جام جمشید، بمبئی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جام جمشید
જામે જમશેદ
قسمہفت روزہ
بانیپستون جی مانک جی موتی والا
مدیرپستون جی مانک جی موتی والا
آغاز1831ء
زبانگجراتی
صدر دفتربمبئی، برطانوی ہندوستان
ویب سائٹwww.jamejamshedonline.com

جام جمشید (انگریزی: Jam-e-Jamshed، گجراتی= જામે જમશેદ)، بمبئی سے گجراتی زبان میں جاری ہونے والا ہفت روزہ اخبار ہے۔ یہ بمبئی سماچار کے بعد ہندوستان کادوسرا بڑا اور قدیم گجراتی اخبار ہے۔ یہ اخبار پستون جی مانک جی موتی والا نے 1831ء میں جاری کیا۔ کچھ عرصے کے بعد مرزبان کے خاندان نے اسے خرید لیا۔[1][2] یہ اخبار 1853ء میں روزنامہ بنا لیکن بعد میں مالیاتی مسائل کی وجہ سے دوبارہ ہفت روزہ ہو گیا۔ یہ اخبار آج تک جاری ہے اور خاصا ہر دل عزیز اخبار ہے۔[3]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. محمد افتخار کھوکھر، صحافت کی تاریخ، مقتدرہ قومی زبان اسلام آباد، 1995ء، ص 29
  2. محمد عتیق صدیقی، ہندوستانی صحافت (محمد عتیق صدیقی کے صحافتی مضامین)، ترتیب، تزئین و ناشر: محمد ارشد، طبع اول دہلی 2011ء، ص 46
  3. ڈاکٹر عبد السلام خورشید، صحافت: پاکستان و ہند میں، مجلس ترقی ادب لاہور، نومبر 2016ء، ص 56