جنگ دومتہ الجندل

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
-
غزوہ دومۃ الجندل
سلسلہ غزوات
تاریخ اگست 633ء
مقام دومتہ الجندل، سعودی عرب
محل وقوع
نتیجہ مسلمانوں کی فتح
متحارب
خلافت راشدہ عرب مسیحی
قائدین
خالد بن ولید جدی ابن ربیعہ
اکیدر ابن عبدالملک الکندی
قوت
10،000 12،000 سے 15،000
نقصانات
معمولی نقصان بھاری نقصان

دومۃ الجندل دمشق سے پانچ منزل اور مدینہ سے دس منزل دمشق اور مدینے کے درمیان شام کی سرحد پر واقع ہے۔ یہاں کے مسیحی حاکم اکیدر نے مدینے پرحملہ کرنے کے لیے ایک لشکر تیار کیا تھا۔ اس کی اطلاع ملنے پر نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم ایک ہزار مسلمانوں کے ساتھ دومۃ الجندل سے ایک دن کی مسافت پر پہنچے تو پتا چلا کہ دشمن کی چراگاہ یہاں سے قریب ہے۔ حضور کی اجازت سے مسلمانوں نے مویشیوں پر قبضہ کر لیا۔ یہ خبر حاکم دومۃ الجندل کو پہنچی تو وہ گھبرا کرفرار ہو گیا۔ آپ وہاں پہنچے تو میدان خالی تھا۔ چند دن وہاں قیام کے بعد حضور مدینے واپس تشریف لائے۔ یہ سفر غزوہ دومۃ الجندل کے نام سے مشہور ہے۔