[ترمیم]

سرکاری دفاتر
ماقبل 
مہاراجہ سر کشن پرشاد
وزیر اعظم حیدرآباد
1937–1941
مابعد 
نواب چھتاری