باب:فلسفہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
باب:اسلام
باب:قرآن
باب:جغرافیہ
باب:تاریخ
باب:ریاضیات
باب:سائنس
باب:معاشرہ
باب:طرزیات
باب:فلسفہ
باب:مذہب
باب:فہرست ابواب
اسلام قرآن جغرافیہ تاریخ ریاضیات سائنس معاشرہ طرزیات فلسفہ مذہب فہرست ابواب
ترمیم

باب فلسفہ

فلسفہ یونانی لفظ فلوسوفی یعنی حکمت سے محبت سے نکلا ہے۔ فلسفہ کو تعریف کے کوزے میں بند کرنا ممکن نہیں، لہذا ازمنہ قدیم سے اس کی تعریف متعین نہ ہوسکی۔

فلسفہ علم و آگہی کا علم ہے، یہ ایک ہمہ گیر علم ہے جو وجود کے اغراض اور مقاصد دریافت کرنے کی سعی کرتا ہے۔ افلاطون کے مطابق فلسفہ اشیاء کی ماہیت کے لازمی اور ابدی علم کا نام ہے۔ جبکہ ارسطو کے نزدیک فلسفہ کا مقصد یہ دریافت کرنا ہے کہ وجود بذات خود اپنی فطرت میں کیا ہیں۔ کانٹ اسے ادراک و تعقل کے انتقاد کا علم قرار دیتا ہے۔
فلسفہ کو ان معنوں میں ’’ام العلوم‘‘ کہہ سکتے ہیں کہ یہ موجودہ دور کے تقریباً تمام علوم کا منبع و ماخذ ہے۔ ریاضی، علم طبیعیات، علم کیمیا، علم منطق، علم نفسیات، معاشرتی علوم سب اسی فلسفہ کے عطایا ہیں۔

ترمیم

شاخیں

  • منطق ایک قدیم سائنسی علم ہے جس میں دُرست نتائج (اِستنتاج استدلال) اور دلائل کے اُصولوں کا مطالعہ کیا جاتا ہے۔
  • علمیات فلسفہ کی ایک صنف ہے اور اسی کے مطالعے کو علمیات کہتے ہیں۔ اسکے نظریہ کو معلوماتشناسی یا شناختشناسی بھی کہا جاسکتا ہے اور علم معلومات بھی، مگر علمیات کا لفظ اس شعبہ علم کے مفہوم سے زیادہ قریب تر ہے۔ اس کو انگریزی میں epistemology کہا جاتا ہے۔
  • ماوراء الطبیعیات (Metaphysics) یہ عالم کے داخلی و غیر مادی امور سے بحث کرتی ہے۔ وجودیت، الہیات و کونیات اسکی ذیلی شاخیں ہیں۔ خدا، غایت، علت، وقت اور ممکنات اس کے موضوعات ہیں۔
  • اخلاقیات یا فلسفہ اخلاق فلسفہ کی ایک شاخ ہے، جس میں اخلاق یا اخلاقی قدروں بارے بحث کی جاتی ہے۔ اچھائی اور برائی، درست یا غلط، انصاف اور انسانی قدروں وغیرہ بارے مباحثے شامل ہیں۔
  • جمالیات فلسفہ کی ایک صنف جو فن کے حسن اور فن تنقید کی قدروں اور معیاروں سے بحث کرتی ہے۔
ترمیم منتخب مضمون
باب:فلسفہ/منتخب مضمون
ترمیم اسلامی فلسفہ کے مکتبہائے فکر
علم الکلام: معتزلہ، اشاعرہ اور ماتریدیہ۔

اسلامی فلسفہ: مشائیہ، اشراقیہ اور رشدیہ۔
اسلامی تنقید بر یونانی فلسفہ: تنقید ابن تیمیہ بر فلسفہ، تنقید ابن خلدون بر فلسفہ۔

ترمیم

مشرقی فلسفہ کے مکتبہائے فکر

باب:فلسفہ/مشرقی فلسفہ
ترمیم

مغربی فلسفہ کے مکتبہائے فکر

باب:فلسفہ/مغربی فلسفہ
ترمیم

روابط

ترمیم کیا آپ جانتے ہیں
ارتقائی طور پر فلسفہ کا وجود سائنس کے بعد ہے

کوئی قوم فلسفہ کے بغیر زندہ نہیں رہ سکتی

ترمیم

فلسفہ عامہ کی شاخیں

باب:فلسفہ/عمومی شاخیں
ترمیم

مسلم فلاسفہ

باب:فلسفہ/مسلم فلاسفہ
ترمیم

مشرقی فلاسفہ

باب:فلسفہ/مشرقی فلاسفہ
ترمیم

مغربی فلاسفہ

باب:فلسفہ/مغربی فلاسفہ
ترمیم

شعبہائے فلسفہ

باب:فلسفہ/میدان فلسفہ
ترمیم فہرست موضوعات فلسفہ
ترمیممختلف موضوعات
باب:فلسفہ/مختلف موضوعات
موضوعات فلسفہ
باب:فلسفہ/موضوعات

سرور کیشے کی تطہیر