تاپسی پنوں

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
تاپسی پنوں
Taapsee Pannu at the Audio release of Chashme Baddoor
Taapsee Pannu at the Audio release of Chashme Baddoor

معلومات شخصیت
پیدائش 1 اگست 1987ء (عمر 32 سال)
نئی دہلی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
رہائش ممبئی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں رہائش (P551) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of India.svg بھارت  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ اداکارہ ، ماڈل
پیشہ ورانہ زبان ہندی،  ملیالم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
ویب سائٹ
ویب سائٹ باضابطہ ویب سائٹ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں باضابطہ ویب سائٹ (P856) ویکی ڈیٹا پر
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) ویکی ڈیٹا پر

تاپسی پنوں (انگریزی: Taapsee Pannu) (پیدائش 1 اگست 1987ء) ایک بھارتی فلمی اداکارہ اور ماڈل ہے۔ تاپسی پنوں نے بالی وڈ فلم انڈسٹری کے علاوہ تامل اور تیلگو زبان میں بنائی جانے والی فلموں میں کام کیا۔ [1]

ٹاپسی پنو ں نے یکم اگست 1987ء نئی دہلی کے جاٹ سکھ خاندان کے گھر آنکھ کھولی۔ ابتدائی تعلیم ماتا جے کور پبلک اسکول دہلی میں حاصل کی جب کہ گرو تیج بہادر انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی دہلی سے کمپیوٹر سائنس انجینئری میں گریجویشن کی سند حاصل کی۔ اداکارہ بننے سے پہلے وہ سافٹ وئیر پروفیشنل تھی اور اس کے ساتھ ماڈلنگ بھی کرتی تھی۔  سافٹ انجینئر کے طور پر کام کرنے کے دوران چینل وی کے ایک ٹیلنٹ شو میں آڈیشن کے بعد منتخب ہو کرباقاعدہ ماڈلنگ کا آغاز کیا۔ اپنے ماڈلنگ کرئیر میں ہی کئی کمرشلز، کٹی وی اشتہارات اور پرنٹ میڈیا میں کام سے مختلف خطابات جیسا کہ ’پینٹا لون فیمنا مس فیس فریش‘،’ صافی فیمنامس بیوٹی فل سکن‘ 2008ء فیمنا مس انڈیا کونٹسٹ جیتے۔ ریلائنس ٹرینڈز، ریڈ ایف ایم 93.5، یونی سٹائل امیج، کوکاکولا، میٹرولا، پینٹا لون،ُ ی وی آر سنیما، سٹینڈرڈ چارٹر بینک، ڈابر، ائیرٹل، ٹاٹا ڈوکومو، ورلڈگولڈ کونسل، ہیولز، وردھمان جیسے مشہور برینڈز کے برینڈ امبیسڈر کے طور پرسامنے آئی۔ ماڈلنگ میں چونکہ وہ صحیح پہچان بنانے میں ناکام رہی ہیں لہذا صرف فلم میں اداکاری کا فیصلہ کیا۔[2]

تاپسی نے تامل میں پہلی سینما میوزیکل فلم 2010ء میں کام کیا۔ 2010ء میں ڈائریکٹر رگو ندر ا راؤ کی تیلگو فلم’جامنڈی نادم‘ میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔ اس فلم میں انہوں نے یو ایس کروڑپتی کی بیٹی کا کردار نبھایا ہے جو خالص تیلگو موسیقی کی تلاش میں انڈیا آتا ہے۔ تیلگو زبان میں تین اور فلموں میں کا م کر کے ٹاپسی پنو ں نے اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا۔ اس کے بعد سے اب تک فلم’ آدوکلم‘، ’واستادو نا راجو‘ اور’ مسٹر پرفیکٹ‘میں اداکاری کے جوہر دکھاچکی ہیں۔

ان کی فلم ’آدوکلم‘ نے 58th نیشنل فلم ایوارڈز میں چھ ایوارڈز جیتے۔ ٹاپسی نے ’مسٹر پرفیکٹ‘ 2011ء میں ایک چھوٹے رول کے ساتھ کام کیالیکن اگلی بڑے پروجیکٹ کی فلم’ویرا‘2011ء میں روی تیجا اور کاجل اگروال کے ساتھ کام کر کے شائقین سے داد وصول کی۔ ان کی اگلی فلم تامل میں ’وندھان وندراں‘ تھی جو باکس آفس پر ناکام رہی۔ اس کے بعد کرشناوامسے کی فلم’موگودو‘میں روایتی تیلگو لڑکی کا مشکل کردار نبھایا۔  انہوں نے ’ملیالم‘ فلم میں بھی اداکاری کی اور تین تیلگو اور ایک ہندی فلم میں بھی کام کیا۔ بالی وڈ فلم ’چشم بدّور‘ میں علی ظفر، دویاندوشرما، رشی کپوراور سدھارتھ کے ساتھ کام کیا۔ اس فلم کو پہلے بھی 1981ء میں بڑے پردے پر پیش کیا جا چکا ہے تاہم 2013ء میں دوبارہ پیش کیا گیاتھا۔ ان کی اگلی فلم’ارّم بم‘ بڑے بجٹ کی ایکشن تھرلرفلم کہلائی جس کی کاسٹ میں اجیت کمار اور آریا شامل ہیں۔ فلم ’ ارّم بم‘2013ء میں اداکاری پر انہیں پرجوش پرفارمر قرار دیتے ہوئے ’ایڈسن ایوارڈ 2014ء‘سے نوازا گیا۔ 

 اکشے کمار کے ساتھ نیرج پانڈے کی فلم’بے بی‘ 2013 ء میں کام کر کہ بھی اپنے جوہر دکھائے۔ فلم ’بے بی‘ میں کامیاب اداکاری پر انہیں مالی اور فنی اعتبار سے بہترین اداکارہ کے طور پر جانا گیا۔ حال ہی میں ان کی تامل میں دو فلمیں بڑے پردے کی زینت بن چکی ہیں جب کہ ایک ہندی فلم ’رننگ شادی ڈاٹ کام‘ امِت سادکے ساتھ جلد ہی ریلیز ہو گی۔ اس کے ساتھ ساتھ امِت رائے کی تامل فلم ’آ گرہ کا ڈابرا‘جلد ہی بڑے پردے کی زینت بنائی گی۔[3]

فلموگرافی[ترمیم]

سال فلم کردار زبان ساتھی فنکار ماخوذ از/ ری میک/ڈب ایوارڈ / تبصرہ
2010 ء جمنڈی نادم سراویہ تیلگو منوج منچو، موہن بابو، سمن
2011ء آڈوکلم ایرین کلاؤڈ تمل دھنُش، کشور، وی آئی ایس جیاپالان نامزد : وجے ایوارڈ مقبول عام اداکارہ

نامزد : وجے ایوارڈ بہترین نیا چہرہ

2011ء واستادو نا راجو پوجا تیلگو وشنو منچو، پرکاش راج، برہمانندم ہندی ڈب: ڈیر ڈیول
2011ء مسٹر پرفیکٹ میگی تیلگو پربھاس، کاجل اگروال، پرکاش راج ہندی ڈب: نمبر 1 مسٹر پرفیکٹ نامزد : فلم فئیر ایوارڈ بہترین معاون اداکارہ تیلگو
2011ء ویرا ایکی تیلگو روی تیجا، کاجل اگروال، برہمانندم ہندی ڈب: دا گریٹ ویرا
2011ء وندان وینڈران انجنا تمل جیوا، نندا، سنتھنم ہندی ڈب: انگارے
2011ء موگوڈو راجا راجیشوری تیلگو گوپی چند، شردھا داس ہندی ڈب: مرد کی زبان
2011ء ڈبلز سائرہ بانو ملیالم مموٹی، نادیہ موئٹو، سُریش
2012ء داروُو سویتا تیلگو روی تیجا، شیواجی شنڈے، برہمانندم ہندی ڈب: جینے نہیں دوں گا
2013ء گندولو گوداری سرلا تیلگو آدی، لکشمی منچو، سُدیپ کرشن
2013ء مرن تھین منی تھین تمل
2013ء چشم ِ بدور سیما ہندی علی ظفر، سدھارتھ نارائن، دیویندر شرما ماخوذ از : چشم بدور 1981ء
2013ء شیڈو مدھوبالا تیلگو وینکاٹیش، سریکانت، نصر
2013ء ساہسم سری ندھی تیلگو گوپی چند، شکتی کپور ہندی ڈب:دا رئیل جیک پوٹ
2013 ء آرمبم انیتا تمل اجیت کمار، آریہ، نئن تارا ہندی ڈب: پلئیر ایک کھلاڑی نامزد : فلم فئیر ایوارڈ بہترین معاون اداکارہ تمل
2015ء بے بی پریا ہندی اکشے کمار، رانا دگوبتی، انوپم کھیر
2015ء کانچنا 2 نندنی تمل رگھو لارنس، نتیہ مینن
2015ء وئی راجا وئی شریا تمل گوتم کارتک، پریا آنند، وویک
2015ء ڈونگاٹا خود تیلگو لکشمی منچو، آدیوی سیش خصوصی ظہور
2015ء رننگ شادی ڈاٹ کام نمی ہندی امیت سادھ، ارش باجوا زیر تکمیل
2015ء کان تمل سیلام برسن، جگپتی بابو، کیتھرین ٹریسا زیر تکمیل[4]
2015ء آگرہ کا ڈابرا ہندی زیر تکمیل[5]
2017ء غازی ہندوستانی فلمبندی

مزید دیکھیے[ترمیم]

فہرست جنوبی بھارتی فلم اداکارائیں

بیرونی روابط[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. انگریزی ویکیپیڈیا کے مشارکین۔ "Taapsee Pannu"۔
  2. "تاپسی پنوں"۔ پتریکا سماچار سموہ۔ 1 اگست 2014۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 1 اگست 2014۔
  3. "تاپسی پنوں بالی ووڈ کی نئی دھماکہ اداکارہ"۔ روزنامہ دنیا پاکستان۔ اکتوبر 2015 ء۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ اکتوبر 2015 ء۔ Check date values in: |accessdate=, |date= (معاونت)
  4. "Selvaraghavan film to start rolling from May 6"۔ Sify۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 27 اپریل 2015۔
  5. Geety Sahgal۔ "Taapsee Pannu to play a coy Muslim girl in 'Agra Ka Daabra'"۔ The Indian Express۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 فروری 2015۔