بشر مومن

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
بشر مومن
بشر مومن کا اشتہاری پوسٹر
اشتہاری پوسٹر
نوعیت رومان
نفرت
ہیجان خیز
تحریر زنجبیل عاصم
ہدایات سید علی رضا اسامہ
نمایاں اداکار فیصل قریشی
اشنا شاہ
سمیع خان
سندس طارق
مظہر یاسر
ماہین رضوی
تھیم موسیقی وقار علی
افتتاحی تھیم "من موجی" از
ندا عرب، ابو محمد
موسیقار محسن اللہ دتا
نشر پاکستان
زبان اردو
اقساط 31
تیاری
عملی پیشکش آصف رضا میر
بابر جاوید
فلم ساز فیصل قریشی
مدیر فیضان غوری
وقاص کریم
مقام کراچی
عکس نگاری فرحان گولڈن
عدنان بخاری
کیمرا ترتیب ملٹی کیمرا سیٹ اپ
دورانیہ 37 - 38 منٹ
پروڈکشن ادارہ اے اینڈ بی انٹرٹینمنٹ
نشریات
چینل جیو انٹرٹینمنٹ
تصویری قسم 1080p
576i
صوتی قسم ڈولبی ڈیجیٹل 5.1
نشر اوّل پاکستان
14 مارچ 2014ء (2014ء-03-14) – 8 نومبر 2014 (2014-11-08)
بیرونی روابط
بشر مومن
اے اینڈ بی انٹرٹینمنٹ

بشر مومن 2014ء میں نشر ہونے والا ایک سلسلے وار پاکستانی ڈراما ہے جس کی ہدایات سید علی رضا اسامہ نے دی ہیں۔ ڈراما زنجبیل عاصم نے تحریر کیا ہے اور اے اینڈ بی انٹرٹینمنٹ کے تحت آصف رضا میر اور بابر جاوید اس کے تخلیق کار ہیں۔ ڈرامے کے مرکزی کرداروں میں فیصل قریشی، سمیع خان، یاسر مظہر، اشنا شاہ، ماہین رضوی اور سندس طارق شامل ہیں۔

بشر مومن حسد، محبت، نفرت، رومان اور سنسنی خیزی کا نمونہ ہے۔ یہ پاکستان کی تاریخ کا مہنگا ترین ڈراما ہے۔ ڈرامے کی پہلی قسط جیو انٹرٹینمنٹ سے 14 مارچ 2014ء کو نشر ہوئی۔ 8 نومبر 2014ء کو 31 ویں قسط کے نشر ہونے کے ساتھ اس ڈرامے کا اختتام ہو گیا۔

کردار[ترمیم]

  • فیصل قریشی بطور بشر مومن۔ ایک امیر کبیر شخص اور ڈرامے کا ہیرو۔
  • اشنا شاہ بطور رضابہ۔ مستقبل میں بشر کی بیوی اور ڈرامے کی ہیروئن۔
  • سمیع خان بطور بلند بختیار۔ بشر کی چھوٹی بہن کا شوہر، ڈرامے کا دوسرا مرکزی مرد کردار۔
  • ماہین رضوی بطور ساحرہ۔ بشر کی بڑی بہن اور عادل کی بیوی جو رضابہ کا بھائی ہے۔
  • سندس طارق بطور طیبہ۔ بشر کی چھوٹی بہن، بلند کی بیوی۔
  • یاسر مظہر بطور عادل۔ رضابہ کا بڑا بھائی اور بشر کی بڑی بہن ساحرہ کا شوہر۔
  • مریم خلیف بطور پرویزہ۔ عادل اور ساحرہ کی اکلوتی اولاد۔
  • انور اقبال بطور بختیار۔ بلند بختیار کا باپ اور رضابہ کا سابقہ سسر۔
  • شہریار زیدی