باسک

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
باسک
Basques
Euskaldunak

24 Basque people.jpg
پہلی صف: Sancho III, Juan Sebastián Elcano, Ignatius Loyola, Francis Xavier, Lope de Aguirre, Fausto Elhuyar
دوسری صف: Tomás de Zumalacárregui, D'Abbadie, Julian Gayarre, Pablo de Sarasate, Pío Baroja, René Cassin
تیسری صف: Jorge Oteiza, Pete T. Cenarrusa, Eduardo Chillida, Dolores Ibárruri, John Garamendi, Bernardo Atxaga

چوتھی صف: Léopold Eyharts, Miguel Indurain, José María Olazábal, Edurne Pasaban, Imanol Harinordoquy, Xabi Alonso
گنجان آبادی والے علاقے
Flag of Spain.svg ہسپانیہ 2,359,400[1]
       باسک ملک 1,850,500[1]
                    آلاوا 279,000
                    بسکے 1,160,000
                    گيبوثكوا 684,000
       ناوار 508,900[1]
 فرانس 230,200[1]
          لابورڈ 225,000
          زیریں ناوار 40,000
          سولی 20,000
 ارجنٹائن 3.5 ملین[2][3]
 چلی 1.3 - 2.6 ملین[4][5][6][7][8]
 کیوبا 1.5 ملین[9]
 برازیل غیر یقینی
 ایکواڈور غیر یقینی
 میکسیکو غیر یقینی
 فلپائن غیر یقینی
 کولمبیا 60,000[10]
 ریاستہائے متحدہ 35,000-57,793
 یوراگوئے 102,200
 کوسٹاریکا 9,800[11]
 وینیزویلا 5,500[12]
 بولیویا غیر یقینی
 پیرو غیر یقینی
زبانیں

باسک -
ہسپانوی - 1,525,000
فرانسیسی - 150,000
باسک-ہسپانوی - 600,000 مقررین
باسک فرانسیسی - 76,000 مقررین[حوالہ درکار]

دیگر مقامی زبانیں
مذہب
رومن کیتھولک, بت پرستی[حوالہ درکار], لادینی, لامعرفت

باسک (Basque) ایک نسلی گروہ ہیں جو بنیادی طور پر روایتی باسک ملک میں آباد ہیں۔[13][14][15]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب پ ت IV. Inkesta Soziolinguistikoa Gobierno Vasco, Servicio Central de Publicaciones del Gobierno Vasco 2008, ISBN 978-84-457-2775-1
  2. "::: Euskonews & Media ::: Kosmopolita ::: Los nuevos vascos (I de II)"۔ Euskonews.com۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  3. "La inmigración vasca en la Argentina"۔ Juandegaray.org.ar۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  4. Mikel Soro۔ "Diariovasco"۔ Diariovasco.۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  5. "entrevista al Presidente de la Cámara vasca"۔ Deia.com۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  6. vascos Ainara Madariaga: Autora del estudio "Imaginarios vascos desde Chile La construcción de imaginarios vascos en Chile durante el siglo XX".
  7. "Basques au Chili"۔ Euskonews.com۔ مورخہ |archive-url= requires |archive-date= (معاونت) کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  8. Contacto Interlingüístico e intercultural en el mundo hispano. Instituto valenciano de lenguas y culturas, University of Valencia, citation: "Un 20% de la población chilena tiene su origen en el País Vasco".
  9. "Vascos en Cuba"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  10. "Vascos en Colombia"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  11. Joshua Project۔ "Ethnic groups - Costa Rica"۔ Joshuaproject.net۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  12. Joshua Project۔ "Ethnic groups - Venezuela"۔ Joshuaproject.net۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-08-22۔
  13. "Basque"۔ Encyclopaedia Brittanica Kids۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 16 مارچ 2013۔
  14. "Basque"۔ Oxford Reference۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 16 مارچ 2013۔
  15. Totoricagüena, G. Identity, Culture, and Politics in the Basque Diaspora (2003) p.59 University of Nevada Press