بین الملوک شادی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ہابابرگ، ہسپانیہ کا فلپ دوم، ٹیوڈر اور اس کی بیوی انگلستان کی میری اول۔ میری اور فلپ کبھی قریبی رشتے کے بھائی بہن تھے جو بعد میں الگ کیے گئے تھے۔

بین الملوک شادی ایک رواج تھا جس میں فرماں روا خاندان کے ارکان دوسرے فرماں روا خاندان سے شادی کا رشتہ جوڑتے تھے۔ ماضی کے دور میں یہ بے حد عام بات تھی۔ یہ ایک حکمت عملی کے جز کے طور ہوا کرتی تھی یا اس دور میں قومی مفاد سمجھا جاتا تھا۔ حالانکہ اس شادی کے پس پردہ کبھی کبھی شاہی پیدائش والوں پر قانونی ضرورت کا لزوم بھی تھا، تاہم یہ اکثر سیاسی پالیسی یا بادشاہوں کی روایات کا حصہ بھی تھا۔

یورپ، ایشیا اور کئی دنیا کے حصوں میں یہ قرون وسطٰی سے لے کر پہلی جنگ عظیم تک رائج رہا۔ مگر اس رواج کا ثبوت کانسی کے دور سے ملتا آیا ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

== بیرونی روابط ==*