بینظیر سلام

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
بینظیر سلام
Benazir Salam.JPG

معلومات شخصیت
پیدائش 17 جنوری 1979ء (عمر 43 سال)
راج شاہی, بنگلہ دیش
شہریت Flag of Bangladesh.svg عوامی جمہوریہ بنگلہ دیش  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات دیوان عبداللہ زمان (شادی. 1996)
والدین محمد عبدالسلام
کوہ نور سلام
عملی زندگی
پیشہ رقاصہ, رقص استانی
مادری زبان بنگلہ  ویکی ڈیٹا پر (P103) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بینظیر سلام

بے نظیر سلام بنگلہ دیش کی ایک ہندوستانی کلاسیکی رقاصہ ہیں۔

کیریئر[ترمیم]

بے نظیر ، محمد عبدالسلام اور کوہ نور سلام کی بیٹی ہیں۔   انہوں نے رقص کے کیریئر کا آغاز عبدل حسیب پنا کے رقص اسکول میں 1983 میں راج شاہی، بنگلہ دیش میں کیا، ناچ اسکول  نکن شلپی گوشتھی بھی کہلاتا ہے۔ بنگلہ دیش کی شیشو اکیڈمی کے زیر اہتمام منعقدہ ایک مقابلے میں انہیں قوم کی بیٹی کا خطاب سال  1986 ، 1988 اور 1989 میں ملا۔ ان مقابلوں میں اس نے کتھک ، بھرتاناتیم ، جدید رقص اور لوک رقص پیش کیا ۔ منی پوری رقص ڈھاکہ جونیئر آرٹ اور میوزک فیسٹول 1988، کی طرف سے سپانسر میں جدید رقص اور کتھک رقص میں اسے طلائی تمغے سے نوازا گیا، تقریب کو برٹش کونسل اور اے این زید گرنڈلیز  بینک کے تعاون سے پیش کیا گیا۔ 1990 میں ڈھاکہ، بنگلہ دیش میں ہونے والے نیشنل ایجوکیشن ویک میں کلاسیکی رقص(کتھک) میں پہلا انعام جیتا۔ اسی سال انہوں نے یونیسکو کلب ثقافتی ایوارڈ ، بنگلہ دیش بھی جیتا۔

تعلیم[ترمیم]

انہوں نے 1996 اور 1999 کے درمیان رابندرا بھارتی یونیورسٹی سے اوڈیسی میں انڈرگریجویٹ (آنرز) ڈگری کے لئے ہندوستانی کونسل برائے ثقافتی تعلقات (آئی سی سی آر) سے اسکالرشپ حاصل کی [1]۔ اس نے اپنی کلاس میں پہلی پوزیشن حاصل کی اور یونیورسٹی گولڈ میڈل حاصل کیا۔ اس کے بعد بینظیر سلام نے اول پوزیشن اور طلائی تمغہ حاصل کرتے ہوئے یونیورسٹی سے اڑیسی رقص میں اپنا ماسٹر مکمل کیا۔ یونیورسٹی میں قیام کے دوران ، وہ مشہور ڈانسر مرلی دھر ماجھی اور پوشالی مکھرجی کی شاگرد تھیں۔

رقص استانی[ترمیم]

فی الحال وہ نوپور، بنگلہ دیش میں اپنے اسکول میں ا ڑیسی رقص سکھاتی ہے [2] [3]۔

وہ ڈھاکہ میں بنگلہ دیش شیشو اکیڈمی میں رقص استانی بھی ہیں [4]۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. http://www.iccrindia.org/
  2. Deepita، Novera (30 January 2005). "Benazir: a Promising Odissi Dancer". The Daily Star. اخذ شدہ بتاریخ 10 ستمبر 2008. 
  3. "Alumni/Data Bank of ICCR Scholarship holders from Bangladesh." Accessed 10 September 2008 [1] آرکائیو شدہ 3 مارچ 2016 بذریعہ وے بیک مشین.
  4. "Alumni/Data Bank of ICCR Scholarship holders from Bangladesh." Accessed 10 September 2008 [2] آرکائیو شدہ 3 مارچ 2016 بذریعہ وے بیک مشین