جوزیف ہائیڈن

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جوزیف ہائیڈن
(جرمن میں: Joseph Haydn ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Joseph Haydn, målning av Thomas Hardy från 1792.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 31 مارچ 1732[1][2][3][4][5][6][7] اور 1 اپریل 1732[8]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 31 مئی 1809 (77 سال)[9][2][4][5][6][10][11]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ویانا[12]  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Austria.svg آسٹریا[13]  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
فنی زندگی
صنف مغربی موسیقی، کلاسیک دور، اوپرا، ہم نوائی  ویکی ڈیٹا پر طرز (P136) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
آلات موسیقی ارگن، پیانو  ویکی ڈیٹا پر آلۂ موسیقی (P1303) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تلمیذ خاص ماریانا مارٹینیس، لڈوگ بیتھوون  ویکی ڈیٹا پر شاگرد (P802) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ نغمہ ساز، ماہر موسیقیات، پیانو نواز، موسیقار  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان المانی جرمن[14]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دستخط
Joseph Haydn Signature.svg 
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جوزیف ہائیڈن

جوزیف ہائیڈن آسٹریا کے شہرہ آفاق موسیقار تھا۔ اکتیس مارچ سن 1732ء کو آئیزن شٹٹ سے کوئی پچاس کلومیٹر دور ایک چھوٹے سے گاؤں روہرآؤ میں ان کی پیدائش ہوئی۔ جوزیف ہائیڈن اپنے بارہ بہن بھائیوں میں سے ایک تھے اور اُنہوں نے ایک سادہ سے گھرانے میں پرورش پائی۔ اُن کے والد بگھیاں بناتے تھے، پنچایت کے سربراہ بھی تھے اور فوک موسیقی کے دلدادہ تھے۔ اسکول کے ڈائریکٹر نے چھ سالہ ہائیڈن کی گانے کی صلاحیت پہچان لی اور بطور گلوکار تربیت دینے کے لیے اُنہیں اپنی نگرانی میں لے لیا۔

موسیقی[ترمیم]

ہائیڈن آٹھ سال کے ہوئے تو ویانا کے اُس دَور کے دربار سے وابستہ موسیقار ژوہان گیورگ رَوئیٹرز اُنہیں اپنے ساتھ لے گئے اور اپنے گلوکار لڑکوں کے گروپ میں شامل کر لیا۔ جب ہائیڈن نوعمری سے نکلے اور اُن کی آواز بدلی تو اُنہیں گروپ سے نکال دیا گیا۔ تب پہلے تو وہ مختلف آرکسٹراز کے ساتھ وابستہ رہے، آرگن پلیئر بن گئے اور موسیقی کے اسباق دینے لگے۔ بالآخر وہ اُس دَور کے مشہور موسیقار نکولا پورپورا کے شاگرد بن گئے۔ ہائیڈن ہمیشہ کہا کرتے تھے کہ موسیقی کے بنیادی اَسرار و رموز اُنہوں نے اپنے اِسی اُستاد سے سیکھے تھے۔

شہرت[ترمیم]

وقت کے ساتھ ساتھ ہائیڈن کے روابط بڑھتے گئے۔ طبقہء امرا سے تعلق رکھنے والے اپنے ایک واقف کار جوزیف فرائی ہَیر فان فیورن بیرگ کی دعوت پر نوجوان ہائیڈن اُن کے محل میں گئے۔ وہاں اُنہوں نے اپنے اِس واقف کار اور موسیقی میں دلچسپی رکھنے والے اُن کے تین دوستوں کے لیے موسیقی کمپوز کرتے ہوئے اپنا پہلا سٹرنگ کوارٹیٹ لکھا۔ یوں اٹھارویں صدی کی اُس مرکزی اور نئی صنف کی پیدائش ہوئی، جس نے ہائیڈن کو ایک نئی مقبولیت بخشی۔1761ء میں ہائیڈن اُنتیس برس کے تھے، جب گراف پاؤل انٹون ایست رہازی اُنہیں اپنے ساتھ آئزن شٹٹ لے گئے۔ اگلے تیس برس اُنہوں نے اِسی گراف کی سرپرستی میں موسیقی تخلیق کرتے گزار دئے۔ کلاسیکی موسیقی کے بڑے بڑے مراکز سے دور رہ کر اُنہوں نے ہر صنفِ موسیقی میں نت نئے تجربات کیے۔ اگرچہ اُنہیں بابائے سٹرنگ کوارٹیٹ اور بابائے سمفنی کہا جاتا ہے لیکن اپنے سرپرست گراف ایست رہازی کی پسند کو پیشِ نظر رکھتے ہوئے اُنہوں نے بہت سے اوپیراز بھی کمپوز کیے۔ ’’اورلاندو پاراڈینو‘‘ اُن آخری اوپیراز میں سے ایک ہے، جو ہائیڈن نے کمپوز کیے۔ یہ اوپیرا اُن کا سب سے کامیاب اوپیرا ہے۔

انگلینڈ آمد[ترمیم]

گراف ایست رہازی کے انتقال کے بعد ہائیڈن ویانا چلے آئے اور دسمبر سن 1790ء ہی میں انگلینڈ کے پہلے سفر پر روانہ ہو گئے۔ بعد ازاں وہ کئی بار انگلینڈ گئے، وہاں بے انتہا کامیابی حاصل کی، بہت زیادہ پیسہ جمع کیا اور کئی نئے تجربات حاصل کیے۔

شاہکار[ترمیم]

1799ء میں آسٹریا کے شہنشاہ کی موجودگی میں اُن کا شاہکار Schöpfung یعنی ’’تخلیق‘‘ پہلی بار باقاعدہ طور پر پیش کیا گیا اور اُسے ناقابل بیان کامیابی ملی۔ اُنیس ویں صدی کے اوائل میں وہ زیادہ تر اپنے گھر تک محدود ہو کر رہ گئے اور بالآخر اکتیس مئی 1809ء کو 77 برس کی عمر میں انتقال کیا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. جی این ڈی- آئی ڈی: https://d-nb.info/gnd/118547356 — اخذ شدہ بتاریخ: 14 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: CC0
  2. ^ ا ب http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb13895053m — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  3. http://www.britannica.com/biography/Joseph-Haydn
  4. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Joseph-Haydn — بنام: Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  5. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w60w7w6w — بنام: Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  6. ^ ا ب انٹرنیٹ بروڈوے ڈیٹا بیس پرسن آئی ڈی: https://www.ibdb.com/broadway-cast-staff/6957 — بنام: Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  7. انٹرنیٹ بروڈوے ڈیٹا بیس پرسن آئی ڈی: https://www.ibdb.com/broadway-cast-staff/87955 — بنام: Franz Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  8. انٹرنیٹ بروڈوے ڈیٹا بیس پرسن آئی ڈی: https://www.ibdb.com/broadway-cast-staff/87955 — بنام: Franz Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 20 جون 2019
  9. اجازت نامہ: CC0
  10. دائرۃ المعارف اطالوی ثقافت آئی ڈی: https://enciclopedia.itaucultural.org.br/pessoa468542/joseph-haydn — بنام: Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — مصنف: Itaú Cultural — ناشر: Itaú Cultural — ISBN 978-85-7979-060-7
  11. فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/cgi-bin/fg.cgi?page=gr&GRid=86100255 — بنام: Joseph Haydn — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  12. اجازت نامہ: CC0
  13. https://libris.kb.se/katalogisering/jgvxzpt252ss4ws — اخذ شدہ بتاریخ: 24 اگست 2018 — شائع شدہ از: 26 مارچ 2018
  14. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb13895053m — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ