تبادلۂ خیال:مذہب

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

مذہب کی لغوی و اصطلاحی معنی[ترمیم]

مذہب کا لغوی معنی "راستہ" ہے، یعنی جس پر چلا جائے۔

یہ عربی لفظ "ذ - ھ - ب" سے مشتق ہے، جس کی معنی جانا(چلنا)، گزرنا یا مرنا ہے، جیسے ...الأمر: ختم ہونا، ...على الشئ: بھول جانا، ....به: لے جانا، ساتھ جانا، جگہ سے ہٹانا اور اسی سے ہے "ذهبت به الخيلاء" اس کو تکبر لے گیا یعنی اس کو اس کے مرتبہ سے گرادیا۔

في المسئلة إلى كذا : (کسی مسئلہ میں) فلاں رائے اختیار کرنا المنجد : صفحہ # ٢٦٦

اسی لیے ائمہ اسلام کے اصطلاح میں لفظ مذہب "رائے یا مسلک" کے معنی میں استعمال ہوتا ہے۔

جیسے علم حدیث کے امام "مسلم "، اپنی کتاب صحیح مسلم کے مقدمہ میں فرماتے ہیں:

شرحنا من مذهب الحديث وأهله بعض ما يتوجه به من أراد سبيل القوم

[صحیح مسلم: جلد اول: مقدمہ مسلم، حدیث نمبر 1 : ثقات سے روایت کرنے کے وجوب اور جھوٹے لوگوں کی روایات کے ترک میں]

ترجمہ : ہم نے حدیث اور اس کے اہل (یعنی محدثین) کے مذہب (طریقہ و رائے) کی تشریح کردی ہے تاکہ اس کی جانب وہ شخص (جو اصولِ روایتِ حدیث سے ناواقف ہے) متوجہ ہو سکے جو (اس) قوم (محدثین) کی سبیل (راہ و طریقہ) اختیار کرنا چاہتا ہے۔