"یوسف رضا گیلانی" کے نسخوں کے درمیان فرق

Jump to navigation Jump to search
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
م (robot Adding: it:Yousaf Raza Gillani)
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
 
سنہ [[1985]] میں انہوں نے صدر جنرل [[ضیاء الحق]] کے غیر جماعتی انتخابات میں حصہ لیااور وزیراعظم [[محمد خان جونیجو]] کی کابینہ میں وزیر ہاوسنگ و تعمیرات اور بعد ازاں وزیرِ ریلوے بنائے گئے۔
Raja Muhammad Ayub
 
انیس سو اٹھاسی میں وہ [[پیپلز پارٹی]] میں شامل ہوئے اور اسی برس ہونے والے عام انتخابات میں انہوں نے [[پاکستان پیپلز پارٹی]] کی ٹکٹ پر الیکشن میں حصہ لیا اور اپنے مدمقابل [[نواز شریف]] کو شکست دی جو قومی اسمبلی کی چار نشستوں پر امیدوار تھے۔ان انتخابات میں کامیابی کے بعد یوسف رضا گیلانی ایک مرتبہ پھر وفاقی کابینہ کے رکن بننے اور اس مرتبہ انہیں بینظیر بھٹو کی کابینہ میں سیاحت اور ہاؤسنگ و تعمیرات کی وزارت ملی۔
سیاسی کیرئر کے دوران یوسف رضا گیلانی کے خلاف اختیارات کے ناجائز استعمال کے الزامات میں [[نیب]] نے ریفرنس دائر کیا اور راولپنڈی کی ایک احتساب عدالت نے ستمبر سنہ دو ہزار چار میں یوسف رضا گیلانی کو قومی اسمبلی سیکرٹریٹ میں تین سو ملازمین غیر قانونی طور پر بھرتی کرنے کے الزام میں دس سال قید با مشقت کی سزا سنائی تاہم سنہ دو ہزار چھ میں یوسف رضا گیلانی کو عدالتی حکم پر رہائی مل گئی ۔
گمنام صارف

فہرست رہنمائی