اگر کچھ دیکھو، کچھ بولو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
"اگر کچھ دیکھو، کچھ بولو"
گیت by امریکی سرکار اور عوام دشمن
Ntas-1920x1080-smalltown-spanish.jpg

کچھ دیکھو، کچھ بولو ریاستہائے متحدہ امریکا کے محکمہ وطنی سلامتی کا نعرہ ہے، جس میں عوام کو تلقین کی گئی ہے کہ اگر وہ کوئی متشبہ بات دیکھیں تو ریاستی اداروں کو مطلع کریں اور دہشت کے خلاف جنگ میں شامل ہوں۔[1] مبصرین کے مطابق اس میں امریکیوں کو دوسرے لوگوں پر جاسوسی پر اکسایا گیا ہے۔ وطنی سلامتی کی سربراہ نے اس کام کے لیے نجی اداروں جیسے دکانوں، سرآوں، راہ آہن اور لاری اڈوں کے ملازمین کی خدمات (بغیر معاوضہ) حاصل کیں۔[2] صارفین کو ہوشیار باش کرنے لے لیے امریکی ادارے بڑے بڑے اشتہار آویزاں کرتے ہیں جس پر یہ بول لکھے ہوتے ہیں۔[3][4]

اس بول see something, say something سے امریکی گلوکار عوام دشمن نے گانا بھی جاری کیا۔[5]

  1. "If You See Something, Say Something"۔ http://www.dhs.gov۔ وطنی سلامتی۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ External link in |website= (معاونت)
  2. نوریسا ڈائز (20 جولائی 2013ء)۔ "Former chief of Homeland Security to head University of California"۔ عالمی اشتراکی موقع۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  3. "See Something, Say Something Campaign"۔ www.fda.gov۔ ّFDA۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  4. "See Something? Say Something"۔ www.mbta.com۔ MTBA۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  5. "PUBLIC ENEMY LYRICS"۔ www.azlyrics.com۔