جبریل سیسے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
جبریل سیسے

جبریل آرون سیسے (تاریخ پیدائش:12 اگست،1981ء) آئیوری نسل کے فرانس کے بین الاقوامی فٹ بال کھلاڑی ہیں جو فرانس کی قومی فٹ بال ٹیم کے علاوہ پریمیر لیگ میں سنڈرلینڈ کی جانب سے بھی کھیلتے ہیں۔ وہ اپنی تیز رفتاری و سرعت کے باعث معروف ہیں اور اپنے منفرد بالوں کے انداز کے باعث بھی۔

کلب کیریئر[ترمیم]

سیسے نے 1993ء میں 11 سال کی عمر میں نیمس اولمپک کی جانب سے اپنے کھیل کا آغاز کیا۔ بعد ازاں وہ آکسیر (Auxerre) (درست تلفظ درکار) میں شامل ہو گئے اور 1998ء میں اس کی نوجوان ٹیم سے اول درجے کی ٹیم کا حصہ بنے۔ 6 سیزن آکسیر میں کھیلنے کے بعد وہ 2004ء میں انگلستان کے معروف فٹ بال کلب لیورپول میں شامل ہوئے جہاں انہوں نے 49 مرتبہ ٹیم کی نمائندگی کی اور 11 مرتبہ گیند کو جال میں پہنچایا۔ بعد ازاں وہ بطور "قرض" مارسے (Marseille) پہنچے جہاں 21 مرتبہ کھیلتے ہوئے 8 گول اپنے نام کیے۔ بعد ازاں وہ مستقلاً یہیں منتقل ہو گئے۔ آپنے گھر آرلیس کے قریب ہونے کے باعث اب تک وہ مارسے سے ہی کھیلتے تھے لیکن 2008ء میں انہیں بطور قرض سنڈرلینڈ بھیج دیا گیا۔

بین الاقوامی کیریئر[ترمیم]

سیسے نے اپنے بین الاقوامی کیریئر کا آغاز 18 مئی 2002ء کو 21 سال کی عمر میں بیلجیم کے خلاف کیا۔ 2002ء کے عالمی کپ کے لیے 23 رکنی ٹیم میں شامل کیا گیا۔ ٹورنامنٹ کے دوران انہیں سینیگال، یوروگوئے اور ڈنمارک کے خلاف تینوں مقابلوں میں شامل کیا گیا۔ لیکن بدقسمتی سے فرانس عالمی کپ کے ابتدائی مرحلے ہی میں باہر ہو گیا۔ انہوں نے فرانس کی قومی ٹیم کی جانب سے 7 ستمبر 2002ء کو قبرص کے خلاف پہلا گول داغا ، یہ میچ یورو 2004ء کے سلسلے کا حصہ تھا۔ سیسے فیفا کنفیڈریشنز کپ 2003ء کی فاتح فرانسیسی ٹیم کا بھی حصہ تھے۔ انہوں نے ٹورنامنٹ کا واحد گول 18 جون 2003ء کو کولمبیا کے خلاف پنالٹی اسپاٹ پر داغا۔

یورو 2004ء میں پابندی کا سامنا کرنے کے باعث ان کا اگلا ہدف عالمی کپ 2006ء میں شمولیت تھا جس کے لیے انہیں فرانسیسی ٹیم کا حصہ بنایا گیا۔ لیکن 7 جون 2006ء کو چین کے خلاف آخری وارم آپ میچ میں وہ حریف کھلاڑی کے ہاتھوں اپنی ٹانگ تڑوا بیٹھے اور یوں زخمی ہو کر عالمی کپ میں شرکت سے محروم ہو گئے۔ یورو 2008ء کے لیے کوالیفائنگ مرحلے میں سیسے نے تین مرتبہ فرانس کی نمائندگی کی لیکن حتمی ٹورنامنٹ کے لیے اعلان کردہ ٹیم میں جگہ نہ پا سکے۔