تبادلۂ خیال:حسن ابن علی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

Untitled[ترمیم]

Bersat main teeron ki ya kis ka janaza ha aray btalao mslmano ya kis ka nawasa ha

ap nay theak kaha ha jawab to dain yea log

Disputed article[ترمیم]

The article does not conform to the Wikipedia's standard of objectivity. the information provided is highly subjective and conforms to the point of view of a selected group of people --بلال

This article is focused on a particular point of view (that of Shite Islam), does not depict complete/true picture of events and also lacks references

--محمد ابراھیم رشید

  • entire article seems to be copied from a shiite book and does not show facts in an objective manner

for example:

امام حسن ابن علی اسلام کے دوسرے امام تھے۔ the statements clearly pertains to shiite school of thought

آپ کی ولادت سے پہلے حضرت ام الفضل رضی اللہ عنہا نے خواب دیکھا کہ رسول صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کے جسم کا ایک ٹکرا ان کے گھر آ گیا ہے۔ انہوں نے رسولِ خدا صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم سے تعبیر پوچھی تو انہوں فرمایا کہ عنقریب میری بیٹی فاطمہ کے بطن سے ایک بچہ پیدا ہوگا جس کی پرورش تم کرو گی۔

no citation is provided

باوجود ان کوششوں کے جو دشمنوں کی طرف سے اس خاندان کے ختم کرنے کی ہمیشہ ہوتی رہیں۔

again a statement presenting shiite school of thought

یہ ہے قران کی سچائی اور رسول کی صداقت کا زندہ ثبوت جو دنیا کی انکھوں کے سامنے ہمیشہ کے لیے موجود ہے۔

the statement is in no way objective

ان کے پہلے کسی کا یہ نام نہ ہوا تھا۔

no citation provided

اس کے بعد آپ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے دعا فرمائی کہ اے اللہ اسے اور اس کی اولاد کو اپنی پناہ میں رکھنا۔

no citation provided

پیغمبر نے اپنے ان دونوں نواسوں کی یہ خصوصیت صراحت کے ساتھ بتائی کہ انھیں میرا نواساہی نہیں بلکہ میرا فرزند کہنا درست ہے۔

no citation provided

طرف ائینے اتنے صاف اس پر رسول کے ہاتھ کی جلا, نتیجہ یہ تھا کہ بچے کم سنی ہی میں نانا کے اخلاق واوصاف کی تصویر بن گئے۔

appears to be copied from another text

the section of caliphate also presents the account from shiite point of view clearly rejecting and "scholding" sunni accounts. the information in all the subsequent sections presents shiite point of view

اس بے ضرر اور خاموش زندگی کے باوجود بھی امام حسن علیہ السّلام کے خلاف وہ خاموش حربہ استعمال کیا گیا جو سلطنت بنی امیہ میں اکثر صرف کیا جارہا تھا۔

the statement is in no way objective

حاکم شام نے اشعث ابن قیس کی بیٹی جعدہ کے ساتھ جو حضرت امام حسن علیہ السّلام کی زوجیت میں تھی ساز باز کرکے ایک لاکھ درہم انعام اور اپنے فرزند یزید کے ساتھ شادی کا وعدہ کیا اور اس کے ذریعہ سے حضرت حسن علیہ السّلام کو زہر دلوایا۔

no source provided. the claim cannot be verified from neutral sources

the article in english wikipedia is much better and objectively written. that should be used as a template to translate and rewrite in urdu

Bilal.scientist 14:51, 31 مئی 2013 (م ع و)

Terms of agreement between Hazrat Hasan (RA)and Hazrat Muaveah (RA) are contradictory in English and Urdu version of article English version has 3 terms while Urdu version has 6 conditions. Moreover no reference is provided in Urdu version. Terms of peace agreement are given below: English version; Muawiyah accepted the conditions attached to the peace treaty; the enforced public cursing of Ali, e.g. during prayers, should be abandoned Muawiyah should not use tax money for his own private needs there should be peace: followers of Hasan should be given security and their rights

Urdu version; اس صلح نامہ کے مکمل شرائط حسبِ ذیل تھے. یہ کہ معاویہ حکومتِ اسلام میں کتاب خدااور سنتِ رسول پر عمل کریں گے. دوسرے یہ کہ معاویہ کو اپنے بعد کسی خلیفہ کے نامزد کرنے کا حق نہ ہوگا. یہ کہ شام وعراق وحجازویمن سب جگہ کے لوگوں کے لیے امان ہوگی. یہ کہ حضرت علی علیہ السّلام کے اصحاب اور شیعہ جہا ں بھی ہیں ان کے جان ومال اور ناموس واولاد محفوظ رہیں گے . معاویہ حسن علیہ السّلام ابن علی علیہ السّلام اور ان کے بھائی حسین علیہ السّلام ابن ُ علی علیہ السّلام اور خاندانِ رسول میں سے کسی کو بھی کوئی نقصان پہنچانے یاہلاک کرنے کی کوشش نہ کرئے گا نہ خفیہ طریقہ پر اور نہ اعلانیہ اور ان میں سے کسی کو کسی جگہ دھمکایا اور ڈرایا نہیں جائے گا . جناب امیر علیہ السّلام کی شان میں کلمات ُ نازیبا جو اب تک مسجدجامع اور قنوت نماز میں استعمال ہوتے رہے ہیں وہ ترک کردیئے جائیں . اخری شرط کی منظوری میں معاویہ کو عذر ہو اتو یہ طے پایا کہ کم از کم جس موقع پر امام حسن علیہ السّلام موجود ہوں اور اس موقع پر ایسانہ کیا جائے . یہ معاہدہ ربیع الاول یاجمادی الاول41ھئ کو عمل میں ایا.

-- محمد ابرھیم رشید

  • Since there are different viewpoints, unilateral changes will not be helpful. If you wish to work on the article:

Send a notice to the main contributors of this page saying that a major revision of the article is needed. Create a subpage on this talk page and write your alternative sections there. Seek active users here who can moderate the discussion if needed. After a consensus is reached, the new changes can be merged on to the article. --Urdutext (تبادلۂ خیال) 13:14, 1 جون 2013 (م ع و)

گستاخی صحابہ[ترمیم]

اس مضمون میں صحابہ کرام کی سخت ترین گستاخی کی گئی ہے۔ اسے حذف کردینا چاہیے یا اسے از سر نو لکھنے کی ضرورت ہے۔
آپؐ نے فرمایا جسکا مفہوم ہے کہ: میرا یہ بیٹا (حسن) مسلمانوں کی دو جماعتوں میں صلح کروا دیگا۔
حضرت حسن رضی اللہ عنہ کے دور خلافت میں ایسا ہی ہوا۔ آپ حضرت امیر معاویہ رضی اللہ عنہ کے حق میں مسلمانوں کے درمیان صلح جوئی کی خاطر اپنے جائز حق سے دستبردار ہو گئے تھے۔ اب ان باتوں کی بنا پر صحآبہ پر تبرہ زیبا نہیں دیتا۔

۔--ترویج اردو 18:17, 29 ستمبر 2015 (م ع و)

بغیر حوالہ جات کے اکثر مواد نکال دیا گیا ہے--Obaid Raza (تبادلۂ خیالشراکتیں) 05:56, 2 فروری 2016 (م ع و)