بہار کا قحط 1873–74

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
بہار ، برطانوی ہندوستان کا 1907 کا نقشہ ، گریٹر بنگال کے شمالی خطے کے طور پر دکھایا گیا ہے۔ منگھیار ضلع (اوپر کا وسط) بہار کے 1873 – 74 کے قحط کے بدترین علاقوں میں سے ایک تھا۔

بہار کا قحط 1873–74 (دوسرا نام۔ بنگال کا قحط 1873–74 ) تھا۔ یہ برطانوی ہندوستان میں قحط تھا جو صوبہ بہار ، پڑوسی صوبہ بنگال ، شمال مغربی صوبہ اور اودھ میں خشک سالی کے بعد آیا تھا ۔ اس نے 140,000 کلومربع میٹر (54,000 مربع میل) رقبہ اور 20 ملین 15 ملین آبادی کو متاثر کیا۔ [1] بنگال کے نومنتخب لیفٹیننٹ گورنر سر رچرڈ ٹیمپل کے ذریعہ منعقدہ ریلیف کی کوشش برطانوی ہندوستان میں قحط سالی کی امداد کی کامیابی کی ایک کہانی تھی کیونکہ اس قحط کے دوران اموات کی شرح بہت کم تھی۔ [2]

امدادی کام[ترمیم]

جب قحط کے امکانات بڑھنے لگے تو اعلی سطح پر کسی بھی قیمت پر جان بچانے کا فیصلہ کیا گیا۔ [1] 40 لاکھ روپے برما سے 450،000 ٹن چاول کی درآمد پر ملین خرچ ہوئے۔ [3] اس کے علاوہ 30 کروڑ یونٹس (1 یونٹ = ایک دن کے لئے ایک شخص) کے لئے امدادی انتظام کرنے میں 2 کروڑ 25 لاکھ روپے خرچ ہوئے۔

نتیجہ[ترمیم]

قحط سالی توقع سے کم سخت ثابت ہوا تھا ، اور امدادی کاموں کے اختتام پر 100،000 ٹن اناج کو بے کار چھوڑ دیا گیا۔ [4] کچھ لوگوں کے مطابق ، 1973 میں (آزاد ہندوستان میں) ، مہاراشٹر کے قحط (مہنگائی میں ایڈجسٹ کرنے کے بعد) کے دوران سرکاری خرچ صرف 50 فیصد زیادہ تھا۔

چونکہ امدادی کاموں سے وابستہ اخراجات کو حد سے زیادہ سمجھا جاتا تھا ، لہذا برطانوی حکام نے سر رچرڈ ٹیمپل کو تنقید کا نشانہ بنایا۔ دل سے تنقید کا اطلاق کرتے ہوئے ، انہوں نے قحط سے دور ہونے والے سرکاری امداد کے عمل میں تبدیلیاں لائیں ، اور بعد میں انہوں نے سختی اور استعداد کے ساتھ گزارنا مناسب سمجھا۔ [2] بڑے قحط سے امداد کی کوششوں کے بعد سن 1876-78 میں بمبئی اور جنوبی ہندوستان میں اموات کی وجہ سے ہلاکتوں کا نتیجہ بہت کم رہا۔

مذید دیکھیں[ترمیم]

نوٹ[ترمیم]

  1. ^ ا ب Imperial Gazetteer of India 1907
  2. ^ ا ب Hall-Matthews 2008
  3. Imperial Gazetteer of India 1907, Hall-Matthews 1996
  4. Hall-Matthews 1996

حوالہ جات[ترمیم]

  • Hall-Matthews، David (1996)، "Historical Roots of Famine Relief Paradigms: Ideas on Dependency and Free Trade in India in the 1870s"، Disasters، 20 (3)، صفحات 216–230، doi:10.1111/j.1467-7717.1996.tb01035.x 

"Chapter X: Famine"، Imperial Gazetteer of India، III: The Indian Empire, Economic، Published under the authority of His Majesty's Secretary of State for India in Council, Oxford at the Clarendon Press، 1907، صفحات 475–502  Nisbet، John (1901)، Burma Under British Rule - and Before، II، Westminster: Archibald Constable and Co. Ltd، مورخہ 17 अप्रैल 2017 کو اصل سے آرکائیو شدہ، اخذ شدہ بتاریخ 9 फ़रवरी 2020  Check date values in: |access-date=, |archive-date= (معاونت)

Yang، Anand A. (1998)، Bazaar India: Markets, Society, and the Colonial State in Bihar، Berkeley: University of California Press، مورخہ 6 जनवरी 2009 کو اصل سے آرکائیو شدہ، اخذ شدہ بتاریخ 9 फ़रवरी 2020  Check date values in: |access-date=, |archive-date= (معاونت)

مزید پڑھیں[ترمیم]

  • Bhatia، B. M. (1991)، Famines in India: A Study in Some Aspects of the Economic History of India With Special Reference to Food Problem, 1860–1990، Stosius Inc/Advent Books Division، صفحہ 383، ISBN 81-220-0211-0 

Dutt، Romesh Chunder (1900)، Open Letters to Lord Curzon on Famines and Land Assessments in India، London: Kegan Paul, Trench, Trubner & Co. Ltd (reprinted 2005 by Adamant Media Corporation)، ISBN 1-4021-5115-2  Dyson، Tim (1991)، "On the Demography of South Asian Famines: Part I"، Population Studies، 45 (1)، صفحات 5–25، doi:10.1080/0032472031000145056، JSTOR 2174991 Famine Commission (1880)، Report of the Indian Famine Commission, Part I، Calcutta 

Dyson، Tim (1991)، "On the Demography of South Asian Famines: Part II"، Population Studies، 45 (2)، صفحات 279–297، doi:10.1080/0032472031000145446، JSTOR 2174784، PMID 11622922  McAlpin، Michelle B. (1983)، "Famines, Epidemics, and Population Growth: The Case of India"، Journal of Interdisciplinary History، 14 (2)، صفحات 351–366، doi:10.2307/203709 

Ghose، Ajit Kumar (1982)، "Food Supply and Starvation: A Study of Famines with Reference to the Indian Subcontinent"، Oxford Economic Papers, New Series، 34 (2)، صفحات 368–389  Klein، Ira (1973)، "Death in India, 1871-1921"، The Journal of Asian Studies، 32 (4)، صفحات 639–659، doi:10.2307/2052814 

Report of the Commissioners Appointed to Enquire into the Famine in Bengal and Orissa in 1866، I, II، Calcutta: Government of India، 1867  Hall-Matthews، David (2008)، "Inaccurate Conceptions: Disputed Measures of Nutritional Needs and Famine Deaths in Colonial India"، Modern Asian Studies، 42 (1)، صفحات 1–24، doi:10.1017/S0026749X07002892 

Hill، Christopher V. (1991)، "Philosophy and Reality in Riparian South Asia: British Famine Policy and Migration in Colonial North India"، Modern Asian Studies، 25 (2)، صفحات 263–279، doi:10.1017/s0026749x00010672  McAlpin، Michelle B. (1983)، "Famines, Epidemics, and Population Growth: The Case of India"، Journal of Interdisciplinary History، 14 (2)، صفحات 351–366، doi:10.2307/203709 

Temple، Sir Richard (1882)، Men and events of my time in India، London: John Murray.، مورخہ 24 दिसंबर 2016 کو اصل سے آرکائیو شدہ، اخذ شدہ بتاریخ 9 फ़रवरी 2020  Check date values in: |access-date=, |archive-date= (معاونت)