حمید الحق چودھری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
حمید الحق چودھری
(بنگالی میں: হামিদুল হক চৌধুরী خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی زبان میں نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
تفصیل=

چوتھے وزیر خارجہ پاکستان
مدت منصب
ستمبر 28, 1955 – ستمبر 12, 1956
Fleche-defaut-droite-gris-32.png محمد علی بوگرہ
ملک فیروز خان نون Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1901  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
نواکھالی ضلع  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات 18 جنوری 1992 (90–91 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
ڈھاکہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت آل انڈیا مسلم لیگ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
مادر علمی کلکتہ یونیورسٹی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تعلیم از (P69) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ سیاست دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

سابق وزیر خارجہ پاکستان۔ سابق وزیر مالیات، محنت، تجارت اور صنعت مشرقی پاکستان، نواکھالی میں پیدا ہوئے۔ 1929ء میں کلکتہ یونیورسٹی سے ایل ایل بی کی ڈگری حاصل کی۔ آئندہ برس کلکتہ کی عدالت عالیہ میں وکالت شروع کی۔ چار برس تک نائب مشیر قانونی اور عدالت عالیہ کے سرکاری وکیل رہے۔ بعد میں استعفی دے کر دوبارہ وکالت شروع کی۔ مسلمانوں کا نقطہ نظر بنگالی سرحدی کمیشن کے سامنے پیش کیا۔ 1937ء میں بنگال کی صوبائی اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے اور اسی سال اسمبلی کے صدر بن گئے۔ 1947ء میں پاکستان کی دستور ساز اسمبلی کے رکن چنے گئے۔ اگست 1947ء میں مشرقی بنگال کی کابینہ میں وزیر محنت، صنعت اور تجارت بنے۔ 1955ء میں دوسری دستور ساز اسمبلی کے رکن چنے گئے۔ ستمبر 1955ء تا ستمبر 1956ء مرکزی حکومت میں وزیر رہے۔

1958ء میں آپ کو دوبارہ کابینہ میں لے لیا گیا لیکن جو محکمہ پیش کیا گیا تھا آپ نے اسے قبول نہیں کیا۔ اس کے بعد ملک میں مارشل لا نافذ ہو گیا۔ بنگلہ دیش کے قیام کے بعد آپ کو جیل میں ڈال دیا گیا۔ فوجی بغاوت اگست 1975ء کے بعد رہا ہوئے۔