تابش کمال

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

فقیر تابش کمال Tabish Kamal اردو اور پنجابی زبان کے معروف شاعراور روحانی شخصیت ہیں۔

نام و نسب[ترمیم]

تابش کمال نام ہے والد محترم باغ حسین کمال جو بانی ہیں سلسلہ عالیہ اویسیہ کمالیہ دار الکمال کمال آباد چکوال کے جبکہ تابش کمال اپنے والد کے موجودہ جانشین ہیں۔

ولادت[ترمیم]

تاریخ پیدائش: 15، اپریل 1965ء مقام پیدائش: پنوال چکوال ہے

علمی سفر[ترمیم]

جامعہ پنجاب سے اُردو اور پنجابی ادبیات میں ایم۔اے کی اسناد حاصل کیں حلقہ اربابِ ذوق راولپنڈی اور پاکستان رائٹرز گلڈ پنجاب کے رکن بھی ہیں۔ مختلف جامعات میں آپ کے فن و شخصیت پر ایم ۔ اے ، ایم ۔ فل اور پی ۔ ایچ ۔ ڈی پروگراموں کے تحت تحقیقی کام بھی ہو رہا ہے۔

وجہ تعارف[ترمیم]

"حضرت کمال ثانی" ان کی شخصیت کے بارے میں تعارفی کتاب ہے جو اسرار احمد ادراک نے مرتب کی۔ شاعری کے علاوہ "متاع کمال"کے نام سے انہوں نے معروف ادبی روحانی شخصیت باغ حسین کمال کی نگارشات پر مبنی کتاب "متاع کمال" مرتب کی ہے۔

تصنیفات[ترمیم]

  • منظر منظر دھوپ (اردو شاعری)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔1998ء"منظر منظر دھوپ"
  • شام پئی بن شام (پنجابی شاعری)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔2002ء"شام پئی بن شام"
  • مہاجر پرندوں کی نظمیں(جدید اردو نظم)۔۔۔۔۔2005ء"مہاجر پرندوں کی نظمیں"
  • سیرالافلاک (تصوف و سلوک)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔2006ء< "سیرالافلاک"
  • صل علی(اردو نعت)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔2012ء" صل علی"
  • پیار پیام(منظوم پنجابی خط)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔2019ء
  • (نورِ مبیں(اردو نعت)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔(زیر طبع)
  • (آسمان سے باہر (اردو غزل)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔(زیر طبع)
  • (دکھ دے بیلے(پنجابی غزل)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔(زیر طبع)
  • (تینڈے رنگ رنگی آں (پنجابی کافی)۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔(زیر طبع)[1]

نعتیہ کلام[ترمیم]

نمونہ کلام[ترمیم]

ہر ایک سمت اجالے دکھائی دیتے ہیںہمیں وہ روشنی والے دکھائی دیتے ہیں
فرازِ عرش کا رستہ ہے شہر طیبہ کاعجیب نور کے ہالے دکھائی دیتے ہیں

حوالہ جات[ترمیم]

مطمئن سے ہو گئے ہیں یہ حقیقت جان کراور بھی اِک زندگی ہے ماورائے زندگی
چل پڑے تو منزلیں بھی دور پیچھے رہ گئیںدیکھتا ہی رہ گیا دشوار سا رستہ ہمیں