تبادلۂ خیال معاونت:ترمیم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
                                                                               حضرت مولانا  محمد شیر علی خان  المعروف  اجی  بابا سرکار  انواروی ؒ 
نام  شیر علی خان 

المعروف اجی با با (چشتی ،قادری ، نقشبندی ،سہروردی )

والد کا نام  باز محمد خان  ولد جنگ  محمد 

گاوں انوار شریف (کھاوڑہ )تحصیل و ضلع مظفرآباد آزادکشمیر مظفر آباد آزاد کشمیر کے نواحی گاوں انوار شریف میں پید اہوئے جو کہ مظفرآباد شہر سے تقریباً 14 کلو میٹر دور ہے

 آپ تین بھائی تھے  جن کے اسماء گرامی یہ ہیں 

1 سلطان محمد خان 2 امبر علی خان 3 شیر علی خان

اور آپ کا سلسلہ نسب  آرال محمد خان سے ہوتا ہوا اورنگزیب عالمگیر سے جا ملتا  ہے 

ابتدائی تعلیم گھر پے ہی حا صل کی بعدازں علوم شریعہ کی تعلیم کے لیے نواں شہر ایبٹ آباد کا رخ کیا وہیں پر علوم فقہ علم الکلام علم فلسفہ علم الحدیث وغیرہ حاصل کی وہیں پر علوم شریعت کے ساتھ ساتھ علم طریقت کی وہیں پر آپ سے اپنے استاد سید جہانگیر شاہ قادری مہاروی کے ہاتھ پر سلسلہ عالیہ قادریہ کی بعیت کی (علامہ مولانا محمود الحسن صدیقی مرحوم جو دربار ہذا کے سجادہ نشین بھی تھے ان کی تصنیف کردہ کتاب میں درج واقعات سے پتا چلتا ہے کہ آپ مادر زاد ولی ہیں ۔

1 سلسلہ قادریہ میں  سید جہانگیر شاہ قادری مہاروی ؒ   آپ کے شیخ ہیں             (مہاراں شریف نواں شہر ایبٹ آباد )

2 سلسلہ نقشبندیہ میں حضرت قلب الدین بلو جی سرکار بھیرکنڈوی (بھرکنڈوی مانسہرہ ) 3سلسلہ چشتیہ میں حضرت خواجہ شمش الدین سیالوی ؒ ( سیال شریف سرگودھا) 4 سلسلہ سہروردیہ میں حضرت گل محمد گنگال مانگلوی ( مانگل شریف مانسہرہ ) آپ کے ہم عصر مشائح اور پیران عظام میں سید مہر علی شاہ صاحب ؒ

میان فقیراللہ بکوٹی ؒ

سائیں سخی سہلی سرکار ؒ

آستانہ عالیہ سیال شریف  کے خلفاء پر لکھی گئی کتاب  ْْفوذالمقال فی خلفاء پر سیال ٗٗ میں ان کا تذکرہ ہے 
آپ اشاعت دین ،درس وتدریس اوراصلاح احوال کرتے رہے 

آپ کے خلفاء میں حضرت حافط عبدالقدوس المعروف حافظ جیؒ ( بنی حافط تحصیل چکار ضلع ہٹیاں بالا ) حضرت میاں ستارمحمد ( مظفرآباد)

 آپ کی نرینہ اولاد کے اسماء گرامی درج ذیل ہیں ۔

1 مولانا محمد یونس خان ؒ 2 مولانا قاضی محمد رفیع الدین خان ؒ 3 مولانا فضل الرحمان خان ؒ 4 مولانا محمد معصوم خان ؒ 5 مولانا محمد ایوب خان ؒ

آپ کا سالانہ عرس پاک 9،10،11، دسمبر  کو منایا جاتا ہے 
آپ کی وفات کے بعد آپ کے سلسلہ طریقت کو چلانے کی ذمہ داری آپ کی اولاد نے سرانجام دی 

فہرست سجادہ نشینان حضرات

سجادہ نشین اول     مولانا فضل الرحمان خان ؒ
سجادہ نشین دوم     مولانا محمد معصوم خان ؒ

سجادہ نشین سوم مولانا محمد ایوب خان ؒ

ان کی وفات کے بعد  مسند خلافت  کو  

صاحبزادہ شبیر احمد شاہین اور مولانا محمود الحسن صدیقی جو کہ پیشہ کے لحاظ سے مدرس تھے نے سنبھالا

 اب یہ ذمہ داری   مولانا معظم علی برق القادری  ہیں جو کہ   جامعہ اسلامیہ منہاج القرآن  لاہور سے فارغ التحصیل ہیں ۔
دربار ہذا کے چند صاحبزادہ گان  جن کے اسماء گرامی درج ذیل ہیں 

صاحبزادہ صابر حسین نقشبندی (ریٹائرڈ مدرس) صاحبزاہ شبیراحمد شاہین ( سیاسی ،مذہبی ،سماجی رہنما)

صاحبزادہ صغیر احمد        

صاحبزادہ خورشید الحسن فاروقی (ریٹائرڈ مدرس)

صاحبزادہ انور علی معصوم                                ( چئیرمین  شیریہ ویلفئیرٹرسٹ  ،مذہبی و سماجی شخصیت )
پروفیسرڈاکٹر صاحبزادہ مراد علی دانش                 ( پروفیسر منہاج یونیورسٹی لاہور)
پروفیسرصاحبزادہ شہاب الدین ذاکر                    ( پروفیسر اجی بابا ؒ گورنمنٹ ڈگری کالج  انوار شریف )
صاحبزادہ کامران علی قادری                            ( صدر پاکستان سنی تحریک آزاد کشمیر ، مذہبی و سماجی راہنما)

صاحبزادہ طارق اقبال ( محکمہ سروسزز آزادکشمیر )

صاحبزادہ ٖظفر خورشید                                     ( چئیر مین  آل پاکستان این جی اوز فورم )

صاحبزادہ منظوم احمد نواز

صاحبزادہ ارشد عمران کاشمیری                       ( لائبرین  کالج آف شریعہ اینڈاسلامک سائنسزز منہاج یونیورسٹی لاہور)

صاحبزادہ بلال مقصوم آزادانواروی

 بقیہ  جاری ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 

Bilal maqsoom