ایم اکرم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ایم اکرم
معلومات شخصیت
پیدائش 28 مارچ 1934  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
گوجرانوالہ  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 3 اپریل 2016 (82 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لاہور  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ فلم ہدایت کار، فلم ساز  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ایم اکرم (انگریزی: M. Akram) کی پیدائش 28 مارچ 1934ء میں پیدا ہوئے۔ وہ سب سے بہترین پنجابی فلم ڈائریکٹر تھے، جو کبھی بھی معیار اور عظیم تفریح ​​پر متفق نہیں تھے۔ ایم اکرم اصل میں ایک فلم ایڈیٹر تھا اور ان کی فلم کا آغاز الزام (1953) تھا۔

ابتدائی زندگی اور کیریئر[ترمیم]

محمد اکرم کی پیدائش گوجرانوالا ، پنجاب، پاکستان میں پیدا ہوا تھا۔ ااس کا خاندان فیملی سمیت لاہور میں منتقل ہو گیا۔ تب وہ جوان تھے۔ انہوں نے اپنی بنیادی تعلیم لاہور میں ختم کردی۔ سابقہ پاکستانی فلم کے ڈائریکٹر انور کمال پاشا نے اپنی فلم دلبر (1951ء) میں فلم ایڈیٹر کی نوکری حاصل کی۔

ایم اکرم سب سے پہلے 1951ء سے 1958ء تک اپنی پیشہ ورانہ کیریئر کے آغاز میں ایک فلم ایڈیٹر تھے۔ [1] ان کی پہلی فلم ڈائریکٹر گھر جواٸی (1958ء) [2] اور پھر انہوں نے 1966ء میں پنجابی فلم بانکی نار سے کچھ ناممکن حاصل کی۔ وہ ایم پرویز کا ایک بھائی تھا، جنہوں نے اپنی عام فلموں میں سے اکثر کی پیداوار کی۔ [1]

اہم فلمیں[ترمیم]

ذیل میں درج ذیل میں سے کچھ کامیاب فلمیں ہیں

  • گھر جوائی (1958ء)
  • بانکی نار (1966ء)
  • چڑھدا سورج (1970ء)
  • اُوچا ناں پیار دا (1971ء)
  • سلطان (1972ء) [3] گولڈن جوبلی فلم [4]
  • خان چاچا (1972ء) ایک ڈائمنڈ جوبلی فلم
  • سیدھا رستہ (1974ء) [5]
  • عشق میرا ناں (1974ء) ایک پلاٹینم جوبلی فلم
  • ہتھیار (1979ء) [6]
  • خوددار (1985ء فلم) [7] گولڈن جوبلی فلم
  • سانجھی ہتھکڑی (1986ء)

پاکستانی فلمی ہدایت کاروں کی فہرست

وفات[ترمیم]

لاہور ، پاکستان میں 3 اپریل 2016ء کو انتقال ہوا۔

حوالہ جات[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]