تولی پیر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
تولی پیر
تولی پیر، راولاکوٹ

تولی پیر پاکستان کا ایک پہاڑی پر فضا سیاحتی مقام ہے جو آزاد کشمیر کے ضلع پونچھ کی تحصیل راولاکوٹ میں 8,800 فٹ (2,700 میٹر) فٹ کی بلندی پر واقع ہے۔ یہ راولاکوٹ سے 30 کلومیٹر (19 میل) دور ہے۔ تولی پیر ایک ہل اسٹیشن ہے جس کا نام ایک بزرگ کے نام پر ہے، جن کے مزار کے آثار اب موجود ہے، تولی پیر تحصیل راولاکوٹ کا بلند ترین مقام ہے اور تین پہاڑی سلسلوں کا سنگم ہے۔ یہاں سے عباس پور اور دریائے پونچھ کا نظارہ کیا جاسکتا ہے۔ تولی پیر کے قریب ہی سیاحوں کے قیام کے لیے آرام گاہ بھی موجود ہے۔

متناسقات: 33°53′10″N 73°55′04″E / 33.8860°N 73.9177°E / 33.8860; 73.9177

تولی پیر لس ڈنہ روڑ کی تعمیر کے بعد جس کی چوڑائی 24 فٹ ہے تولی پیر سیاحوں کے لیے جنت بن جائے گا ۔ سڑک کی تعمیر پر کام تیزی سے جاری ہے چند سال بعد جب گھائیگہ سے براستہ تولی پیر حویلی تک آنے جانے کے لیے بلند بالا پہاڑوں کی چوٹیوں اور گہرے و گنجان جنگلات سے سانپ کی ماند بل کھاتی اس شاہراہ پر رنگ برنگی تتلیایوں کی مانند اڑتی گاڑیاں کس قدر رنگ و بو کا محصور کن منظر پیش کریں گی۔ یہ منظر کسی ترقی یافتہ ملک یا یورپ سے کم خوبصورت نہیں ہو گا۔ ۔۔۔ بے شک یہ سڑک تولی پیر سمیت  ان پہاڑوں کی آن ،بان اور شان ہی نہیں بلکہ روز گار کا بہت بڑا ذریعہ بنے گی ۔ کھائیگلہ سے لس ڈنہ تک،  چھوٹے چھوٹے کمرشل مرکز بن رہے ہیں جہاں سیاحوں کو کھانے پینے اور رہایش کی سہولیات مہیا کی جائیں گی ۔  مستقبل میں حویلی کے عوام کے لیے آسانیاں ہی آسانیاں ہیں سفری آسانیاں،  مریضوں کو بروقت طبی امداد پہنچانے کی آسانیاں اور سب سے زیادہ معاشی صورت حال بہتر بنانے کی آسانیاں ۔ یی شاہراہ راولاکوٹ شہر کی معاشی ترقی میں ریڑھ کی ہڈی کے مائند تو ہے ہی، بن بیک سے محمود گلی اور درہ حاجی پیر تک کاروبار ہی کاروبا ہے۔ لس ڈنہ ایسا مقام ہے جہاں چند سال ہی میں خوبصوت شہر آباد ہو گا ۔ پورے آزاد کشمیر سے آنے جانے والا سیاح اس مقام پر ٹھیریں گے ۔ راولاکوٹ کے راستے اسلام آباد،  باغ سدھن گلی سے مظفر آباد۔۔ ہجیرہ میر پور سے پہنجاب تک پہنچنے میں آسان رسائی ہو گی ۔ آزاد کشمیر میں کوئی دوسرا مقام ایسا نہیں جہاں آزاد کشمیر کے تینوں ڈویژن  کی آسان رسائی ہو اور اتنا خوبصوت اور بلندی پر بھی ہو۔ تولی پیر آنے والے سیاح،  اسلام آباد براستہ راولاکوٹ،  گجرات، گجرخان،  جہلم براستہ میر پور اور آبٹ آباد مری براستہ مظفر آباد باآسانی تولی پیر پہنچ سکیں گے ۔[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]