رحمت خاں روہیلہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
(حافظ رحمت خاں سے رجوع مکرر)


رحمت خاں روہیلہ
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش سنہ 1723  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاریخ وفات 23 اپریل 1774 (50–51 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
وفاداری مغلیہ سلطنت  ویکی ڈیٹا پر (P945) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لڑائیاں اور جنگیں مغل مراٹھا جنگیں  ویکی ڈیٹا پر (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

حافظ رحمت خان ،روہیل کھنڈ میں روہیلے یوسفزئی کے آخری سردار تھے۔ 1772ء میں نواب وزیر اودھ اور حافظ رحمت خاں میں معاہدہ ہوا کہ مرہٹوں کے حملے کی صورت میں نواب اور انگریز روہیلوں کی مدد کریں گے جس کے عوض روہیلہ سردار نواب اودھ کو چالیس لاکھ روپیہ دے گا۔ 1773ء میں مرہٹوں کا حملہ پسپا کر دیا گیا۔ حافظ رحمت خان نے تنگ دستی کے باعث روپیہ کی ادائیگی کے لیے مہلت مانگی لیکن نواب اور انگریزی افواج نے روہیل کھنڈ کو غصب کرنے کے لیے یلغار کر دی۔ 71 اپریل 1774ء کو روہیلوں کو شکست ہوئی اور حافظ رحمت خاں میدانِ جنگ میں شمشیر بدست شہید ہو گئے۔ حافظ الملک بڑے رحمدل بیدار مغز اور انصاف پسند آپ دوسرے مغل بادشاہوں کی طرح ہندو مسلم مساوات کے قائل تھے یہی وجہ ہے کہ 1765ء میں آتشزدگی اور زلزلے کی وجہ سے شہر بریلی میں تباہی آئی تو انہوں نے جو سلوک مسلمانوں کے ساتھ کیا وہی ہندوؤں کے ساتھ بھی کیا یہی وجہ ہے کہ جس وقت تمام مسلمان عزیز و اقارب اور سرداروں نے حافظ الملک کی جان بچانے کیلئے روپیہ فراہم کرنے سے انکار کردیا اس وقت دیوان پہاڑ سنگھ کا چالیس لاکھ روپیہ کا پیشکش کرنا اور جب سخت بے سروسامانی میں حافظ الملک نے وطن عزیز کی جنگ آزادی کیلئے عَلم جہاد بلند کیا تو اس وقت جوق در جوق راجپوتوں کا آ کر شریک ہونا ایسے واقعات نہیں جن کو دنیا جلد فراموش کر سکے گی۔

حوالہ جات[ترمیم]