جوگيندرا ناتھ ماندل

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جوگيندرا ناتھ ماندل
(بنگالی میں: যোগেন্দ্রনাথ মণ্ডলخاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی زبان میں نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
مناصب
وزیر محنت   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
مدتِ منصب
15 اگست 1947  – 8 اکتوبر 1950 
وزیر قانون، پاکستان   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
مدتِ منصب
15 اگست 1947  – 8 اکتوبر 1950 
وزارت ملحقہ ریاستیں و سرحدی علاقہ جات‬   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
مدتِ منصب
1 اکتوبر 1949  – 8 اکتوبر 1950 
معلومات شخصیت
پیدائش 29 جنوری 1904  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
بنگال پریزیڈنسی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات 5 اکتوبر 1968 (64 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
بانجاون،مغربی بنگال  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند (1904–1947)
Flag of Pakistan.svg پاکستان (1947–1950)
Flag of India.svg بھارت (1950–1968)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت آل انڈیا مسلم لیگ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ سیاست دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

جوگيندرا ناتھ ماندل (پیدائش: 29 جنوری 1904ء - وفات: 5 اکتوبر 1968ء) پاکستان کے بانیان میں ایک تھے، آپ تحریک پاکستان کے سرگرم رکن اور پاکستان کے پہلے وزیر قانون اور انصاف تھے۔ آپ شیڈول کاسٹ کے لیڈر بھی تھے۔ پاکستان کی پہلی کابینہ میں شامل ہو کر اقلیتوں کی بہبود کے لیے بھی کام کیا۔

پاکستان میں سیاسی زندگی[ترمیم]

پاکستان بننے کے بعد پہلی آئین اسمبلی کے عارضی چیئر مین بھی منتخب ہوئے۔ اس کے بعد وزیر قانون اور محنت بننے کے لیے بھی راضی ہو ئے۔ وہ پاکستان میں پہلے ہندو تھے جو اتنے اعلیٰ عہدے تک پہنچے۔ 1947ء سے 1950ء تک پاکستان کے ساحلی شہر اور دار الحکومت کراچی میں قیام پزیر رہے۔

بھارت واپسی[ترمیم]

1950ء میں منڈل کو پاکستان انتظامیہ کے مخالف ہندو رویہ کا احساس ہو گیا۔ اسی کی وجہ سے وہ اس وقت کے پاکستانی وزیر اعظم لیاقت علی خان کو اپنا مکتوب استعقا سونپ کر بھارت واپس لوٹ آئے۔[1][2][3] [4]

حوالہ جات[ترمیم]