حب پچلونہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے

وجہ تسمیہ[ترمیم]

ہندی لفظ ہے۔ پچ کا معنی ہضم ہونا اور لونا بہ معنی نمک، یعنی نمک ہاضم کی مناسبت سے یہ نام دیا گیا۔

افعال و خواص اور محل استعمال[ترمیم]

بدہضمی ،قلت اشتہا، کثرت ریاح ، ضعف معدہ اور فواق میں نفع بخش ہے۔

جزءِ خاص[ترمیم]

[[نمک|نمکیات][ اور نانخواہ

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری[ترمیم]

نمک سیاہ، نمک سانبھر، نمک سیندھا ہر ایک ۵ گرام ،پودینہ، زرنباد ہر ایک ۲۵ گرام پوست ہلیلہ زرد ، پوست بلیلہ ، آملہ مقشر، فلفل سیاہ، فلفل دراز، زیرہ سیاہ، زیرہ سفید، زنجبیل، وج ترکی ہر ایک ۳۵ گرام ،کشنیز خشک ۱۰۰ گرام ،نانخواہ ، بادیان ہر ایک ۲۰۰ گرام۔ ادویہ کو کوٹ چھان کر عرق لیموں میں تر کر کے دھوپ میں رکھیں۔ خمیر پیدا ہو کر خشک ہو جائے تو پھر اِسی طرح عرق آملہ سبز میں خشک کریں۔ اِس کے بعد آبِ لیموں ملا کر جنگلی بیر کے برابر گولیاں بنائیں۔ 

مقدار خوراک[ترمیم]

دو۔دو گولیاں ہمراہ آبِ سادہ بعد غذائیں۔ [1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

[2][3][4][5][6]

  1. کتاب دستور المرکبات صفحہ 94
  2. "دستور المرکبات ( اوّل) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 16 اپریل 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  3. "دستور المرکبات ( دوّم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 28 مئی 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  4. "دستور المرکبات ( سوّم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 14 جون 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  5. "دستور المرکبات ( چہارم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 22 مئی 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  6. کتاب دستور المرکبات

بیرونی روابط[ترمیم]