حزب الشیطان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

حزب الشیطان (شیطان کا گروہ) قرآن میں ان لوگوں کے لیے آیا ہے جوشیطان کی پیروی کرتے ہیں اور آخرت میں نقصان اٹھائیں گے

  • کردار کے حوالے سے دنیا میں بنیادی طور پر دو قسم کے انسان ہوتے ہیں۔ ایک اللہ اور اس کے رسول کے نافرمانوں کی جماعت اور دوسری اللہ اور اس کے رسول کے تابعداروں کی جماعت ہے۔ نافرمانوں کو حزب الشیطان کہا گیا ہے اور تابعدار لوگوں کو حزب اللہ قرار دیا گیا ہے
  • قاموس میں ہے حزب کا معنی ہے وظیفہ ‘ گروہ ‘ ہتھیار ‘ جتھہ اور کسی شخص کے وہ ساتھی جو اس کے خیال پر ہوں۔ بیضاوی نے لکھا ہے کہ جو لوگ کسی نازل شدہ مصیبت (کو دور کرنے) کے لیے جمع ہوجائیں ان کو حزب کہا جاتا ہے[1]
  • قرآن میں اس کا ذکر اس آیت میں آیا ہے
  • Ra bracket.png اسْتَحْوَذَ عَلَيْهِمُ الشَّيْطَانُ فَأَنسَاهُمْ ذِكْرَ اللَّهِ أُوْلَئِكَ حِزْبُ الشَّيْطَانِ أَلَا إِنَّ حِزْبَ الشَّيْطَانِ هُمُ الْخَاسِرُونَ Aya-19.png La bracket.png

اس کا کسی نے شعر میں ترجمہ کیا

وکان فتی من جند ابلیس فارتقیبہ الحال حتی صار ابلیس من جندہ
  • یہ شخص ابلیس کے لشکر میں سے تھا۔ اب ترقی پا کر حال یہ ہوا کہ ابلیس اس کے لشکر کا ہو گیا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. تفسیر مظہری قاضی ثناءاللہ پانی پتی